گلف سے لوٹنے والوں کے لئے خوش خبری: کویڈ نگیٹیو رپورٹ لانے کی صورت میں نہیں ہوگی سرکاری کوارنٹین؛ 8اگست سے لاگو ہونگے قوانین

Source: S.O. News Service | Published on 3rd August 2020, 11:05 PM | ملکی خبریں | ساحلی خبریں | خلیجی خبریں |

نئی دہلی 3/اگست (ایس ا و نیوز) مرکزی حکومت نے بیرونی ممالک سے ہندوستان لوٹنے والے مسافروں کے لئے اس سے پہلے لازمی کوارنٹین کی جو گائڈ لائنس جاری کی تھی، اب اس پروٹوکول میں کچھ ترمیم کی ہے اور نئی گائڈ لائنس جاری کی  ہیں جن پر 8/اگست سے عمل درآمد کیاجائے گا۔

اس سے پہلے بین الاقوامی مسافروں کے لئے ہوٹل میں سرکاری طور پر کوارنٹین میں رہنا لازمی تھا، لیکن اب اس میں کچھ شرائط کے ساتھ ڈھیل دی گئی ہے جس کے مطابق کچھ لوگوں کوہوٹل میں لازمی طور پر نہ رہتے ہوئے 14دنوں تک صرف گھر میں کوارنٹین کی اجازت دی جاسکتی ہے۔ 

یہ ڈھیل ان لوگوں کے لئے ہوگی جنہوں نے سفر سے پہلے مگر 96گھنٹے کے اندر اپنی کووِڈ جانچ کروائی ہوگی اور اس کی رپورٹ نگیٹیو آئی ہوگی۔ان مسافروں کو بھی یہ چھوٹ مل سکتی ہے جن کے ساتھ کوئی بہت بڑی مجبوری ہوگی۔ جیسے وہ کسی تکلیف یا مصیبت میں مبتلا ہوگئے ہونگے۔ سفر کرنے والی خاتون حاملہ ہو، خاندان میں کوئی بہت ہی زیادہ سنگین حالت میں بیمار ہویا پھر ایسے والدین جن کے ساتھ 10 سال سے کم عمر کے بچے ہونگے۔

 لازمی طورپر ہوٹل کوارنٹین سے چھوٹ پانے کے لئے جو طریقہ سرکاری گائڈ لائنس میں بتایا گیا ہے اس کے مطابق بیرونی ملک سے ہوائی، بحری اور برّی راستے سے سفر کرکے ہندوستان میں داخل ہونے اور لازمی کوارنٹین سے بچنے کے خواہشمندوں کو مندرجہ ذیل اقدامات کرنے ہونگے:

1۔ تمام مسافروں کو اپنے سفر سے 72گھنٹے پہلے سرکاری ویب سائٹ (www.newdelhiairport.in)پر ایک خود کا اقرا ر نامہ (سیلف ڈکلریشن) اَپ لوڈ کرنا ہوگا اور وعدہ کرنا ہوگا کہ وہ اپنے ذاتی خرچ پر 7دن سرکاری نگرانی میں اور پھر 7دن گھر پر لازمی کوارنٹین میں رہنے کے لئے تیار ہیں۔

2۔  اگر کوئی سرکار کی طرف سے دی گئی مشروط چھوٹ کے زمرے میں آتا ہے اور وہ صرف ہوم کوارنٹین ہونا چاہتا ہے، تو ایسے مسافر کو جہاز پر سوار ہونے سے 72گھنٹے قبل مذکورہ بالا سرکاری ویب سائٹ پر اپنی درخواست اَپ لوڈ کرنی ہوگی۔اور اس درخواست کے جواب میں اسی آن لائن پورٹل پر درخواست منظور یا مسترد کرنے کاجو فیصلہ اسے سنایا جائے گا وہ قطعی اور آخری ہوگا۔

3۔  سرکاری کوارنٹین سے بچنے کی سہولت پانے کے لئے مسافراپنی کووِڈ جانچ کی نگیٹیو آنے والی رپورٹ کا سہارا لے سکیں گے۔ لیکن یہRT-PCR جانچ سفر سے پہلے اور 96گھنٹوں کے اندر کی گئی ہو۔ اس ٹیسٹ رپورٹ کوافسران کو متوجہ کرنے کے لئے پورٹل پر اپ لوڈ کیا جانا چاہیے۔ایسی رپورٹ پیش کرنے والے ہر مسافر کے لئے ضروری ہوگا کہ وہ اس جانچ رپورٹ کے مستند اور مصدقہ ہونے کے سلسلے میں اقرار نامہ بھی پیش کرے اوریاد رکھنا چاہیے کہ اگر رپورٹ جھوٹی ثابت ہوئی تو اس کے خلاف کریمنل قانونی کارروائی کی جائے گی۔کووِڈ نگیٹیو رپورٹ ہندوستانی ایئر پورٹ پر اترنے کے بعد پیش کیا جاسکے گا۔

4۔  جن مسافروں نے سرکاری پورٹل پر خود کا اقرار نامہ (سیلف ڈکلریشن)اپ لوڈ نہیں کیاہوگا انہیں طیارے /جہاز کے اندر اصل او رنقل (ڈوپلی کیٹ) کے ساتھ یہ ڈکلریشن بھرنا ہوگا اور اپنی منزل پر پہنچنے کے بعد متعلقہ افسران کے حوالے کرنا ہوگا۔ جن لوگوں نے پورٹل پر اپ لوڈ کیا ہوگا انہیں اپنے سیلف ڈکلریشن کی کاپی موبائل وغیرہ پر افسران کو دکھانی ہوگی۔

اس کے علاوہ تمام مسافروں کواپنے موبائل فون پر’آروگیہ سیتو‘ ایپ ڈاؤن لوڈ کرنا ہوگا۔ہوائی جہاز یا پانی کے جہاز پر سوار ہونے سے قبل مسافروں کی طبی جانچ کی جائے گی اور صرف ایسے مسافروں کو سفر کرنے کی اجازت دی جائے گی جن کے اندر بیماری کی کوئی علامت موجود نہیں ہوگی۔

منزل پر پہنچنے والے جو مسافر چھوٹ پانے والے زمرے میں ہونگے(جس کی اطلاع انہیں پہلے سے پورٹل پر دی جاچکی ہوگی) اور ان کے اندر بیماری کی کوئی علامت نہیں ہوگی انہیں 14دن کے ہوم کوارنٹین میں بھیج دیا جائے گا۔ اور جن مسافروں کے اندر بیماری کی علامات ہونگی انہیں طبی سہولت والے مراکز میں بھیج دیا جائے گا۔

چھوٹ پانے والے زمرے میں جو مسافر شامل نہیں ہونگے انہیں 7دن کے لئے سرکاری نگرانی والے کوارنٹین مراکز میں بھیجا جائے گا اور آئی سی ایم آر پروٹوکول کے مطابق کووڈ کے لئے ان کی جانچ کی جائے گی۔ان کی رپورٹ نگیٹو آنے کی صورت میں مزید 7دن گھر میں کوارنٹین کے لئے بھیج دیا جائے گا اور جن کی رپورٹ پوزیٹیو آئے گی ان کی حالت او رعلامات کا جائزہ ہیلتھ ڈپارٹمنٹ کی طرف سے لینے کے بعد ضروری اقدامات کیے جائیں گے۔بحری اوربرّی راستے سے آنے والے مسافروں کے لئے بھی یہی پروٹو کول اپنا یا جائے گا۔

مرکزی حکومت کی جانب نئی گائڈ لائنس جاری کرتے ہوئے ریاستوں کو یہ اختیار دیا گیا ہے کہ وہ اپنی ریاستوں کی صورت حال کو سامنے رکھتے ہوئے مسافروں کے کوارنٹین اور آئسولیشن کے سلسلے میں خود اپنا پروٹوکول وضع کرسکیں گے او راپنے حساب سے اس پر عمل درآمد کرسکیں گے۔    
 

ایک نظر اس پر بھی

چین کیلئے جاسوسی کرتے پکڑے گئے راجیو شرما کے پیچھے اور بھی بڑے ہاتھ ہوسکتے ہیں۔ ایس ڈی پی آئی نے غیر جانبدارانہ تحقیقات کا کیا مطالبہ

سوشیل ڈیموکریٹک پارٹی آف انڈیا (ایس ڈی پی آئی) کے قومی جنر ل سکریٹری عبدالمجید نے اپنے جاری کردہ اخباری اعلامیہ میں کہا ہے کہ چین کیلئے جاسوسی کرتے چینی خاتون کے ساتھ پکڑے گئے راجیو شرما کے پیچھے اور بھی بڑے ہاتھ ہوسکتے ہیں۔ ایس ڈی پی آئی نے مطالبہ کیا ہے کہ شرما کے تعلق سے  غیر ...

بھٹکل: ٹریڈ لائسنس بنانےیا رینیو کرانے میونسپالٹی میں الگ کاونٹر قائم کرنے اسسٹنٹ کمشنر سے مطالبہ

بھٹکل میونسپالٹی میں ٹریڈ لائسنس نیا کرانے یا پرانے لائسنس کو رینیو کرانے کے لئے ایک الگ کاونٹر قائم کرنے سمیت  میونسپالٹی میں لائسنس  کے تعلق سے ہرممکن سہولت فراہم کرنے کا مطالبہ لے کر بھٹکل بزنس کمیونٹی (بازار علاقہ) کے  ایک وفدنے بھٹکل اسسٹنٹ کمشنر سے ملاقات کی ہے۔

بھٹکل:طوفانی بارش کے درمیان بیچ سمندر میں بوٹ کا انجن بند؛ بری طرح پھنسے ماہی گیروں کو بچالیا گیا

بھٹکل میں آج صبح سے رات دیر گئے تک طوفانی ہواوں کے ساتھ بارش کا سلسلہ جاری ہے، ایسے میں آج اتوار صبح ماہی گیروں کی ایک بوٹ جو بحر عرب میں  بری طرح پھنس گئی تھی اور اُس پر سوار چار ماہی گیروں کے جان کے لالے پڑ گئے تھے، شام تک چاروں کو بچالئے جانے کی اطلاع ملی ہے۔

بھٹکل میں دو مختلف سڑک حادثات؛ بائک اور کار کی ٹکر میں دو زخمی، آٹو رکشہ اور لاری کی ٹکر میں ایک زخمی

بھٹکل میں آج اتوار کو ہوئےدو مختلف سڑک حادثات میں تین لوگ زخمی ہوگئے جن میں  ایک سرکاری اسپتال سے ابتدائی طبی امداد کے بعد اُڈپی شفٹ کیا گیا ہے جبگہ   دیگر دو کو   قریبی اسپتال سے  مرہم پٹی کرائی گئی ہے۔

ایران پر اسلحہ کے حصول پرعاید پابندیاں برقرار رکھنے کی جدوجہد جاری رکھیں گے: پومپیو

امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے اپنے برطانوی ہم منصب ڈومینک راب کے ساتھ مشترکہ پریس کانفرنس میں کہا ہے کہ واشنگٹن ایران پر عائد اسلحہ کے پابندی کو برقرار رکھنے کے لیے اپنی کوششیں جاری رکھے گا۔ ...

کینسر کے شکار سعودی استاد کی بسترعلالت سے طلبا کی تدریس

سعودی عرب میں اپنے طلبا کو زیور علم سے آراستہ کرنے کے جذبے سے سرشار کینسر کا شکار ایک استاد کا سبق آموز اور قابل تقلید واقعہ سامنے آیا ہے جو چار ماہ سے خود اسپتال میں بستر علالت پر ہونے کے باوجود اپنی تکلیف کو بھلا کر بچوں کی تدریس کے فرائض انجام دے رہا ہے۔ ...