کورگ میں بارش کی بھاری تباہی ، تین اموات،زمین کھسکنے کے متعدد واقعات 

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 17th August 2018, 8:30 PM | ریاستی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

بنگلورو،17؍اگست(ایس او نیوز) جنوبی ہند کا کشمیر کہلانے والے ریاست کے کورگ ضلع میں بارش نے زبردست تباہی مچادی ہے۔ ایک طرف بارش کا سلسلہ رکنے کا نام نہیں لے رہا ہے تو دوسری طرف پڑوسی ریاست کیرلا میں طوفانی بارش کے سبب وہاں کی ندیوں کا پانی بھی کرناٹک کی طرف بہادیا گیا ہے، اس سے کورگ اور آس پاس کے علاقوں کے لوگوں پر مصیبتوں کا دوہرا پہاڑ ٹوٹ پڑا ہے۔

میسور سے کورگ کی طرف جانے والی سڑکوں پر جابجا زمین کھسکنے کے واقعات کے سبب یہ علاقہ کرناٹک کے دیگر علاقوں سے تقریباً کٹ چکا ہے۔موسلادھار بارش کے سبب ایک طرف نشیبی علاقے زیر آب آگئے ہیں تو ڈھلانوں پر موجود مکانات زمین کھسکنے کے سبب تباہ ہوچکے ہیں۔ ضلع میں زمین کھسکنے کے نتیجے میں اب تک تین لوگوں کی موت ہوچکی ہے، یہاں کے گھاٹ سیشن میں ہزاروں کی تعداد میں درخت اکھڑگئے ہیں۔ راحت کاری کا کام بھی اس لئے ناممکن ہوچکا ہے کہ بارش بالکل نہیں تھم رہی ہے۔

ضلع بھر میں کئی پرانے مکانات کمزور ہوچکے ہیں ، ان میں مقیم لوگوں کو محفوظ مقامات پر منتقل ہوجانے کی ہدایت دے دی گئی ہے۔ نشیبی علاقوں کے لوگوں کو راحت کاری کیمپوں میں ٹھہرایا گیا ہے۔ ضلعی انتظامیہ کی طرف سے یہاں پر ان لوگوں کے لئے کھانے کا انتظام کیا گیا ہے۔ ریاست کے ایک اہم سیاحتی مرکز کے طور پر مشہور کورگ اور مرکیرہ میں مسلسل بارش نے تقریباً تمام سیاحتی مقامات کو بھاری نقصان پہنچایا ہے۔ یہاں کی تمام سڑکیں زمین کھسکنے کی وجہ سے مٹی سے بھر چکی ہیں۔ راحت کاری کے لئے کئی تنظیمیں کام کررہی ہیں۔ مسلسل بارش اور زمین کھسکنے کی وجہ سے کئی مکانات اپنی جگہ سے سو تا دیڑھ سو فیٹ کھسک کر دو ر چلے گئے ہیں۔اور ان مکانوں کے کسی بھی وقت منہدم ہونے کا خطرہ بڑھ گیا ہے۔ حالانکہ ان واقعات کی وجہ سے کوئی جانی نقصان نہیں ہوا ہے، لیکن بھاری مالی نقصانات کی اطلاع موصول ہوئی ہے۔

ضلع کے سوموار پیٹ تعلق کے کئی دیہاتوں سے لوگوں کو احتیاطی طور پر باہر نکال لیا گیا ہے او ر یہ دیہات پانی سے لبریز ہوچکے ہیں۔ ریاستی وزیر مالگزاری آر وی دیش پانڈے نے متاثرہ علاقوں کا دورہ کیا اور یہاں اعلیٰ افسروں کے ساتھ راحت کاری کے کاموں کو تیزی سے آگے بڑھانے کے سلسلے میں سخت احکامات صادر کئے۔ ضلع انچارج وزیر سارا مہیش کی نگرانی میں راحت کاری کا کام چل رہا ہے۔ کورگ کے متاثرین کی راحت کاری کے لئے میسور میں ایک مرکز قائم کیا گیا ہے۔ امدادی اشیاء کا ذخیرہ میسور کے ٹاؤن ہال میں کیا جارہا ہے۔ میسور سٹی کارپوریشن کی طرف سے طبی خدمات مہیا کرائی جارہی ہیں۔ ضلع کے ڈپٹی کمشنر ابھی رام شنکر کی نگرانی میں یہ راحت کاری مسلسل جاری ہے۔ 

ایک نظر اس پر بھی

شہید جوان گرو کو جلد معاوضہ ادا کرنے وزیر اعلیٰ ایچ ڈی کمار سوامی کی ہدایت ٹاؤن ہال کے روبرو ہزاروں لوگوں نے شہید جوانوں کو خراج عقیدت پیش کیا

جنوبی کشمیر کے ضلع پلوامہ کے لیتہ پور ہ میں کل ہوئے ہلاکت خیز خودکش آئی ای ڈی دھماکے کی وزیر اعلیٰ ایچ ڈی کمار سوامی نے آج پرزور مذمت کی ہے ۔ اس دہشت گردانہ حملہ میں شہید ہونے والے منڈیا ضلع کے ایچ گرو کے اہل خانہ سے انہوں نے تعزیت کی ہے ۔

پلوامہ میں ہوئے دہشت گرد حملے میں ہلاک ہوئے منڈیا ضلع کے شہید فوجی کی بیوی صدمہ سے دوچار اب بات کرنا چاہوں تو کس سے کروں: کلاوتی

جمعرات کو پلوامہ میں ہوئے دہشت گرد حملے میں ہلاک ہوئے منڈیا ضلع کے بہادر فوجی جوان ایچ گرو پانچ دن پہلے ہی اپنی چھٹی ختم کرکے کام پر لوٹے تھے ۔ 10مہینے پہلے انہوں نے گڈی گیری کالونی کی کلاوتی سے شادی کی تھی۔

ای بسیں: بی ایم ٹی سی کو80؍کروڑ سے ہاتھ دھوناپڑسکتا ہے 28؍فروری تک کاوقت ۔سبسیڈی کی رقم مرکز کو لوٹانی پڑے گی۔ لیزپر لینے یا خریدنے پر فیصلہ کرنے میں تاخیر

بنگلورو میٹرو پالیٹن ٹرانسپورٹ کارپوریشن( بی ایم ٹی سی) نے28؍فروری تک مرکز سے الیکٹرک بسیں حاصل نہیں کیں تو اسے 80 کروڑ روپئے کی سبسیڈی سے ہاتھ دھونا پڑے گا۔80ای بسوں کو شامل کرنے کا معاملہ تاخیر کا شکار ہوگیاہے۔

دس ہزار کروڑ روپئے کا بی بی ایم پی بجٹ تیار؟

بنگلور شہر اور بی بی ایم پی کی تاریخ میں پہلی مرتبہ امید کی جا رہی ہے کہ اس سال کا بی بی ایم پی بجٹ دس ہزار کروڑ روپئے کی حد کو پار کرنے والا ہے۔بجٹ میں موجود بعض منصوبوں کو دیکھتے ہوئے یہ کہنا علط نہیں ہوگا کہ شہر کے بلدی ادارہ کا بجٹ آئندہ کچھ ماہ میں منعقد ہونے والے لوک سبھا ...

11/26کے ممبئی دہشت گردانہ حملے میں مارے گئے کمانڈو سندیپ انی کرشنن کے والد نے پلوامہ دہشہ گردانہ حملے کی مذمت

11/26کے ممبئی دہشت گردانہ حملے میں مارے گئے این ایس جی کمانڈو سندیپ انی کرشنن کے والد نے پلوامہ دہشہ گردانہ حملے کی مذمت کرتے ہوئے کہاہے کہ ہندوستان کو دہشت گردانہ حملوں پر روک لگانے کے لئے کھوکھلی بحث ومباحثوں کی بجائے ٹھوس قدم اٹھانے چاہئیں۔

بھٹکل: شرالی میں ہائی وے کی توسیع کے دوران ہنگامہ؛ پولس کی لی گئی مدد؛ عوامی مخالفت نظرانداز؛ 30میٹرکی ہی توسیع کے ساتھ کام شروع

شرالی میں قومی شاہراہ کی تعمیر 45میٹر کی توسیع کے ساتھ ہی کی جائے ، کسی حال میں بھی توسیع کو 30میٹر تک کم کرنے نہیں دیں گے۔  مقامی  عوام کی سخت مخالفت کے باوجود ضلع انتطامیہ بدھ کو 30 میٹر کی توسیع کے ساتھ شاہراہ تعمیری کام کی شروعات کی۔

اڈپی ضلع مسلم متحدہ محاذ کی طرف سے ’معززین‘ کی کانفرنس۔اسلام کے تعلق سے’ سچائی گھر گھر تک‘پہنچانے کی مہم ہوگی شروع۔ یاسین ملپے کاخطاب

برہماور کے آڈیٹوریم میں منعقدہ معززین کی کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے اڈپی ضلع مسلم متحدہ محاذکے صدر یاسین ملپے نے کہا کہ اسلام کے تعلق ’سچائی گھر گھر تک‘ پہنچانے کی مہم شروع کی جارہی ہے۔اس تعلق سے مساجد کے صدوراور خطباء کو اس مہم میں زیادہ سے زیادہ دلچسپی لینی چاہیے۔ضلع کی ...

اکھلیش کو الہ آباد یونیورسٹی کے پروگرام میں جانے سے روکاگیا، مایاوتی نے کہا اتحاد سے گھبرا گئی ہے بی جے پی 

الہ آباد یونیورسٹی میں طلبہ یونین کے سالانہ پروگرام میں شرکت کرنے جا رہے سماج وادی پارٹی کے سربراہ اکھلیش یادو کو لکھنؤ ہوائی اڈے پر ہی روک دیئے جانے کی بی ایس پی سربراہ مایاوتی نے بھی مذمت کی ہے۔