شارجہ میں ابناء علی گڑھ مسلم یونیورسٹی کی خوبصورت تقریب؛ یونیورسٹی میں میڈیکل تعلیم صرف 60 ہزار میں ممکن!

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 20th November 2017, 8:50 PM | ملکی خبریں | خلیجی خبریں |

دبئی 20 نومبر (ایس او نیوز/جیلانی محتشم) علی گڈھ مسلم یونیورسٹی جسے بابائے قوم مرحوم سر سید احمد خان نے دو سو سال قبل قائم کیا تھا آج تناور درخت کی شکل میں ملک میں تعلیم کی روشنی عام کررہا ہے۔اس یونیورسٹی میں میڈیکل کے طلبا کے لئے پانچ سال کی تعلیمی فیس صرف 60,000 روپئے ہے، حالانکہ دوسری یونیورسیٹیوں میں میڈیکل کے طلبا سے ایک کروڑ سے بھی زائد رقم وصول کی جاتی ہے۔ ان باتوں کا اظہا ر علی گڈھ مسلم یونیورسٹی کے وائس چانسلر پروفیسر طارق منصور نے کیا۔ ہ یہاں شارجہ کے پرائیویٹ ہوٹل میں الومنی کی تقریب میں مہمان خصوصی کے طور پر خطاب کررہے تھے۔ پروفیسر طارق منصور نے کہا کہ ہر جگہ الومنی موجود ہیں لیکن میں نے یواے ای کی دعوت کو اس لئے قبول کیا کہ یہاں کی الومنی ٹیم نے بہت اچھا کام کیا ہے ۔ علی گڈھ مسلم یونیورسٹی میں نئے کورسس کو لانا ہمارا اہم کام ہے جس میں ائیروناٹکس وغیرہ کو بھی اب شامل کیا گیا ہے۔

علی گڑھ مسلم یونیورسٹی کے الومنی کے صدر جناب ایس ایم قطب الرحمن نے اپنے خطاب میں کہا کہ مرحوم سرسید احمد خان نے دو صدیوں قبل جب علی گڑھ مسلم یونیورسٹی کی بنیاد رکھی تھی، تو اُس وقت اُن کو بہت ساری رکاؤٹوں کا سامنا کرنا پڑا تھا، کافی مشکلات پیش آئیں، مگر انہوں نے اس کام کو جاری رکھا ، مسلم قوم کے لئے تعلیم کتنی ضروری ہے، اس بات کو مد نظر رکھتے ہوئے انہوں نے اپنے مشن کو مکمل کرکے ہی دم لیا اور آج اس یونیورسٹی کے ہزاروں اور لاکھوں فارغین دنیا بھر کے مختلف شہروں میں مختلف سیکٹرس میں کام کررہے ہیں۔ آگے کہا کہ اکثر ملکوں میں اس یونیورسٹی کے فارغین موجود ہیں جو ہر سال سرسید ڈے کی تقریب منعقد کرتے ہیں، جس میں مرحوم کی خدمات کو خراج تحسین پیش کیا جاتا ہے۔مگر متحدہ عرب امارات میں مقیم ہم الومنی نے سن 2008 سے اس بات کا فیصلہ کیا کہ ہم اس تقریب کو مختلف انداز سے منعقد کریں گے اور مرحوم سرسید کی تعلیمات اور ان کی خدمات کو عام کریں گے اور دوسروں کو ترغیب دیں گے کہ وہ بھی اس طرح کے کاز کے لئے آگے آئیں اور قوم وملت کے لئے بڑھ چڑھ کر اپنی خدمات پیش کریں۔ انہوں نے پورے عزم کے ساتھ کہا کہ اگر عرب امارات میں موجود چند الومنی کھڑے ہوجائیں اورمسلمانوں میں تعلیم عام کرنے کا عزم کریں تو ہم انشاء اللہ سچر کمیٹی کی رپورٹ کو غلط ثابت کرسکتے ہیں۔

اعزازی مہمان کی حیثیت سے تشریف فرما ڈاکٹر ایس ایم سید خلیل الرحمن نے بھی تعلیم کی اہمیت پر مفصل روشنی ڈالی اور علی گڑھ مسلم یونیورسٹی کی خدمات کو سراہتے ہوئے فارغین پر زور دیا کہ وہ بھی مرحوم سر سید احمد خان کے کاز کو آگے بڑھائیں اور مسلمان جو تعلیم کے میدان میں کافی پیچھے ہیں، اُسے آگے لانے کی طرف پورا زور لگائیں۔ انہوں نے پہلی سورہ اقراء کا حوالہ دیتے ہوئے اس بات کو ثابت کرنے کی کوشش کی کہ تعلیم آج کتنی ضروری ہے۔ اس سے پہلے متحدہ عرب امارات کے سابق وزیر ڈاکٹر محمد سعید الکندی نے اپنے تاثرات پیش کرتے ہوئے علی گڈھ مسلم یونیورسٹی کی خدمات کو سراہا ۔دیگر مہمانان نے بھی پروگرام میں اپنے اپنے خیالات کا اظہار کیا۔

ایک نظر اس پر بھی

بتیامیں شرپسندوں کے ذریعہ مسجدومدرسہ پر حملہ قابل مذمت:مولانااسرارالحق قاسمی

ممبرپارلیمنٹ مولانا اسرارالحق قاسمی نے یوم آزادی کے موقع پر چمپار ن کے بتیاکی ہاتھی خانہ مسجد ومدرسہ پرشرپسندوں کے ذریعہ کئے گئے حملے کی سخت الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے ملزمین کے خلاف سخت کارروائی کامطالبہ کیاہے۔انہوں نے کہاکہ آج کے دن جبکہ پورا ملک آزادی کا جشن منارہاہے اور ہر ...

وینکیانائیڈونے واجپئی کوآزادہندوستان کاسب سے بڑالیڈربتاکرخراج عقیدت پیش کیا

نائب صدر ایم وینکیا نائیڈونے سابق وزیر اعظم اٹل بہاری واجپئی کے انتقال پر گہرے غم کا اظہار کرتے ہوئے ان کے انتقال کوملک کے لیے ناقابل تلافی نقصان بتایا ہے۔نائیڈو نے اپنے تعزیتی پیغام میں کہاکہ یہ خبرانتہائی افسوسناک ہے کہ اٹل جی نہیں رہے۔میں آج صبح ہی ان کی صحت کی معلومات لینے ...

ڈاکٹر ستیہ پال سنگھ نے شکرتال گھاٹ پر بہاؤ میں تیزی لانے پر تبادلہ خیال کی خاطر میٹنگ کی 

آبی وسائل، دریا کی ترقی اور گنگا کے احیاء کے وزیر مملکت ڈاکٹر ستیہ پال سنگھ نے آج شکرتال گھاٹ پر پانی کے بہاؤ میں تیزی لانے کے معاملے پر ایک میٹنگ کی صدارت کرتیہوئے اترپردیش اور اتراکھنڈ کے آبپاشی کے محکموں کے عہدیداروں کو ہدایت دی ہے کہ وہ دریائے گنگا کی معاون ندی سلونی میں ...

جامعہ رحمانی مونگیر: جنگ آزادی کے موضوع پر سیمینار اختتام پذیر، علماء ودانشور کا آزادی کی193 سالہ جدوجہد اور دستورکی معنویت پر اظہارِخیال

جامعہ رحمانی مونگیر میں یوم آزادی کی تقریب بحسن وخوبی اختتام پذیر ہوگئی، صبح آٹھ بجے پرچم کشائی کی گئی، اور بعد نماز ظہر تین بجے یوم آزادی کی جدوجہد پر سیمینار شروع ہؤا، جس کی دوسری نشست بعد نماز مغرب منعقد کی گئی، اس سیمینار میں جامعہ رحمانی کے تین اساتذہ مولانا رضاء الرحمان ...

ملک کے22ریلوے اسٹیشنوں پر یوم آزادی سے ڈجیٹل اسکرینز کام کرتے رہیں گے، ریلوے کی وراثت کے بارے میں کیوآر کوڈ پرمبنی پوسٹر بھی ان اسٹیشنوں پر چسپاں کیے گئے ہیں 

ریلوے اسٹیشنوں پر کیو آر کوڈ استعمال کرتے ہوئے ڈجیٹل میوزیم قائم کئے جانے کے وزیراعظم جناب نریندر مودی کے خواب کے پیش نظر ریلوے کی وزارت نے 15 اگست 2018 کو یوم آزادی کے موقع پر ملک کے 22 ریلوے اسٹیشنوں پر ڈجیٹل اسکرینز شروع کردئے ہیں ۔یہ ڈجیٹل اسکرینز عوام الناس میں ہندوستان کی ...

لال قلعہ کی فصیل سے وعدوں کی پھلجھڑیاں 2019 کے الیکشن کی تیاری ہیں ؟ طلاق بل پرمسلم خواتین جھانسے میں آنے والی نہیں ہیں:ڈاکٹرمنظورعالم 

لال قلعہ کی فصیل سے وزیر اعظم نریندر مودی کا یہ پانچواں خطاب بھی گذشتہ چار خطابات کی طرح حقائق کے خلاف اورچناوی جملوں پر مشتمل تھا ، انہوں نے یوم جمہوریہ جیسی تقریب کے موقع پر بھی عوام کے ساتھ جھوٹ بولنے اور ناکامیوں کوکامیابی شمار کرانے میں کوئی عار محسوس نہیں کی ۔انہوں نے ...

بھٹکل کے ہونہار طالب العلم صلاح الدین ایوب سدی باپا نے لی پیرس سے ماسٹر ڈگری

بھٹکل انجمن انجینرنگ کالج سے ڈگری حاصل کرنے والے صلاح الدین ابن ایوب سدی باپا نے فرانس کے مشہور شہر  پیرس سے  ماسٹر آف ڈگری حاصل کرتے ہوئے  قوم و ملت کا نام روشن کردیا ہے۔ موصوف معروف قومی سماجی  خدمت گار  مرحوم ظفر علی  معلم کے  نواسے اور مسقط  سرکاری اسپتال کی ڈاکٹر ...

سعودی عربیہ کو الوداع کہہ کر وطن لوٹنے کے بعدساحلی علاقے میں ICSE اور انگریزی میڈیم اسکولوں میں بڑھ گئے بچوں کے داخلے 

سعودی عربیہ میں غیر وطنی باشندوں اور ملازمین کے تعلق سے نئے اور سخت قوانین سے پریشان ہو کر غیر رہائشی ہندوستانیوں کے وطن واپس لوٹنے کے بعد ان کے بچوں کو اسکولوں میں داخل کرانے  کا مسئلہ بھی کافی سنگین ہوگیا ہے۔ مسئلہ یہ ہے کہ ریاست کرناٹک کے کسی بھی اسکول میں داخل  کرنے کی ...

سعودی کے نئے قانون سے ہندوستانی عوام سخت پریشان؛ 15 ماہ میں 7.2 لاکھ غیر ملکی ملازمین نے سعودی عربیہ کو کیا گُڈ بائی؛ بھٹکل کے سینکڑوں لوگ بھی ملک واپس جانے پر مجبور

سعودی عرب میں ویز ے کے متعلق نئے قانون کا نفاذ ہوتے ہی بھٹکل کے ہزاروں لو گ اپنی صنعت کاری، تجارت اور ملازمت کو الوداع کہتے ہوئے وطن واپس لوٹنے پر مجبورہوگئے  ہیں۔ اترکنڑا ضلع کے اس خوب صورت شہر بھٹکل کے  قریب 5000 لوگ سعودی عربیہ میں برسر روزگار تھے جن میں سے کئی لوگ واپس بھٹکل ...

بھٹکل مسلم جماعت بحرین کا خوبصورت عید ملین پروگرام 

بھٹکل مسلم جماعت بحرین نے 28/جون 2018ء کو عید ملن کی تقریب مشہور ڈپلومیٹ ریڈیشن بلو(Diplomat  Radssion  Blu) فائیو اسٹار ہوٹل میں بنایا۔ محفل کاآغاز تقریباً رات 10بجے عزیزم محمد اسعدابن محمدالطاف مصباح کی خوبصورت قرآن سے ہوا۔ محمد عاکف ابن محمد الطاف مصباح نے قرآن کاانگریزی ترجمہ پیش ...

بھٹکل :صحافتی میدان کے بے لوث اورمخلص خادم  ساحل آن لائن کے مینجنگ ایڈیٹر  ایوارڈ کے لئے منتخب

اترکنڑا ضلع ورکنگ جرنالسٹ اسوسی ایشن کی طرف سے دئیے جانےو الےمعروف ’’جی ایس ہیگڈے  اجِّبل ‘‘ ایوارڈ کے لئے اپنی جوانی کی ابتدائی  عمر سے ہی سوشیل میڈیا کے ذریعے صحافت کی دنیا میں قدم رکھتے ہوئے ایمانداری کے ساتھ قوم وملت کی بے لوث اور مخلصانہ خدمات انجام دینے والے ساحل آن ...

سعودی عرب میں خواتین کی ڈرائیونگ پر پابندی ختم

سعودی خواتین پر لگی ڈرائیونگ  کی پابندی ختم ہوتے ہی خواتین رات کے بارہ بجتے ہی جشن مناتے ہوئے  سڑکوں پر نکل آئیں اور کار میں بلند آواز میں میوزک چلاکر  شہروں کا چکر لگاتے ہوئے اس پابندی کے خاتمے کا خیر مقدم کیا۔