یلاپور ضمنی انتخاب میں عوام کے لئے یہ سمجھنا مشکل ہوگیا ہے کہ کس کا تعلق کس پارٹی سے ہے

Source: S.O. News Service | Published on 24th September 2019, 1:17 PM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں | اسپیشل رپورٹس |

یلاپور24/ستمبر (ایس او نیوز) ریاستی اسمبلی انتخابات کو مکمل ہوئے ابھی دوسال بھی پورے نہیں ہوئے تھے کہ بعض اراکین اسمبلی کی اپنی پارٹیوں سے بغاوت او ر استعفے کے بعد دوبارہ ضمنی انتخا بات کا موسم آگیا ہے۔ اس میں ضلع شمالی کینرا کا یلاپور اسمبلی حلقہ بھی ہے۔

یلاپور میں سیاسی پارٹیوں اور کارکنوں کی موجودہ صورت حال کچھ ایسی ہے کہ عوام کے لئے یہ سمجھنا مشکل ہوگیا ہے کونسا سیاسی لیڈر اور کارکن کس پارٹی سے تعلق رکھتا ہے، کیونکہ بعض سیاسی کارکنان او رلیڈر ہر پارٹی کے اجلاس میں دکھائی دے رہے ہیں یا پھر اندرونی طور پر ایک دوسرے کے ساتھ سانٹھ گانٹھ بنائے ہوئے ہیں۔پیر کے دن جے ڈی ایس پارٹی کی میٹنگ منعقد کرنے کے لئے رکن اسمبلی کوناریڈی یلاپور پہنچے تھے۔اس موقع پر جب کوناریڈی ہوٹل سے باہر نکلے تومعروف سیاسی لیڈروی وی جوشی ان کے ساتھ گھل مل کر خوش مذاقی کرتے ہوئے نظر آئے۔ یہ وہی جوشی ہیں جو پہلے جنتادل ایس کے تعلقہ صدر تھے، وہاں سے دَل بدلی کرتے ہوئے انہوں نے کانگریس میں شمولیت اختیار کی اور بلاک کانگریس صدر بن گئے۔ پھر جب سٹنگ ایم ایل اے شیورام ہیبار نے پارٹی سے بغاوت کی اور نااہل قراردئے گئے تو یہی جوشی ان کی حمایت میں کھڑے ہوگئے۔

 اب جب جنتادل ایس کے رکن اسمبلی کے ساتھ کھڑے ہوکر انہوں نے کیمروں کو پوز دیا تو جنتادل کے پرانے ساتھی وی وی جوشی کو خوش آمدید کہتے ہوئے دکھائی دئے۔اس سے عوام کو گمان ہورہا ہے کہ شاید جوشی پھر ایک بار جنتادل ایس میں شامل ہونے جارہے ہیں۔لیکن خود جوشی نے اخبار نویسوں کے اس سوال نہ دیتے ہوئے مسکرانے پر ہی اکتفا کیا۔

ایک دوسرے واقعے میں یلاپور پٹن پنچایت میں جے ڈی ایس سے تعلق رکھنے والے تنہا رکن سید قیصر کانگریس پارٹی کی طرف سے ویدویاس ہال میں منعقدہ پارٹی میں بلاک کانگریس صدر اور دیگر لیڈران کے ساتھ گھلتے ملتے دکھائی دئے۔ وہاں پر انہوں نے بھی اخبارنویسوں کو بھرپور مسکراہٹ کے ساتھ فوٹو اتارنے کے لئے پوز دئے۔تیسری طرف جہاں تک بی جے پی کا تعلق ہے وہاں سے بھی یہ سن گن مل رہی ہے کہ پارٹی کے سابق رکن اسمبلی وی ایس پاٹل اس مرتبہ کانگریس یا جنتادل ایس میں شامل ہوکر شاید انتخابی اکھاڑے میں اترنے کا منصوبہ بنا رہے ہیں۔

 اس غیر یقینی او ربدلتے سیاسی منظر نامے میں اپنی اپنی پارٹیوں سے وفاداری نبھانے والے چھوٹے کارکنان اس الجھن میں ہیں کہ وہ آخر کس پر بھروسہ کریں اور کیا لائحہ عمل اپنائیں۔اس وجہ سے ممکن ہے کہ اس بار جو ضمنی انتخاب ہونے جارہا ہے اس میں نچلی سطح کے سیاسی کارکنان شاید زیادہ دلچسپی نہ لیں اور کسی ایک پارٹی کے لئے ہی مخلص ہوکر انتخاب جیتنے کے لئے میدان میں نہ اتریں۔کیونکہ جب قائدین ہی اس شاخ سے اس شاخ پر پھدکنے لگیں تو بے چارے کارکنان کیا کرسکتے ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل میں اب کورونا کا قہر؛ 45 معاملات سامنے آنے کے بعدحکام کی اُڑ گئی نیند؛ انتظامیہ نےکیا دوپہر دوبجے سے ہی لاک ڈاون کا اعلان

بھٹکل میں کورونا کو لے کر گذشتہ چار پانچ دنوں سے جس طرح کے خدشات ظاہر کئے جارہے تھے، بالکل وہی ہوا، آج ایک ہی دن 45 کورونا کے معاملات سامنے آنے سے نہ صرف حکام  کی نیندیں اُڑ گئیں بلکہ عوام میں بھی خوف وہراس کی لہر دوڑ گئی۔  حیرت کی بات یہ رہی کہ آج جن لوگوں کے رپورٹس پوزیٹیو ...

منگلورو: رکن اسمبلی یوٹی قاد ر کی مداخلت کے بعد نجی اسپتال ہوا پوزیٹیو حاملہ خاتون کے علاج پر راضی

ایک نجی اسپتال میں زچگی کے لئے داخل ہونے والی خاتون کی کورونا جانچ رپورٹ پوزیٹیو آنے کے بعد اسپتال نے اس کاعلاج اور زچگی کرنے سے انکار کردیا۔ مگر رکن اسمبلی یوٹی قادر کی مداخلت کے بعداسپتال انتظامیہ اس خاتون کی زچگی اور علاج کے لئے راضی ہوگئی۔

کورونا سے متاثرہ لوگوں کو بھٹکل ویمن سینٹر کیا گیا شفٹ؛ مزید بستروں کی ہوگی ضرورت

بھٹکل ویمن سینٹر کو کوویڈ۔19 سینٹر میں منتقل کرنے کے بعد  آج اتوار کو بھٹکل سرکاری اسپتال سے تمام کورونا سے متاثرہ لوگوں کو منتقل کیا گیا۔ اس موقع پر قومی سماجی ادارہ مجلس اصلاح و تنظیم  بھٹکل کی جانب سے محمد صادق مٹا  موجود تھے۔ انہوں نے بتایا کہ کل سنیچر رات کو سونارکیری ...

سنڈے لاک ڈاون؛ بھٹکل میں مکمل خاموشی، راستوں کی چہل پہل مکمل بند؛ بازاراور دکانوں پر نظر آئے تالے

ریاست کرناٹک میں  کورونا کے  معاملات میں  روز بروز اضافہ کو دیکھتے ہوئے  ریاستی حکومت نے سنڈے لاک ڈاون کا اعلان کیا تھا، جس کے تحت کل سنیچر شام پانچ بجے سے کل پیر صبح پانچ بجے تک  مکمل لاک ڈاون  نافذ کیا گیا ہے، جس کے دوران آج بھٹکل  کی سڑکیں خاموش رہیں، عوامی چہل پہل مکمل بند ...

ساری توجہ کورونا پر ہے تو کیا دیگر مریض مرجائیں۔۔۔ ؟؟ اسپتالوں میں علاج دستیاب نہ ہونے کے سبب غیر کورونا مریضوں کی اموات میں بے تحاشہ اضافہ

شہر بنگلورو میں کورونا وائرس جس تیزی سے پھیل رہا ہے اس کے ساتھ شہر میں صحت کا انفرسٹرکچر سرکاری سطح پر کس قدر ناقص ہے وہ سامنے آرہا ہے اس کے ساتھ ہی یہ بات بھی سامنے آرہی ہے کہ بڑے بڑے اسپتال کھول کر انسانیت کی خدمت کرنے کا دعویٰ کرنے والے تجاری اداروں کے دعوے کورونا وائرس کے ...

منگلورو: رکن اسمبلی یوٹی قاد ر کی مداخلت کے بعد نجی اسپتال ہوا پوزیٹیو حاملہ خاتون کے علاج پر راضی

ایک نجی اسپتال میں زچگی کے لئے داخل ہونے والی خاتون کی کورونا جانچ رپورٹ پوزیٹیو آنے کے بعد اسپتال نے اس کاعلاج اور زچگی کرنے سے انکار کردیا۔ مگر رکن اسمبلی یوٹی قادر کی مداخلت کے بعداسپتال انتظامیہ اس خاتون کی زچگی اور علاج کے لئے راضی ہوگئی۔

’’سنڈے لاک ڈاؤن ‘‘ ریاست بھر میں مؤثر۔ سڑکیں ویران ، کاروبار بند

کورونا وائرس سے بچنے کے لئے ریاستی حکومت نے ہر اتوار مکمل لاک ڈاؤن کرنے کا جو فیصلہ لیا اس کے مطابق 5 ؍ جولائی پہلی اتوار ہی جب ان لاک ڈاؤن ماحول میں ریاست بھر کے شہریوں نے مکمل لاک ڈاؤن کر کے اس وائرس سے بچنے کے لئے حکومت کے اقدام کو اپنا بھر پور تعاون پیش کیا۔

کورونا وائرس کی روک پر لاک ڈاؤن بے اثر ؛ کرناٹک میں ایک ہی دن 1925 پوزیٹیو کیس، 37؍اموات

ریاست کرناٹک میں کل ایک ہی دن کورونا وائرس کی زد میں آکر 37 مریض ہلاک ہوگئے جبکہ 1925 کووڈ معاملات کا پتہ چلا ہے۔ کرناٹک میں بھی کورونا وائرس کا خوفناک پھیلاؤ رکنے اور تھمنے کا نام نہیں لے رہا ہے، ہر گزرتے لمحے اور دن کے ساتھ کورونا وائرس کے نئے معاملات میں اضافہ ہی ہوتا جارہا ہے،

ساری توجہ کورونا پر ہے تو کیا دیگر مریض مرجائیں۔۔۔ ؟؟ اسپتالوں میں علاج دستیاب نہ ہونے کے سبب غیر کورونا مریضوں کی اموات میں بے تحاشہ اضافہ

شہر بنگلورو میں کورونا وائرس جس تیزی سے پھیل رہا ہے اس کے ساتھ شہر میں صحت کا انفرسٹرکچر سرکاری سطح پر کس قدر ناقص ہے وہ سامنے آرہا ہے اس کے ساتھ ہی یہ بات بھی سامنے آرہی ہے کہ بڑے بڑے اسپتال کھول کر انسانیت کی خدمت کرنے کا دعویٰ کرنے والے تجاری اداروں کے دعوے کورونا وائرس کے ...

بھٹکل میں ہیسکام کے بجلی بل کی ادائیگی کو لے کر تذبذب : حساب صحیح ہے، میٹر چک کرلیں؛افسران کی گاہکوں کو صلاح

تعلقہ میں لاک ڈاؤن کے بعد  ہیسکام محکمہ کی طرف سے جاری کردہ بجلی بلوں  کو لے کر عوام تذبذب کا شکار ہیں۔ ہاتھوں میں بل لئے ہیسکام دفتر کاچکر کاٹنے پر مجبور ہیں، کوئی مطمئن تو کوئی بے اطمینانی کا اظہار کرتے ہوئے پلٹ رہاہے۔ بجلی بل ایک  معمہ بن گیا ہے نہ سمجھ میں آر ہاہے نہ سلجھ ...

”مر کے بھی چین نہ پایا تو کدھر جائیں گے“ ۔۔۔۔۔ از:مولانا محمدحسن غانم اکرمیؔ ندوی ؔ

   اگر تمھارے پاس کوئی شخص اپنی امانت رکھوائے،اورایک متعینہ مدت کے لئے وہ تمھارے پاس رہے،کیا اس دوران اس چیز کا بغیر اجازت اور ناحق تم استعمال کروگے،کیا ا س میں اپنی من مانی کروگے؟یا چند دن آپ کے پاس رہنے سے وہ چیز تمھاری ہو جائے گی کہ جب وقت مقررہ آجائے اور مالک اس کی فرمائش ...