یمنی سرحد کے قریب ہیلی کاپٹر گرنے سے سعودی شہزادہ منصور بن مقرن سمیت 8 اعلیٰ عہدیداروں کی موت

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 7th November 2017, 2:36 AM | خلیجی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

ریاض 6/نومبر (ایس او نیوز؍ایجنسی)  سعودی عرب کی یمنی سرحدکے قریب ایک ہیلی کاپٹر گر کر تباہ ہو گیا جس پر سوار سعودی شہزادے منصور بن مقرن سمیت 8 اعلیٰ عہدیدار جاں بحق ہو گئے ۔

عرب میڈیا کے مطابق سعودی عرب کے جنوبی صوبہ عسیر کے ڈپٹی گورنر شہزادہ منصور بن مقرن اپنے اہم رفقا کے ساتھ ہیلی کاپٹر میں بیٹھ کر یمن کی سرحد کی قریب کے علاقے کا جائزہ لے رہے تھے کہ اچانک  ان کا ہیلی کاپٹر گر کر تباہ ہوگیا جس کے نتیجے میں شہزادے سمیت ہیلی کاپٹر میں سوار تمام 8 افراد جاں بحق ہوگئے۔  فوری طور پر ہیلی کاپٹر تباہ ہونے کی وجوہات کا پتہ نہیں لگ پایاہے۔

خیال رہے کہ سعودی عرب یمن میں حوثی باغیوں کے خلاف جاری جنگ میں بین الاقوامی اتحاد کی قیادت کر رہا ہے، ہفتہ اور اتوار کی درمیانی شب سعودی عرب کی فوج نے یمن سے دارالحکومت ریاض کی طرف داغے گئے ایک میزائل حملے کو ناکام بنایا تھا۔

واضح رہے کہ شہزادہ منصور بن مقرن سعودی عرب کے سابق ولی عہد شہزادہ مقرن بن عبدالعزیز کے بیٹے تھے، ان کے والد جنوری سے اپریل 2015 تک سعودی عرب کے کرائون  پرنس رہے ، انہیں شاہ سلمان نے عہدے سے برخاست کرکے اپنے بیٹے محمد بن سلمان کو جانشین مقرر کردیا تھا۔

ایک نظر اس پر بھی