بھٹکل کے دو سمیت سات لاپتہ ماہی گیروں کی تلاش کے لئے آننت کمار ہیگڈے نے لکھا مرکزی وزیر داخلہ کو خط؛ بی جے پی کی بھٹکل میں پریس کانفرنس

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 1st January 2019, 8:25 PM | ساحلی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

بھٹکل یکم جنوری (ایس او نیوز)گزشتہ 15ڈسمبر 2018کو اُڈپی ملپے بندرگاہ سے گہرے سمندر میں مچھلی کا  شکار کرنے کے  دوران دیر رات لاپتہ ہونے والی  سورنا تربھوج نامی کشتی اور اُس پر سوار سات  ماہی گیر وں کی تلاش کرنے اور اُن کا پتہ لگانے کے لئے مرکزی وزیر اننت کمار ہیگڈے نے مرکزی وزیر داخلہ اور وزیر دفاع راجناتھ سنگھ  کو خط لکھتے ہوئے ضروری اقدامات اٹھانے کی درخواست کی ہے۔

پیر کی شام یہاں سرکٹ ہاؤس میں منعقدہ پریس کانفرنس میں بھٹکل بی جے پی شاخ کے صدر راجیش نائک نے بتایا کہ بھٹکل کے دو، کمٹہ کے دو، اُدپی کے دو اور منکی کا ایک جملہ سات ماہی گیر، متعلقہ کشتی پر سوار تھے جن کی گمشدگی کو 15 دن سے زائد کا عرصہ گذر چکا ہے  مگر حکومت ابھی تک اُن سراغ لگانے میں ناکام ہے۔ جس کو دیکھتے ہوئے ضلع اُترکنڑا کے رکن پارلیمان آننت کمار ہیگدے نے راجناتھ سنگھ کو خط لکھتے ہوئے  شبہ ظاہر کیا ہے کہ  اس سے قبل 26 نومبر کو ممبئی میں ہوئے حملہ میں دہشت گردوں نے ایسا ہی طریقہ اختیار کرتے ہوئے بھارتی ماہی گیروں کو اغواء کرتے ہوئے دہشت گردانہ  کرتوت انجام دی تھی۔ لہٰذا اس  معاملے کو بھی سنگین مانا جائے اور  کوسٹ گارڈ افسران کا استعمال کرتے ہوئے اعلیٰ سطح کی جانچ  کی جائے۔

پریس کانفرنس میں بتایا گیا کہ مقامی رکن اسمبلی سنیل نائک ، ودھان پریشد میں حزب مخالف لیڈر کوٹا شری نواس پجاری سمیت پارٹی کے اعلیٰ لیڈران اس سلسلے میں کوشش کررہے ہیں۔ 15دنوں سے ماہی گیر سمیت  بوٹ بھی لاپتہ ہے، گم ہونے والوں میں بھٹکل کے بھی 2ماہی گیر ہیں جن کی شناخت الوے کوڈے کے  ہریش موگیر اور بیلنی کے رمیش موگیر کی حیثیت سے کی گئی ہے۔

راجیش نائک نے الزام لگایا کہ غریب ماہی گیروں کی گمشدگی پر کوئی توجہ نہیں دے رہاہے، کوئی اُن کے گھر جاکر خبرگیری نہیں کررہا ہے قومی میڈیا میں بھی اس تعلق سے خبریں نہیں آرہی ہیں  ۔ انہوں نے ریاستی حکومت سے مطالبہ کیا کہ اس سلسلے میں فوری ضروری اقدام کرے، انہوں نے  اس معاملے میں پارٹی وغیرہ کی تفریق نہ کرنے کی درخواست کی۔ انہوں نے  ماہی گیروں سے  بھی معاملے کو لے کراتحاد کا مظاہرہ کرنے کی اپیل کی۔

راجیش نائک کے مطابق متعلقہ واردات پر ملپے کے سوا  کسی بھی دیگر علاقوں میں  معاملے کو سنجید گی سے نہیں لیا گیا ہے، اور ٹھیک طرح سے کوئی جدوجہد بھی نہیں ہورہی ہے۔ بی جے پی سکریٹری سبرائے دیواڑیگا، سبرائے نائک، کرشنا نائک آسارکیری ، دنیش نائک، گروداس موگیر، ماہی گیر لیڈران شری دھر موگیر، شری نواس کھاروی، گوپال موگیر وغیرہ موجود تھے۔

ایک نظر اس پر بھی

اگر آپ عزت دار ماہی گیر ہیں تو آننت کمار ہیگڈے کو ہرگز ووٹ نہ دیں؛ بھٹکل میں ماہی گیروں سے پرمود مدھوراج کی اپیل

اگر آپ عزت دار ماہی گیر ہیں تو  آپ کو چاہئے کہ  ماہی گیروں کی پرواہ نہ کرنے والے بی جے پی اُمیدوار آننت کمار ہیگڈے  کو ہرگز ووٹ  نہ دیں۔ ملپے سے نکلی سات ماہی گیروں پر مشتمل بوٹ لاپتہ ہوکر  پانچ ماہ ہوچکے ہیں مگر مرکزی وزیر آننت کمار ہیگڈے کو ماہی گیروں کی پرواہ ہی نہیں ہے۔ ...

منگلورو میں ایک عجیب سانحہ۔بوتھ کے آخری ووٹر نے ووٹ دینے کے بعد لی آخری سانس

پاجیرو گاؤں کے پانیلا میں ایک شخص نے پولنگ بوتھ میں اپنا ووٹ ڈالنے کے بعد گھر لوٹتے ہی دم توڑ دیا۔پانیلا کے رہنے والے والٹر ڈیسوزا(۴۰سال) گردے کی بیماری میں مبتلا تھاجس کے لئے وہ بہت عرصے سے زیرعلاج تھا۔

دو مراحل میں ایس پی۔بی ایس پی اور کانگریس ’ صفر‘: یوگی

اتر پردیش کے وزیر یوگی آدتیہ ناتھ نے جمعہ کو کہا کہ لوک سبھا انتخابات کے لئے ووٹنگ کے اختتام پذیر ہو چکے دو مراحل میں ایس پی، بی ایس پی اور کانگریس ’ صفر‘ رہی ہیں۔ یوگی نے سنبھل میں ایک جلسہ عام میں کہا کہ ووٹنگ کے دو مرحلے ہو چکے ہیں۔ بی جے پی کو سب سے زیادہ ووٹ ملے ہیں۔ انہوں نے ...

لوک سبھا انتخابات: کیا اُترکنڑا میں انکم ٹیکس کے مزید چھاپے پڑنے والے ہیں؟

پارلیمانی الیکشن کے پس منظر میں محکمہ انکم ٹیکس اور انتخابی نگراں اسکواڈ کی طرف سے مختلف ٹھکانوں پر جو چھاپے مارے جارہے ہیں، اس تعلق سے خبر ملی ہے کہ ضلع شمالی کینرا میں مزیدکئی سیاسی لیڈروں اورتاجروں کے ٹھکانوں پر چھاپے پڑنے والے ہیں۔