ضلع شمالی کینرا میں کس کو ملے گی وزارت؟ اسپیکر نے رد کردی ہے ہیبار کی رکنیت۔کیا ایڈی یورپاکے دل میں نہیں ہے کاگیری کی اہمیت ؟

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 29th July 2019, 9:41 PM | ساحلی خبریں | اسپیشل رپورٹس |

بھٹکل 29/جولائی (ایس اونیوز)ایڈی یورپا کی قیادت میں بی جے پی نے ریاستی اسمبلی نے اعتماد کا ووٹ جیت لیاہے اوراب اگلا مرحلہ وزارتی قلمدانوں کی تقسیم کا ہے۔ جس کے بارے میں خود بی جے پی خیمے ہلچل اور جوڑ توڑکی کوششیں یقینی ہیں۔

 جہاں تک ضلع شمالی کینرا کا تعلق ہے سیاسی پنڈ ت اس سوال پر نظریں ٹکائے ہوئے ہیں کہ یہاں سے کس کو منتری بنایا جائے گا۔الجھن اس بات پرہے کہ کانگریسی رکن اسمبلی شیورام ہیبار نے وزارتی قلمدان کے لالچ میں استعفیٰ دے کر مخلوط حکومت گرانے میں اپنا کردار تو ادا کیا لیکن ان کے باضابطہ طورپر بی جے پی میں شامل ہونے اور نئی حکومت کا حصہ بننے سے قبل اسپیکر رمیش کمار نے ان کی رکنیت باطل قرار دے کر فی الحال انہیں راستے سے ہٹادیا ہے۔ دوسری طرف بی جے پی کے رکن اسمبلی وشویشورہیگڈے کاگیری ہیں۔ وہ بی جے پی کے ایک سینئر ایم ایل اے ہیں اور ماضی میں وزیر بھی رہ چکے ہیں۔ لیکن ان کے ساتھ ایک مشکل یہ ہے کہ وہ ایڈی یورپا کے پسندیدہ گروہ میں شامل نہیں سمجھے جاتے، اس لئے ایڈی یورپا خوش دلی سے انہیں وزارت کا قلمدا ن سونپنے والے نہیں ہیں۔ 

 مسئلہ یہ بھی ہے کہ کانگریس اور جے ڈی ایس کے جن13 باغی اراکین نے مبینہ طور پر آپریشن کنول کے تحت دَل بدلی کی نیت سے بغاوت کرتے ہوئے استعفیٰ دے رکھا تھا ان تمام اراکین اسمبلی کی رکنیت کو اسپیکر رمیش کمار نے باطل قرار دیا ہے اور عبوری طور پر بی جے پی میں شامل ہونے یا پھرضمنی انتخابات میں حصہ لینے کے لئے وہ تمام اراکین نااہل ٹھہرے ہیں۔لیکن اسپیکر کے ذریعے نااہل قرارپانے والے اراکین نے اس فیصلے کے خلاف سپریم کورٹ کا دروازہ کھٹکھٹانے کا ارادہ ظاہرکیاہے۔ ایسے میں دیکھنا یہ ہے کہ سپریم کورٹ سے ان اراکین کو اسٹے ملتا ہے یا نہیں۔ لہٰذاچند دنوں کے اندر تازہ صورتحال کیا ہوگی اس کا خلاصہ سامنے آنے والا ہے۔اس دوران ایڈی یورپا کے لئے ضروری ہوجائے گا کہ وہ وزارتی قلمدانوں کی تقسیم کا کم ازکم پہلا مرحلہ تو ختم کریں۔پھر اس کے بعد دوسرے مرحلے میں مزید توسیع کے امکانات رہ جائیں گے۔

 اب پہلے مرحلے میں کابینہ کی تشکیل کے موقع پر ضلع شمالی کینرا کو جوڑا جاتا ہے تو پھر وشویشور ہیگڈے کاگیری کو ہی وزیر بنانا لازمی ہوجائے گا اوریہ بات ایک طرف ایڈی یورپا کو پسند نہیں آئے گی، تو دوسری طرف شیورا م ہیبار کو انگوٹھا دکھانے جیسا ہوجائے گا۔اس لئے جانکاروں کا کہنا ہے کہ ایڈی یورپا اپنی کابینہ کی تشکیل کے لئے دو چار دن انتظار کریں گے اور باغیوں کے تعلق سے سپریم کورٹ کا عبوری فیصلہ دیکھنے کے بعد ہی قدم آگے بڑھائیں گے۔باغی اراکین کو سپریم کورٹ سے راحت ملنے کی صورت میں ایڈی یورپا کی طرف سے ضلع شمالی کینرا سے شیورام ہیبار کوہی وزیر بنائے جانے کے امکانات زیادہ دکھائی دے رہے ہیں۔جبکہ پارٹی کے اندر وشویشور کاگیری کو وزارتی قلمدان کا حقدار ماننے والے افراد کا غلبہ ہے اور وہ چاہتے ہیں کہ کاگیری کو ہی وزارت سونپی جائے۔بس چند دن انتظار کرکے دیکھناہوگا کہ ضلع شمالی کینرا کو وزارت کا کوٹہ پوراکرنے کی صورت میں ایڈی یورپا کی ذاتی پسنداورترجیح حاوی ہوتی ہے یا پھر پارٹی میں موجود کاگیری کو چاہنے والوں کو رائے کو اہمیت دی جاتی ہے۔
 

ایک نظر اس پر بھی

کاروار اسپتال سے 12 مزید لوگ ڈسچارج

بھلے ہی  ضلع اُترکنڑا میں کورونا پوزیٹیو کے معاملے ہر روز سامنے آرہے ہوں، لیکن کاروار اسپتال میں ایڈمٹ کورونا کے متاثرین  روبہ صحت ہوکر ڈسچارج ہونے کا سلسلہ بھی برابر جاری ہے۔

اُترکنڑا میں پھر 36 کورونا پوزیٹیو؛ بھٹکل میں بھی کورونا کے بڑھنے کا سلسلہ جاری؛ آج ایک ہی دن 19 معاملات

اُترکنڑا میں کورونا کے معاملات میں روز بروز اضافہ کا سلسلہ جاری ہے اور آج منگل کو بھی ضلع کے مختلف تعلقہ جات سے 36 کورونا کے معاملات سامنے آئے ہیں جس میں صرف بھٹکل سے پھر ایک بار سب سے زیادہ  یعنی 19 معاملات سامنے آئے ہیں۔ کاروار میں 6،  ہلیال میں 3،  کمٹہ، ہوناور ...

دبئی سے بھٹکل و اطراف کے 181 لوگوں کو لے کر آج آرہی ہے دوسری چارٹرڈ فلائٹ؛ رات کو مینگلور ائرپورٹ میں ہوگی لینڈنگ

کورونا وباء اور اس کے بعد ہوئے لاک ڈاون سے  دبئی اور امارات میں پھنسے ہوئے 181 لوگوں کو لے کر آج دبئی سے دوسری چارٹرڈ فلائٹ مینگلور پہنچ رہی ہے۔ اس بات کا اطلاع بھٹکل کے معروف اورقومی سماجی ادارہ مجلس اصلاح و تنظیم کے نائب صدر  جناب عتیق الرحمن مُنیری نے دی۔

منگلورو:گروپور میں منڈلارہا ہے مزید پہاڑی کھسکنے کا خطرہ۔ قریبی گھروں کو کروایا گیاخالی۔ مکینوں میں مایوسی اور دہشت کا عالم

گروپور میں اتوار کے دن بنگلے گُڈے میں پہاڑی کھسکنے سے جہاں  تین  مکان زمین بوس اور دو بچے، صفوان (16سال) اور سہلہ (10سال) جاں بحق ہوگئے تھے وہاں پر مزید پہاڑی کھسکنے کا خطرہ لوگوں کے سر پر منڈلا رہا ہے۔

بھٹکل میں اب کورونا کا قہر؛ 45 معاملات سامنے آنے کے بعدحکام کی اُڑ گئی نیند؛ انتظامیہ نےکیا دوپہر دوبجے سے ہی لاک ڈاون کا اعلان

بھٹکل میں کورونا کو لے کر گذشتہ چار پانچ دنوں سے جس طرح کے خدشات ظاہر کئے جارہے تھے، بالکل وہی ہوا، آج ایک ہی دن 45 کورونا کے معاملات سامنے آنے سے نہ صرف حکام  کی نیندیں اُڑ گئیں بلکہ عوام میں بھی خوف وہراس کی لہر دوڑ گئی۔  حیرت کی بات یہ رہی کہ آج جن لوگوں کے رپورٹس پوزیٹیو ...

ساری توجہ کورونا پر ہے تو کیا دیگر مریض مرجائیں۔۔۔ ؟؟ اسپتالوں میں علاج دستیاب نہ ہونے کے سبب غیر کورونا مریضوں کی اموات میں بے تحاشہ اضافہ

شہر بنگلورو میں کورونا وائرس جس تیزی سے پھیل رہا ہے اس کے ساتھ شہر میں صحت کا انفرسٹرکچر سرکاری سطح پر کس قدر ناقص ہے وہ سامنے آرہا ہے اس کے ساتھ ہی یہ بات بھی سامنے آرہی ہے کہ بڑے بڑے اسپتال کھول کر انسانیت کی خدمت کرنے کا دعویٰ کرنے والے تجاری اداروں کے دعوے کورونا وائرس کے ...

بھٹکل میں ہیسکام کے بجلی بل کی ادائیگی کو لے کر تذبذب : حساب صحیح ہے، میٹر چک کرلیں؛افسران کی گاہکوں کو صلاح

تعلقہ میں لاک ڈاؤن کے بعد  ہیسکام محکمہ کی طرف سے جاری کردہ بجلی بلوں  کو لے کر عوام تذبذب کا شکار ہیں۔ ہاتھوں میں بل لئے ہیسکام دفتر کاچکر کاٹنے پر مجبور ہیں، کوئی مطمئن تو کوئی بے اطمینانی کا اظہار کرتے ہوئے پلٹ رہاہے۔ بجلی بل ایک  معمہ بن گیا ہے نہ سمجھ میں آر ہاہے نہ سلجھ ...

”مر کے بھی چین نہ پایا تو کدھر جائیں گے“ ۔۔۔۔۔ از:مولانا محمدحسن غانم اکرمیؔ ندوی ؔ

   اگر تمھارے پاس کوئی شخص اپنی امانت رکھوائے،اورایک متعینہ مدت کے لئے وہ تمھارے پاس رہے،کیا اس دوران اس چیز کا بغیر اجازت اور ناحق تم استعمال کروگے،کیا ا س میں اپنی من مانی کروگے؟یا چند دن آپ کے پاس رہنے سے وہ چیز تمھاری ہو جائے گی کہ جب وقت مقررہ آجائے اور مالک اس کی فرمائش ...