سابرمتی آشرم میں ڈونالڈ ٹرمپ نے ’باپو‘ کا ذکر تک نہیں کیا

Source: S.O. News Service | Published on 25th February 2020, 12:12 PM | ملکی خبریں | عالمی خبریں |

نئی دہلی،25/فروری(ایس او نیوز/ایجنسی) امریکہ کے صدر ڈونالڈ ٹرمپ نے سابرمتی آشرم پہنچ کر مہاتما گاندھی کو خراج عقیدت پیش کیا، لیکن حیرانی کی بات ہے کہ اس موقع پر انھوں نے باپو کا ذکر کرنا مناسب نہیں سمجھا۔ سابرمتی آشرم پہنچے ٹرمپ اور ان کی بیوی میلانیا کا استقبال ہندوستانی پی ایم نریندر مودی نے شال پیش کرتے ہوئے کیا۔ اس کے بعد پی ایم مودی انھیں آشرم کے اندر لے گئے اور وہاں کی تاریخی باتیں انھیں بتائیں۔ ٹرمپ نے آشرم میں رکھا باپو کا چرکھا بھی چلایا جس میں ان کی مدد وہاں موجود کچھ خواتین نے کی۔

آشرم سے نکلتے وقت امریکی صدر ٹرمپ نے وزیٹر بک میں اپنا پیغام لکھا۔ ٹرمپ نے اس میں وزیر اعظم نریندر مودی کا شکریہ ادا کرتے ہوئے لکھا کہ ’’میرے شاندار دوست پی ایم نریندر مودی کے لیے، اس بے جوڑ دورے کے لیے شکریہ۔‘‘ وزیٹر بک میں ٹرمپ کے ذریعہ لکھے گئے اس پیغام میں صرف مودی کا شکریہ ادا کرنا کچھ لوگوں کو حیران کر گیا، کیونکہ لوگ امیدیں لگائے ہوئے تھے کہ وہ مہاتما گاندھی کے تعلق سے کوئی بات دنیا کے سامنے رکھیں گے۔

امریکی صدر کے پیغام کو لے کر اب سوشل میڈیا پر سوال اٹھنے لگے ہیں۔ لوگ کہہ رہے ہیں کہ ڈونالڈ ٹرمپ سابرمتی آشرم تو گئے، لیکن گاندھی جی کے بارے میں نہ کچھ کہا اور نہ ہی لکھا۔ انھیں مہاتما گاندھی کے بارے میں کچھ تذکرہ کرنا چاہیے تھا۔ کانگریس لیڈر منیش تیواری نے بھی وزیٹر بک میں ٹرمپ کے ذریعہ مہاتما گاندھی کے بارے میں ایک بھی لفظ نہیں لکھنے پر سوال اٹھائے ہیں۔ انھوں نے پوچھا ہے کہ کیا ڈونالڈ ٹرمپ جانتے ہیں کہ موہن داس کرم چند گاندھی کون تھے؟

سابق مرکزی وزیر منیش تیواری نے اپنے ٹوئٹ میں لکھا ہے کہ ’’یہ اس نوٹ کا ایک اسنیپ شاٹ ہے جسے کسی نے بھیجا ہے۔ یہ واقعی میں سابرمتی آشرم پر ڈونالڈ ٹرمپ کا نوٹ ہے۔ عظیم مہاتما کا کوئی ذکر نہیں ہے۔ کیا وہ یہ بھی جانتے ہیں کہ موہن داس کرم چند گاندھی کون تھے؟‘‘

دلچسپ بات یہ ہے کہ سوشل میڈیا پر سابق امریکی صدر براک اوباما کا بھی وہ پرانا پیغام وائرل ہونا شروع ہو گیا ہے جب انھوں نے سابرمتی آشرم کا دورہ کیا تھا اور وزیٹر بک میں چند سطریں لکھی تھیں۔ کانگریس لیڈر منیش تیواری نے اوباما کے پیغام کو شیئر کرتے ہوئے لکھا ہے کہ ’’اور یہ عظیم مہاتما گاندھی کے بارے میں راج گھاٹ یا سابرمتی آشرم کے وزیٹر بک میں براک اوباما نے لکھا تھا۔‘‘

واضح ہے کہ ٹرمپ نے جو کچھ وزیٹر بک میں لکھا ہے وہ اوباما کے پیغام سے بالکل مختلف ہے۔ اوباما نے سال 2010 میں سابرمتی آشرم کے اپنے دورہ کے دوران وزیٹر بک میں لکھا تھا کہ ’’مارٹن لوتھر کنگ جونیر نے کہا تھا کہ مہاتما گاندھی ہندوستان میں ہمیشہ زندہ رہیں گے۔ گاندھی جی کی زندگی سے جڑے خاص مقامات کو دیکھنے کا موقع پا کر میں امید اور ترغیب سے بھر گیا ہوں۔ وہ صرف ہندوستان کے نہیں بلکہ پوری دنیا کے ہیرو ہیں۔‘‘

ایک نظر اس پر بھی

پنجاب: چندی گڑھ میں کورونا وائرس کے کیسز بڑھ کر ہوئے 56، چار افراد کی موت

 پنجاب اور مرکز کے زیر انتظام علاقہ چندی گڑھ میں کورونا وائرس کا قہر روز افزوں بڑھتا جا رہا ہے جہاں اس وبا سے متاثرین کی تعداد 56 تک پہنچ گئی ہے جن میں سے 41 پنجاب اور 15 چندی گڑھ کے ہیں۔ وہیں اس وبا سے اب تک اس علاقے میں چار افراد جاں بحق ہو چکے ہیں۔

راہل گاندھی نے امیٹھی کے لئے بھیجی امداد، مزدور بحران پر کپل سبل کا حکومت پر حملہ

کورونا وائرس کے بڑھتے اثر کی وجہ سے ملک میں لاک ڈاؤن جاری ہے۔ 21 دن کے لاک ڈاؤن کے دوران لوگوں سے اپنے گھروں میں ہی رہنے کو کہا گیا ہے، لیکن اس دوران یومیہ مزدوروں کو متعدد پریشانیوں کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔

سونیا گاندھی نے لکھا پی ایم مودی کو خط ’منریگا کے تحت 21 دن کی اجرت پیشگی ادا کریں‘

 کانگریس کی صدر سونیا گاندھی نے وزیر اعظم نریندر مودی کو خط لکھ کر اپیل کی ہے کہ 21 دن کے لاک ڈاؤن کی وجہ سے دیہی علاقوں میں مزدوروں کے سامنے روزی روٹی کا بحران پیدا ہو گیا ہے، لہذا ان کارکنوں کو منریگا کے تحت ملنے والی 21 دن کی اجرت پیشگی ادا کی جائے۔

نیتن یاھو کے بعد کرونا کے شبے میں اسرائیلی آرمی چیف بھی قرنطینہ منتقل

اسرائیل میں کرونا کی تیزی کے ساتھ پھیلتی وباء نے اسرائیل کی صف اول کی سیاسی اور عسکری قیادت کو بھی اپنی لپیٹ میں لے لیا ہے۔ اسرائیلی وزیراعظم بنجمن نیتن یاھو کی کرونا کے باعث 'آئسولیشن' کے بعد آرمی چیف جنرل آویف کوخاوی بھی قرنطینہ منتقل کردیے گئے ہیں۔

کورونا: ملک میں 32؍اموات،227نئے معاملے، جملہ 1251 ؍مریض، دنیا بھر میں مہلک مرض سے 37ہزار 519جانیں تلف، 781656؍متاثر

ملک میں پچھلے 24گھنٹوں میں کورونا وائرس انفیکشن کے 227 نئے معاملے سامنے آنے کے بعد انفیکشن کے کل مریضوں کی تعداد بڑھ کر 1251ہوگئی اور تین مریضوں کی موت سے اس وائرس کی زد میں آکر مرنے والوں کی تعداد 32ہوگئی ہے -

ملک میں کوروناوائرس سے 29 اموات،1071 متاثر، کورونا پوری دنیا میں 34,512 جانیں تلف،723,962 متاثرین

پوری دنیا کے زیادہ تر (اب تک 185) ممالک میں کرونا وائرس (کووڈ-19) کی وبا تھمنے کا نام نہیں لے رہی ہے اور اس کے متاثرین سے پوری دنیا میں اب تک34,512لوگوں کی موت ہوچکی ہے جبکہ تقریباً723,962لوگ اس سے متاثر ہیں -