بھٹکل میونسپل پارک کی تجدیدکاری میں بدعنوانی کا الزام۔ ڈپٹی کمشنر کے نام میمورنڈم

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 15th August 2018, 9:42 PM | ساحلی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

بھٹکل15؍اگست (ایس او نیوز) بھٹکل بلدیہ کے حدود میں بندر روڈ پر واقع سردار ولبھ بھائی پٹیل پارک کی تجدید کاری میں بدعنوانی کا الزام لگاتے ہوئے  آسارکیری کے عوام  نے بلدیہ انجینئر کو پارک میں طلب کرکے ڈپٹی کمشنر کے نام میمورنڈم دیا جس میں مطالبہ کیا گیا ہے کہ یہاں ہورہی بدعنوانی کی تحقیقات کروائی جائے۔

میمورنڈم میں کہا گیا ہے کہ گزشتہ 18-20سال قبل اس پارک کی تجدیدکاری کی گئی تھی۔ خوبصورت پھولوں کے پودے لگاے گئے تھے اور اس پارک کی اچھی طرح دیکھ بھال کے لئے میونسپالٹی کی طرف سے دو مستقل ملازمین کا تقرر کیا گیا تھا۔جس کی وجہ سے یہ پارک عوامی استعمال میں آرہا تھا اور یہاں ہر قسم کی غیر اخلاقی حرکتوں پر روک لگ گئی تھی۔مگر اس کے بعد میونسپالٹی افسران کی بے پروائی اور ٹھیکیدار کی بدعنوانی کی وجہ سے یہ پارک ویران ہوگیا۔ یہاں کے سازوسامان کو زنگ لگ گیاہے۔ پانی کے فوارے سوکھ گئے ہیں۔
یادداشت میں مزید کہا گیا ہے کہ اب پھرتجدید کاری کے نام پر صرف ٹائلس اور بیٹھنے کے بینچ تبدیل کیے گئے ہیں۔سلائڈر اور کھیل کود کے سامان ٹوٹ پھوٹ جانے کے باوجود تجدیدکاری کے نام پراس کے اوپر صرف رنگ چڑھادیا گیا ہے۔سال 2017میں اس پارک کی تجدید کاری کے لئے تقریباً 2لاکھ روپے خرچ کیے گئے تھے۔ اس وقت نیا رنگ و روپ دینے کے نام پر وہاں پرپارک کے نام والاجو کنڑا بورڈ تھا اس میں اردو میں بھی نام لکھا گیا۔لیکن یہ بورڈ ایک سال کے اندر ہی ٹوٹ کر زمین پرآگیا۔

میمورنڈم میں الزام لگایا گیا ہے کہ اب نئے سرے سے اس پارک کی تجدید کاری کے لئے 4.5لاکھ روپے کا منصوبہ بنایاگیا ہے۔جس کے تحت ہونے والا کام انتہائی غیر معیاری ہے اور ابھی سے زیر تعمیر سلائڈر کے اندر سوراخ پڑ گئے ہیں۔اس طرح میونسپل پارک کی تعمیر نو کے نام پر بہت زیادہ بدعنوانی دیکھنے کو مل رہی ہے۔

میمورنڈم میں مطالبہ کیا گیا ہے کہ اس تعلق سے ضروری تحقیقات کی جائیں۔ اس کے علاوہ میونسپالٹی کے افسران اور انجینئر وغیرہ اس خوبصورت پارک کو بہتر طریقے سے تعمیر کرتے ہوئے عوام کے استعمال کے لائق بنائیں۔ضلع ڈپٹی کمشنر سے گزارش کی گئی ہے کہ اس مسئلے پر سنجیدگی سے دھیان دیں، اور ضروری احکامات جاری کریں۔ 

میمورنڈم میں مزید کہا گیا ہے کہ اگر افسران کی طرف سے اسی طرح بے پروائی اور غفلت کا مظاہرہ ہوتارہا تو پھر عوام کی طرف سے پرزور احتجاج کیا جائے گا۔ اس موقع پر شریکانت نائک، ایشور این نائک، کرشنا نائک، منی پجاری، ویویک نائک ، شری دھر نائک  وغیرہ موجود تھے۔

ایک نظر اس پر بھی

لوک سبھا انتخابات؛ بھٹکل میں سبھی پولنگ بوتھوں کے اطراف امتناعی احکامات نافذ؛ ہوٹلوں پر ہوگی نگاہ، انتخابی پرچار پر پابندی

اپریل 23 کو ہونے والے لوک سبھا انتخابات کے پیش نظر  بھٹکل ودھان سبھا حلقہ کے 248 پولنگ بوتھوں کے اطراف  پروٹوکول کے تحت انتخابات شروع ہونے کے 48 گھنٹے پہلے سے ہی امتناعی احکامات نافذ کردئے  گئے ہیں۔ جس کے تحت پولنگ بوتھ کے اطراف چار سے زائد لوگوں کے جمع ہونے پر پابندی رہے گی اس بات ...

سابق وزیراعظم دیوے گوڈا کا بھٹکل دورہ؛ کہا، جمہوریت خطرے میں ہے، اُسے بچانے کے لئے ہر شہری کو آگے آنا ہوگا

اس بار کے انتخابات سب سے زیادہ اہم اس لئے  ہے کہ مودی کے زیر اقتدار ملک کی جمہوریت کو خطرہ لاحق ہوگیا ہے۔جب سے مودی ملک کے وزیراعظم  بنے ہیں ملک کے سرکاری جمہوری اداروں میں  دخل اندازی سے  عدالت تک محفوظ نہیں ہے، ریزروبینک آف انڈیا  ہو ، انفورسمنٹ ڈائرکٹوریٹ ہو، سی بی آئی ...

ہلیال میں جے ڈی ایس لیڈر کے گھر پر انتخابی افسران کا چھاپہ ۔تلاشی کے بعد خالی ہاتھ واپس لوٹے افسران؛ کیا بی جےپی کو شکست کا خوف ہے؟

پارلیمانی انتخابات کے پیش نظر چیک پوسٹس پر تلاشی مہم کے علاوہ ہلیال شہر کے گوداموں، شراب کی دکانوں، موٹر گاڑیوں کی بھی مسلسل تلاشیاں لے رہے ہیں۔

لوک سبھا انتخابات؛ اُترکنڑا میں کیا آنند، آننت کو پچھاڑ پائیں گے ؟ نامدھاری، اقلیت، مراٹھا اور پچھڑی ذات کے ووٹ نہایت فیصلہ کن

اُترکنڑا میں لوک سبھا انتخابات  کے دن جیسے جیسے قریب آتے جارہے ہیں   نامدھاری، مراٹھا، پچھڑی ذات  اور اقلیت ایک دوسرے کے قریب تر آنے کے آثار نظر آرہے ہیں،  اگر ایسا ہوا تو  اس بار کے انتخابات  نہایت فیصلہ کن ثابت ہوسکتےہیں بشرطیکہ اقلیتی ووٹرس  پورے جوش و خروش کے ساتھ  ...

اکھلیش یادو ’ٹائیگر بام‘ کی طرح ہیں : مایاوتی 

اتر پردیش کی سیاست کے دو بڑے قد آور ملائم سنگھ یادو اور مایاوتی جب دہائیوں پرانی دشمنی بھلا کر مین پوری کی ریلی میں ایک ہی مشترکہ اسٹیج پر آئے تو ان کی تصاویر خوب وائرل ہوئیں دیکھی گئیں۔ دشمنی بھلا کر دونوں رہنماؤں نے اب اتر پردیش میں بی جے پی کو روکنے کی کوشش کرنے کی ایک طرح سے ...

لوک سبھا انتخابات؛ بھٹکل میں سبھی پولنگ بوتھوں کے اطراف امتناعی احکامات نافذ؛ ہوٹلوں پر ہوگی نگاہ، انتخابی پرچار پر پابندی

اپریل 23 کو ہونے والے لوک سبھا انتخابات کے پیش نظر  بھٹکل ودھان سبھا حلقہ کے 248 پولنگ بوتھوں کے اطراف  پروٹوکول کے تحت انتخابات شروع ہونے کے 48 گھنٹے پہلے سے ہی امتناعی احکامات نافذ کردئے  گئے ہیں۔ جس کے تحت پولنگ بوتھ کے اطراف چار سے زائد لوگوں کے جمع ہونے پر پابندی رہے گی اس بات ...

ہلیال میں جے ڈی ایس لیڈر کے گھر پر انتخابی افسران کا چھاپہ ۔تلاشی کے بعد خالی ہاتھ واپس لوٹے افسران؛ کیا بی جےپی کو شکست کا خوف ہے؟

پارلیمانی انتخابات کے پیش نظر چیک پوسٹس پر تلاشی مہم کے علاوہ ہلیال شہر کے گوداموں، شراب کی دکانوں، موٹر گاڑیوں کی بھی مسلسل تلاشیاں لے رہے ہیں۔