بھٹکل و اطراف کے کھلاڑیوں کے لئے خوش خبری ؛جلد قائم ہوگی ’بھٹکل اسپورٹس اکیڈیمی‘۔ دلچسپی رکھنے والے کھلاڑی رجسٹر کروائیں

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 25th February 2018, 2:26 PM | ساحلی خبریں | اسپورٹس |

بھٹکل25 فروری (ایس او نیوز) بھٹکل کے کھلاڑیوں کےلئے بڑی خوش خبری یہ ہے کہ یہاں کھلاڑیوں کو کھیل کی مکمل تربیت فراہم کرنے اور اُنہیں نہ صرف ضلعی اور ریاستی بلکہ قومی سطح تک لے جانے کے لئے درکار مکمل گائیڈلائن فراہم کرنے بھٹکل اسپورٹس ڈاٹ کوم کی جانب سے ایک اکیڈمی شروع کی جارہی ہے، جس کی تیاریاں گذشتہ کچھ ماہ سے زور و شور کے ساتھ جاری ہے۔

اخباری نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے بھٹکل اسپورٹس ڈاٹ کام کے منیجنگ ڈائریکٹر جناب وسیم کے ایم نے بتایا  کہ ’ بھٹکل اسپورٹس اکیڈیمی‘کا اپنا ایک کرکٹ کوچنگ سنٹر ہوگا جس میں کرکٹ کھلاڑیوں کو مزید تربیت پانے اور کھیل کو تیکنیکی اعتبار سے بہتر بنانے کے مواقع حاصل ہونگے۔اس تربیتی سنٹر کی طرف سے ملکی سطح پر کرکٹ کے ماہر کھلاڑیوں اور تربیت کاروں کی خدمات حاصل کی جائیں گی تاکہ کھلاڑیوں کو بہترین تربیت اور عمدہ نگرانی میں اپنا مستقبل بنانے کا موقع ملے۔جناب وسیم نے کہا :’’ہم نے روزانہ اسکول کے تعلیمی اوقات سے پہلے اور بعد میں تربیتی سیشنس اور ہفتے کی چھٹی کے موقع پر پورے دن کا سیشن چلانے کا منصوبہ بنایا ہے۔تربیت کا لائحہ عمل تربیت پانے والے طالب علم کی سہولت کے مطابق طے کیا جائے گا۔ریگولر سیشنس کے علاوہ چھٹیوں کے دنوں میں خصوصی تربیتی کیمپ اور ملک کے مختلف مقامات کے ٹور کابھی اہتمام کیا جائے گا، تاکہ زیر تربیت کھلاڑیوں کو وسیع تجربہ اور مشاہدہ کے مواقع ملیں۔

جناب وسیم نے مزید یہ بھی بتایا کہ’ بھٹکل اسپورٹس اکیڈیمی‘ میں زیر تربیت کھلاڑیوں کو اکیڈیمی کی ٹیم میں کھیلنے اور ہبلی دھارواڑ ژون میں کرناٹکا اسٹیٹ کرکٹ ایسو سی ایشن(کے ایس سی اے) کی طرف سے منظور شدہ ٹورنامنٹس میں اکیڈیمی کی نمائندگی کرنے کا موقع بھی میسر ہوگا ۔اخباری بیان کے مطابق ہوٹل ٹی ایف سی اِن کے سامنے (کاماکشی پٹرول پمپ) کے قریب واقع اکیڈیمی کے گراؤنڈ پر امسال یکم اپریل سے 15مئی تک 8سال سے زیادہ عمر کے بچوں کے لئے45 دنوں کا ایک سمر کوچنگ کیمپ منعقد ہوگا، جس میں کھلاڑیوں کو روزانہ دو سیشنس ملیں گے۔

کرکٹ کھیلنے اور اس میں مہارت حاصل کرنے کے خواہشمند کھلاڑیوں سے درخواست کی گئی ہے کہ و ہ بھٹکل اسپورٹس ڈاٹ کام کے آفیشئل ویب سائٹ پر مہیا کیاگیا فارم پُر کرتے ہوئے اپنے آپ کو رجسٹر کروائیں۔انہوں نے یہ بھی بتایا کہ  جو کھلاڑی مارچ ختم ہونے سے پہلے پہلےاپنا نام رجسٹرڈ کرائیں گے، اُنہیں خصوصی رعایت دی جائے گی۔

مزید معلومات کے لئے جامعہ آباد روڈ  پر  سیدنا ابوبکر مسجد کے قریب واقع بھٹکل اسپورٹس ڈاٹ کام کے دفترمیں جناب وسیم کے ایم یا نصراللہ عسکری سے رابطہ قائم کرسکتے ہیں۔ وسیم کے ایم کا موبائل نمبر: 09020 82963 91 +

ایک نظر اس پر بھی

 استعمال شدہ موٹر گاڑیوں کی فروخت کے نام پرفوجیوں کے روپ میں جعلساز گروہ ہوا ہے سرگرم۔ عوام محتاط رہیں!

جعلسازوں کا ایک گروہ فوجیوں کے نام سے استعمال شدہ گاڑیوں کی فروخت کرنے والا ایک جعلساز گروہ سوشیل میڈیا پرسرگرم ہوگیا ہے، جس کے پھندے سے عوام کو محتاط رہنے کی تنبیہ کی گئی ہے۔

’ہنگایو‘ آئسکریم کے منیجنگ ڈائرکٹر بھٹکل کے پردیپ پائی کوملی ’ویژن گروپ‘ کی رکنیت 

بھٹکل کے مشہور و معروف تاجر او ر ’ہنگایو‘ آئسکریم پرائیویٹ لمیٹیڈکے منیجنگ ڈائریکٹر پردیپ پائی کو دھارواڑ ڈسٹرکٹ میں فاسٹ موئنگ کنزیومر گُڈس (ایف ایم سی جی)مینوفیکچرنگ کلسٹر قائم کرنے کے لئے کرناٹکا ’ویژن گروپ‘کا رکن منتخب کیا گیا ہے جبکہ منگلورو کے رہنے والے اور جیوتی ...

دبئی سے 178 مسافر صحیح سلامت پہنچے بھٹکل؛ ہوٹل اور اسکول میں کیا گیا کورنٹائن

کورونا لاک ڈاون میں پھنسے دبئی کے 178 لوگ آج بدھ صبح صحیح سلامت بھٹکل پہنچ گئے جن میں 103 مرد حضرات کو  جامعہ آباد روڈ پر واقع علی پبلک اسکول میں کورنٹائن کیا گیا ہے تو وہیں 75 لوگوں کو جن میں زیادہ تر فیملیس اور بچے ہیں، پرائیویٹ ہوٹل میں کورنٹائن کیا گیا ہے۔

اُترکنڑا میں آج پھر کورونا کے 20 کیسس؛ بھٹکل کے ایک شخص کی مینگلور میں موت سمیت 13 پوزیٹیو

اُترکنڑا میں کورونا کے معاملات رُکنے کا نام نہیں لے رہے ہیں اور ہرروز  کورونا سے متاثرہ لوگ یہاں سامنے آرہے ہیں، حیرت کی بات یہ ہے کہ ضلع کے بھٹکل میں بھی کورونا پوزیٹیو معاملات  تھمنے کا نام نہیں لے رہے ہیں، ایک طرف ضلع میں 20 کورونا پوزیٹیو کے معاملات سامنے آئے ہیں تو اس میں ...

اُلال کے رکن اسمبلی یوٹی قادر سے ایس ڈی پی آئی کا مطالبہ

جنوبی کینرا بنٹوال تعلقہ کے سجی پانڈو دیہات میں ہر سال بارش کے موسم میں گزشتہ 30 برسوں سے لوگوں کو ہمیشہ  پریشانی کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ یہ علاقہ اُلال کے رکن اسمبلی یوٹی قادر کے حلقہ میں آتا ہے اور یہاں مسلمانوں کی کثیر آباد ی ہے۔

منگلورو۔کاسرگوڈ سرحد پر مسافروں کیلئے پریشانی

ریاست میں گزشتہ ماہ اپریل سے ہی کورونا وائرس پھیلنے کے نتیجہ میں کیرالہ ۔ کرناٹک کی سرحد پر واقع کاسرگوڈ اور منگلورو کے درمیان روازنہ ملازمت اور تعلیم کے سلسلہ میں آنے جانے والے لوگوں کیلئے ہر دن نت نئی پریشانیوں کا سامنا کرناپڑرہا ہے۔