منگلورو میں کیرالہ کی تیز رفتار کارنے پولیس کے ہوش اڑادئے۔ دو پولیس والے زخمی۔ ملزم گرفتار

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 25th August 2018, 11:15 PM | ساحلی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

منگلورو25؍اگست (ایس او نیوز)کیرالہ کی ایک کار نے خطرناک تیز رفتاری کی وجہ سے پولیس کے ہوش اڑادئے اور بہت دیر تک پیچھا کرنے کے بعد جب تک پولیس کار میں موجود لڑکے اور ایک لڑکی کو حراست میں لیتی تب تک تو پولیس والے زخمی ہوگئے ۔ جن میں سے ایک کو شدید چوٹیں آنے کی وجہ سے اسپتال میں داخل کیا گیا ہے جبکہ دوسرے کو معمولی چوٹوں کی بنیاد پر طبی امداد فراہم کی گئی ہے۔ 

واقعے کی تفصیل یہ بتائی جاتی ہے کہ محمد کنہی ایک لڑکی کو اپنے ساتھ بٹھاکرایک بڑی کارKL 14 P 4758 میں کاسرگوڈ سے منگلورو آتے ہوئے نہایت خطرناک انداز میں بہت ہی تیز رفتاری کے ساتھ ڈرائیونگ کر رہاتھاجس سے اس کی اور دوسرے لوگوں کی زندگی کے لئے خطرہ پیدا ہوگیا تھا۔کار کے شیشوں پر کالی اسکرین چپکائی گئی تھی۔پمپ ویل کے پاس پولیس نے اسے کارروکنے کو کہا تھا اس نے تعمیل نہ کرتے ہوئے کار آگے بڑھا دی۔پولیس اس کاپیچھا کرتی رہی اور وہ اپنی کار اسی تیز رفتاری سے دوڑاتا ہوا بینڈور ویل، جیوتی سرکل، بنٹس ہاسٹل، پی وی ایس سرکل اور لال باغ سے گزرتا گیا ۔ پولیس کی طرف سے اسے روکنے کی کوشش ہرجگہ ناکام رہی۔ پھر وہ کدری علاقے میں پہنچااوریہاں اس نے کار روکنے کی کوشش کرنے والے پولیس کانسٹیبلوں کو ہی ٹکر ماردی۔ جس کی وجہ سے گجیندرا کو شدید زخم آئے اور ناگپا کو معمولی چوٹیں آئیں۔ اس کے بعد بھی اس نے کار روکنے کے بجائے تیزی سے آگے بڑھ گیا۔لیکن جب تھوڑی دور
جا کر اس نے ایک موڑ لیا تو ایسی گلی کے پاس پہنچ گیا جہاں سے اس کی کار گزر نہیں سکتی تھی۔ تب جاکر پولیس نے اسے اور اس کے ساتھ بیٹھی ہوئی لڑکی کو حراست میں لے لیا۔

پولیس کو دوسرا جھٹکا اس وقت لگا جب گرفتار لڑکے محمد کنہی کی عمر معلوم ہوئی کہ وہ ابھی صرف 17سال کا ہے اور اس کے پاس ڈرائیونگ لائسنس موجود نہیں ہے۔محمد کنہی کاسرگوڈ کے کالاناڈ کا رہنے والا ہے اور پی یو سی سال دوم کا طالب علم ہے۔کدری پولیس کیس درج کرنے کے بعد معاملے کی تحقیقات کررہی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

ساحلی کرناٹکا میں موسلادھار بارش کا سلسلہ جاری؛ اُترکنڑا میں ریڈ الرٹ؛ ساگرروڈ پر غیر قانونی باکڑوں کو نہ ہٹانے کے پیچھے کیا راز ؟ مینگلور اور اُڈپی میں منگل کو اسکولوں اور کالجوں میں چھٹی

ساحلی کرناٹکا بشمول اُتر کنڑا، اُڈپی اور دکشن کنڑا میں  اتوار سے  جاری زوردار بارش کا سلسلہ آج پیر کو بھی جاری رہا جس سے  کئی علاقوں میں راستے تالاب میں تبدیل ہوگئے،  اس درمیان  محکمہ موسمیات کی جانب سے  بتایا گیا ہے کہ  کل اتوار کو بھٹکل میں جو زبردست بارش ہوئی، اُس کی ...

اترکنڑا ضلع میں مزید بارش کے امکانات کے پیش نظر ریڈ الرٹ جاری :بھٹکل میں ریکارڈ 140ملی میٹر بارش

ضلع کے ساحلی  پٹی کے مقامات پر رات دن  مسلسل برستی بارش کے نتیجےمیں عوامی زندگی بہت بری طرح متاثر ہوئی۔ پیر کی صبح سے شروع ہوئی بارش شام تک لگاتار برستی رہی ۔ ان حالات میں محکمہ موسمیات کی طرف سے ’ریڈ الرٹ ‘ جاری کرتے ہوئے  علاقہ میں مزید بارش برسنے کا امکان بتایا ہے۔ محکمہ ...

منگلورو میں ڈینگی سے ٹی وی جرنلسٹ ہلاک 

بی ٹی کے لئے ویڈیو جرنلسٹ کے طور خدمات انجام دینے والے ناگیش پاڈوکی موت کے ساتھ منگلورو میں ڈینگی بخار سے ہونے والی ہلاکتوں میں ایک او ر اضافہ ہواہے۔خیال رہے کہ اس سے قبل ڈینگی بخار میں مبتلا تین افراد کی موت واقع ہوچکی ہے۔

بھٹکل میں 27 اور 28 جولائی کو ہوگا؛ فری ہارٹ چیک آپ کیمپ؛ کالی کٹ سے مشہوراورماہرامراض قلب ڈاکٹر علی فیضل کی ہوگی شرکت

کالی کٹ کے معروف میترا اسپتال اور بھٹکل  کے معروف ویلفئیر اسپتال کے اشتراک سے مورخہ 27 اور28 جولائی کو بھٹکل میں مفت ہارٹ چک اپ کیمپ کا انعقاد کیاجارہاہے جس میں ملک کے مشہور کارڈیالوجسٹ اور میترا اسپتال کے  ڈائرکٹر اینڈ چیف آف کلینکل سروس   ڈاکٹر علی فیضل  شرکت کریں گے۔اس ...

جنوری 19 کو ہوں گےانجمن حامئی مسلمین بھٹکل کے انتخابات؛ اسحاق شاہ بندری الیکشن کمشنر منتخب

قومی تعلیمی ادارہ انجمن حامئی مسلمین بھٹکل کے عام انتخابات اگلے سال 19 جنوری کو ہوں گے جس کے لئے آج سنیچر کو  ہوئی انتظامیہ میٹنگ میں  الیکشن کمشنر کا انتخاب عمل میں آیا ہے۔  اس بات کی تصدیق انجمن کے جنرل سکریٹری جناب صدیق اسماعیل نے کی ہے۔ انہوں نے بتایا کہ  آج کی میٹنگ میں ...

بھٹکلی جماعت المسلمین مینگلورو کا مستحسن اقدام : بنٹوال میں ہوئے سڑک حادثے میں شدید زخمیوں کی عیادت کرنے اور اُنہیں ہرممکن تعاون دینے جماعت کے وفد کا اسپتال دورہ

بھٹکلی  جماعت المسلمین مینگلور کے ایک وفد نے  مینگلور کے مختلف اسپتالوں کا دورہ کرتے ہو ئے  کل جمعہ کو سڑک حادثے میں ہوئے زخمی بھٹکلی لوگوں کی عیادت کی اور اُن کے رشتہ داروں سے بات چیت کرتے ہوئے جماعت کی جانب سے ہر ممکن تعاون کا یقین دلایا۔