جیل میں بندہیرا گروپ کی ڈائریکٹر نوہیرانے فوٹو شاپ جعلسازی سے عوام کو دیا دھوکہ۔ گلف نیوز کا انکشاف

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 9th November 2018, 2:51 AM | خلیجی خبریں | اسپیشل رپورٹس | ملکی خبریں |

دبئی 8/نومبر (ایس او نیوز) دبئی سے شائع ہونے والے کثیر الاشاعت انگریزی اخبار گلف نیوز نے ہیرا گولڈ کی ڈائرکٹر نوہیرا شیخ کی جعلسازی کا بھانڈہ پھوڑتے ہوئے اس بات کا انکشاف کیا ہے کہ    کس طرح اس نے فوٹو شاپ کا استعمال کرتے ہوئے بڑے بڑے ایوارڈ حاصل کرنے اور مشہور ومعروف شخصیات کے ساتھ اسٹیج پر جلوہ افروز ہونے کی جعلی تصاویر میڈیامیں عام کیں  ہیں ان جعلی تصاویر کے ذریعے سرمایہ کاری کے لئے عوام کا اعتماد جیتنے میں کامیابی حاصل کی ہیں۔

گلف نیوز کے فیچر ایڈیٹر مظہر فاروقی نے اپنے  ایک اسپیشل رپورٹ میں حلال سرمایہ کاری کے نام پر دھوکہ دہی کرنے کے الزام میں فی الحال جیل میں بند ہیرا گروپ کی ڈائریکٹر ڈاکٹر نوہیرا شیخ کے تعلق سے لکھا ہے کہ نوہیرا شیخ اپنے نام کے ساتھ ’ڈاکٹر‘ کا سابقہ استعمال کرتی ہے، لیکن نہ وہ پیشے کے اعتبار سے ڈاکٹر ہے اور نہ علمی اعتبارسے۔ 45سالہ نوہیرا شیخ کو ’’حلال‘‘سرمایہ کاری کے نام پر پونزی اسکیمس چلانے کے لئے دھوکہ دہی، مجرمانہ اعتماد شکنی اور مجرمانہ خوف پیدا کرنے کے الزامات کے تحت 15اکتوبر کو گرفتار کیا گیا تھا، تب سے وہ جیل میں بند ہے۔

رپورٹ کے مطابق  اب نوہیرا شیخ کا ایک اور روپ سامنے آیا ہے جس میں وہ اپنی شخصیت مقبول اور قدآور ثابت کرنے کے لئے فوٹو شاپ کی مہارت کا استعمال کررہی تھی۔ بشمول عرب امارات، دنیا بھر سے ہزاروں افراد نے ہیرا گروپ میں اس وقت بھرپور یقین او راعتماد کا مظاہرہ کیاجب اس نے کئی بڑے ایوارڈ جیتنے کی خبریں عام کردیں۔ان میں سے ایک ’دبئی کی شہزادی‘ شیخہ ہیند فیصل القسّیمی کی جانب سے دیا جانے والا ’ٹاپ بزنس اومن ایوارڈ‘ تھا اور دوسرا گلف فوڈ ایکزی بیشن میں ’ہیرافوڈیکس‘ کے لئے ملنے والا ’’بیسٹ نیو کمر برانڈ‘‘ ایوارڈ تھا۔اس کے علاوہ ہیرا گروپ نے اپنے یوٹیوپ چینل اور فیس بک پیج پر یہ دعویٰ بھی کیا کہ اس نے دبئی ورلڈ ٹریڈ سنٹر میں امسال نمائش منعقد کی تھی۔ اب تحقیق سے یہ صاف ہوگیا ہے کہ یہ تمام   دعوے بالکل جھوٹے تھے۔

شیخہ ہیندفیصل القسّیمی نے جو کہ ایک مقامی فیشن لیبل’ہاؤس آف ہیند‘ چلاتی ہیں، نوہیراکو کسی بھی قسم کا کوئی ایوارڈ دینے کی بات سے انکار کیا ہے۔ انہوں نے نامہ نگار کے سوال پر ٹوئٹر پر کہا :’’ یقیناًمیں اس سے ایک بار ملی ضرور تھی، کیونکہ اس کانام ہندوستان کی کاروباری دنیا میں کامیاب تازہ دم خاتون کے طورپر ایک کتاب میں شامل تھا۔مگر یہ جو تصویر ہے ،یہ فوٹو شاپ کے ذریعے بنائی گئی ہے۔‘‘

ہیرا گروپ کا یہ دعویٰ بھی جھوٹا ہے کہ اس نے 2018میں دبئی میں ’گلف فوڈ‘ نامی کوئی نمائش کا اہتمام کیا تھا۔ ہیرا گروپ ان 5000 شرکاء میں سے ایک تھا جو اس نمائش میں شامل ہوئے تھے اور یہ نمائش گزشتہ 20سال سے مسلسل ہر سال منعقد ہوتی ہے۔ہیرا گروپ کو ’بیسٹ نیو کمر‘ ایوارڈ دئے جانے کے دعوے کو ثابت کرنے لائق ایسی کوئی بھی بات سامنے نہیں آئی ہے۔ 

ہیرا گروپ نے اپنی تشہیر کے لئے جو ایک اور تصویر عام کی تھی اس میں نوہیر اشیخ کودبئی کے ہوٹل رٹز کارلٹن میں ایک کتاب کی رسم اجرا کے موقع پر منعقدہ فنکشن میں ہندوستان کی وزیر خارجہ سشما سوراج کے ساتھ جلوہ افروز دکھایاگیا ہے۔یہ سچ ہے کہ اس کتاب میں ہندوستان کے کامیاب تاجران اور پیشہ ورانہ شخصیات کے تعلق سے ابواب شامل ہیں اور اس میں ایک باب نوہیرا شیخ کے تعلق سے بھی ہے۔ لیکن اس فنکشن کے باضابطہ اسٹیج پر نوہیرا شیخ کہیں بھی موجود نہیں ہے۔ تو اپنی غیرموجودگی کا ازالہ کرنے کے لئے اس نے فوٹو شاپ کا سہارا لیا اور اصل تصویر میں اپنی تصویربھی شامل کرکے میڈیا میں عام کردی۔ 

نوہیرا کی پونزی سرمایہ کاری اسکیم میں 2l لاکھ درہم گنوانے والے دبئی کے  ایک باشندے نے کہا:’’ کون سوچ سکتا ہے کہ وہ فوٹو شاپ سافٹ ویئر سے ایڈیٹنگ کرکے ہندوستان کی ایک وزیر کے ساتھ اپنی تصویرعام کرے گی!‘‘

فریب کاری اور جعلسازی میں مہارت حاصل کرنے والی نوہیرا شیخ نے اپنی ’آل انڈیامہیلا ایمپاورمنٹ پارٹی‘(ایم ای پی) کا آغاز کرنے اور کرناٹکا اسمبلی 2018کے انتخابات لڑنے کے موقع پر بھی کچھ ایسے ہی حربے استعمال کیے۔ ایم ای پی نے اسمبلی کی 224سیٹوں میں سے 175سیٹوں پر اپنے امیدوار کھڑے کیے۔ ان کی شکست تو ایک یقینی بات تھی۔اس کے باوجود ایم ای پی نے ووٹرس کو یہ باور کروانے کی کوشش کی کہ ایک سروے رپورٹ کے مطابق ایم ای پی دوسری سب سے بڑی پارٹی بن کر ابھر نے والی ہے۔نوہیرا شیخ سے کمیشن پانے والی فریب کاری ایجنسی کا کہنا تھا کہ اس نے انتخابی سروے کے لئے بہت ہی طاقتور سیٹلائٹ کا استعمال کیاتھا۔ اپنی بات کو تقویت دینے کے لئے سیٹلائٹ اور اس سے کوآرڈی نیشن کی تفصیلات بھی پیش کی گئی تھیں۔ لیکن انتخابات کے سلسلے میں سیٹلائٹ کے ذریعے کس طرح سروے کیا جاسکتا ہے اور سیٹلائٹ انتخابی نتائج کی پیشین گوئی کیسے کرسکتا ہے اس سوال کا جواب نوہیر ا نے کبھی نہیں دیا۔ گلف نیوز نے جعلسازی اور فریب کاری کے اس پہلو پر بات کرنے کے لئے ہیرا گروپ سے رابطہ قائم کرنے کی کوشش کی، لیکن کوئی تبصرہ نہیں کیا گیا۔

ایک نظر اس پر بھی

جدہ میں بھٹکل کمیونٹی کی جانب سے "پیغام انسانیت اور دورِحاضر میں ہماری ذمہ داریاں" کے موضوع پر خوبصورت پروگرام

معروف عالم دین ، داعی اور کل ہند تحریک پیام انسانیت کے جنرل سکریٹری  مولانا بلال حسنی ندوی کی عمرہ کے لئے مکہ مکرمہ کی آمد پر  پیر  17فروری کو بھٹکل کمیونٹی جدہ کی جانب سے جدہ میں "پیغام انسانیت اور دورِحاضر میں ہماری ذمہ داریاں" کے موضوع پر ایک پروگرام منعقد کیا گیا جس ...

سعودی عرب: ٹرانسپورٹ سے متعلق جُرمانوں کی نئی فہرست میں 221 خلاف ورزیوں کا تعین

سعودی عرب میں ٹریفک کے نظام کی بہتری کے لیے نئے اقدامات کا سلسلہ جاری ہے۔ اس حوالے سے تازہ ترین پیش رفت میں ٹرانسپورٹ اور بسوں کو کرائے پر دیے جانے کی سرگرمیوں سے متعلق 221 خلاف ورزیوں کا تعین کیا گیا ہے۔ ٹریفک کے نظام کے تحت ان میں سے بعض خلاف ورزیوں پر جرمانے کی رقم 5 ہزار ریال تک ...

 کیا نئے قطری وزیراعظم بدعنوانی کے کیس میں ماخوذ ہیں؟

قطر کے نئے وزیراعظم شیخ خالد بن خلیفہ آل ثانی کامبیّنہ طور پر ملک میں کھیلوں کے عالمی مقابلوں کے انعقاد کے لیے بدعنوانی کی ایک ڈیل سے تعلق رہا ہے۔شیخ خالد قطر کے شاہی خاندان کے رکن ہیں۔وہ ملک کے وزیر داخلہ بھی رہ چکے ہیں۔فرانسیسی آن لائن تحقیقاتی جریدے میڈیا پارٹ اور برطانوی ...

سعودی وزارت ثقافت کی جانب سے’نیشنل تھیٹر پروجیکٹ‘کا آغاز

سعودی عرب میں وزارت ثقافت کے زیر انتظام ’نیشنل تھیٹر پروجیکٹ‘ کا آغاز ہو گیا ہے۔ پروجیکٹ کے آغاز کا اعلان منگل کی شام درالحکومت ریاض کے ’کنگ فہد کلچرل سینٹر‘ میں وزیر ثقافت شہزادہ بدر بن عبداللہ بن فرحان کی سرپرستی میں ہوا۔ اس موقع پر نامور فن کاروں، دانش وروں اور سعودی عرب ...

بھٹکل میں موٹر گاڑیوں کی بڑھتی تعداد۔ آمدورفت کی دشواریوں پر قابو پانے کے لئے ٹریفک پولیس اسٹیشن کا قیام اشد ضروری

بھٹکل شہر تعلیمی، معاشی اور سماجی طور پرتیز رفتاری کے ساتھ ترقی کی طرف گامزن ہے۔ لیکن اس ترقی کے ساتھ یہاں پر موٹر گاڑیوں کی تعداد میں بھی بے حد اضافہ ہوا ہے جس سے ٹریفک کے مسائل پیدا ہوگئے ہیں۔ دوسری طرف ٹریفک قوانین کی خلاف ورزیاں بھی بڑھتی جارہی ہیں اوراس سے سڑک حادثے بھی ...

اسمبلی الیکشن: الٹی ہو گئیں سب تدبیریں۔۔۔ آز: ظفر آغا

الٹی ہو گئیں سب تدبیریں... جی ہاں، دہلی اسمبلی الیکشن جیتنے کی بی جے پی کی تمام تدبیریں الٹی پڑ گئیں اور آخر نریندر مودی اور امت شاہ کو کیجریوال کے ہاتھوں منھ کی کھانی پڑی۔ دہلی میں بی جے پی کی صرف ہار ہی نہیں بلکہ کراری ہار ہوئی۔

اسکول کا ناٹک ۔پولس حیلہ بازی کا ناٹک                        ۔۔۔۔۔۔بیدر کے شاہین اسکول کے خلاف ہوئی پولس کاروائی پر نٹراج ہولی یار کی خصوصی رپورٹ

بیدر کے شاہین اسکول میں کھیلے گئے ایک ڈرامے میں اداکاری کرنے والے   اسکولی بچوں سے بار بار پوچھ تاچھ کرنے والے  پولس  کا رویہ ، نہایت  خطرناک اور  خوف میں مبتلا کرنے والا ہے۔ ایک وڈیو کلپ پر انحصار کرتےہوئےمتعلقہ  ڈرامے میں شہری ترمیمی قانون کی تنقید کئے جانے اور وزیرا عظم کی ...

دہلی الیکشن.....شاہین باغ.... شہریت... اور شریعت .... آز: ڈاکٹر سید فاضل حسین پرویز

الحمدللہ! نفرت، دشمنی پھیلانے والوں کو عزت اور ذلت دینے والے نے رسوا کیا۔ ہمارے قدموں کے نیچے سے زمین کھینچنے کی کوشش کرنے والوں کے لئے اُس سرزمین پر جہاں ان کا راج ہے انہیں اجنبی جیسا بناکر رکھ دیا۔ بے شک انسان چاہے لاکھ سازشیں اور کسی کو مٹانے کی کوششیں کرلے جب تک خالق کائنات ...

ہندوؤں کو اقلیتی درجہ دینے کا مطالبہ کرنے والی عرضی سپریم کورٹ سے خارج

سپریم کورٹ نے لفظ اقلیت کی تعریف کرنے اور ملک کی 9 ریاستوں میں اقلیتوں کی شناخت کےلئے ہدایت جاری کرنے سے متعلق عرضی جمعرات کو خارج کر دی۔ عرضی میں مطالبہ کیا گیا تھا کہ جن ریاستوں میں ہندوؤں کی تعداد کم ہے وہاں انہیں اقلیتی درجہ فراہم کیا جائے۔

اپہار آتشزدگی سانحہ: متاثرین کی ’كيوریٹو عرضی‘ خارج، انسل برادران نہیں جائیں گے جیل

سپریم کورٹ نے اپہار سینما آتشزدگی سانحہ میں لاپروائی کے مجرم اورملک کے جانےمانے بلڈر انسل برادران کو بڑی راحت دیتے ہوئے آتشزدگی شکار کی ایسوسی ایشن کی كيوریٹو عرضی خارج کردی ہے۔ اب سشیل انسل اور گوپال انسل کو جیل نہیں جانا پڑے گا۔

دہلی: ڈاکٹر کفیل کی رہائی کے لئے یوپی بھون پر مظاہرہ، جامعہ کے متعدد طلبا پولیس حراست میں

اتر پردیش میں سیاسی اور سماجی کارکنان کے خلاف استعمال کیے جانے والے سخت قوانین کے خلاف جامعہ ملیہ اسلامیہ کے طلبہ نے جمعرات کو یہاں اتر پردیش بھون کا گھیراؤ کرنے کی کوشش کی لیکن پولیس نے انھیں حراست میں لے لیا۔

کیرالہ: وزیر اعلیٰ وجین کا سڑک حادثے میں 20 افراد کی موت پر تعزیت کا اظہار

 کیرالہ کے وزیراعلی پنارائی وجین نے جمعرات کو تمل ناڈو کے تروپور ضلع کے اویناشی کے نزدیک قومی شاہراہ پرایک لاری کے کیرالہ ریاستی ٹرانسپورٹ کارپوریشن (کے ایس آرٹی سی) کی بس سے ٹکرانے کی وجہ سے ہوئے حادثے میں 20 افراد کی موت پر گہرے دکھ کا اظہار کیا ہے۔