انتشار اور لاقانونیت پرقابو پانا ہے تو امن پسندوں کو زبان کھولنی ہوگی : بھٹکل میں منعقدہ قومی یک جہتی اجلاس میں شری رام ریڈی کا خطاب

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 11th October 2017, 10:26 PM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں |

بھٹکل:11 اکتوبر (ایس اؤنیوز) بنگلور میں ریاست کے روشن خیال مفکرین ، ادباء، سوامی جی سمیت تمام متحد ہوکر عوام کو بھائی چارگی اور یک جہتی کا پیغام دے رہے تھے کہ اُس کے دوگھنٹوں کے اندر ہی ملک کی مشہور صحافی گوری لنکیش کا قتل کردیا  گیا۔ آج ملک میں  بھائی چارگی کا پیغام دینے والوں پر حملے کئے جارہے ہیں اور  بیماروں کا علاج کرنے والے ڈاکٹروں پر حملہ کرنے والوں کو وزارت سونپی جارہی ہے۔ ضلع اُترکنڑا کے جس ایم پی کو وزیر بنایا گیا ہے انہوں نے حال ہی میں بیان دیا ہے کہ ملک میں ہندئوں کا قتل کیا جارہا ہے، میں پوچھنا چاہتا ہوں کہ آپ صرف ہندوئوں کے وزیر ہیں یا اس ملک کے وزیر ہیں ؟ میں یہ بھی پوچھنا چاہتا ہوں کہ   ہندو دھرم سے ہی تعلق رکھنے والے مہیش پجاری، ہریش پجاری، ونایک بالیگا کا قتل کس نے اور کیوں کیا ؟ ان سب  باتوں کا اظہار  سابق رکن اسمبلی  اور سی پی آئی (ایم ) لیڈر شری رام ریڈی نے کیا۔ وہ یہاں بدھ کی صبح اربن بینک ہال میں منعقدہ سوہاردا کرناٹکا سماویش میں شرکت کرتے ہوئے خطاب کررہے تھے۔ شری رام ریڈی نے اپنے خطاب میں  آر ایس ایس کا مفہوم سمجھاتے ہوئے کہا کہ یہ   راشٹریہ  سروناش سنگھا ہے جو خود قتل کرتے ہیں اور   الزام دوسروں پر تھوپتے ہیں۔ انہوں نے واضح کیا کہ انتشار اور لاقانونیت پرقابو پانا ہے تو امن پسندوں کو زبان کھولنی ہوگی، آواز بلند کرنی ہوگی اور ایسی تنظیموں اور اداروں کے خلاف کھڑا ہونا ہوگا۔

انہوں نے مزید کہا کہ سال 2014کے لوک سبھا انتخابات کے بعد عوام کے بنیادی حقوق کو چھین لینے کی کوششیں زوروں پر  جاری ہیں، وزیراعظم نریندر مودی کی تنقید کرنےپر فلمی اداکار پرکاش رائی کے خلاف سیاہ پٹی کی تشہیر بھی اسی سلسلے کی ایک کڑی ہے۔ انہوں نے بھارت کے رواداری کی مثال پیش کرتے ہوئے کہاکہ ہمارا ملک شنکراچاریہ ، مدھواچاریہ کو ہی نہیں ، چارواک کو بھی بنیاد فراہم کیا ہے۔ سوال کرنے والے عوام کا منہ بند کرنا ہٹلر کے فاشسزم کی پالیسی ہے، مختلف تہذیبوں ، الگ الگ زبانوں ، کئی ایک ذاتوں اور دھرموں والے بھارت کو آج خطرہ درپیش ہوگیاہے۔ آج داڑھی رکھنے والوں کو دہشت گرد کہا جارہاہے، انہوں نے متنبہ کرتے ہوئے کہا کہ  بھارت کسی ایک کی جائیداد نہیں ہے اس بات کو وہ لوگ  جتنا جلد سمجھ لیں اُن کے لئے  بہترہوگا، انہوں نے مزید کہا کہ دیش بھگتی کا مطلب ملک میں موجود پہاڑوں ،چٹانوں کی پوجا کرنا نہیں ہے، فوجیوں کی تعریف کی حد تک بھی نہیں ہے ، دیش بھگتی کا مطلب دیش کے شہریوں کی فکر کرنا ہے۔ بھارت میں قومیت کا لفظ انگریزوں کے زمانےکا ہے ، آزادی کی جدوجہد میں شریک ہوئے بغیر، انگریزوں کے ساتھ شامل ہوئے لوگ آج ہمیں دیش بھگتی کا سبق سکھانا شروع کیاہے، ملک میں غیر مساویانہ برتاؤ میں اضافہ ہورہا ہے۔

شری رام ریڈی نے بتایا کہ خوف سے نجات والے کرناٹکا کی تعمیر کے لئےیکساں ذہنیت والے اداروں اورتنظیموں نے فیصلہ کیاہے کہ یک جہتی کی بنیاد پرریاست گیر کرناٹکا  میں انسانی زنجیر باندھی جائے گی جس کے ذریعے امن، بھائی چارگی ، مساوات، رواداری کے لئے ایک نئے کرناٹکا کی تعمیر کا راستہ کھوجا جائے گا۔ انہوں نے بتایاکہ 30اکتوبر کو بوس ناڈا کے کلیان سے چامراج نگر تک انسانی زنجیر تعمیر کرتے ہوئے ایک نئے یک جہتی والے کرناٹکا کو بنیاد فراہم کی جائے گی۔

شرالی جنتا ودیا لیہ کے پرنسپال اے بی رام رتھ نے خطاب کرتےہوئے کہاکہ ملک اور ریاست میں انتشار، لاقانونیت اور ہنگامہ خیزی پیداکرنے یہاں ایک گروہ بہت سرگرم ہے ، انہوں نے  اپنے بچوں کو ایسے لوگوں سے دوررکھنے کی صلاح دی۔ صحافی ایم آرمانوی نے  گفتگو کرتے ہوئے کہاکہ ملک کو آگ میں جھونکنےکی کوششیں زوروں پر ہیں، ہمیں آگ کو ٹھنڈا کرکے امن کو قائم کرنے کاکام کرناہے ، سوشیل میڈیاپر فرقہ پرست متحرک رہتےہوئے ملک میں انتشار پیدا کرنا چاہتے ہیں انہوں نے زور دیا کہہمیں امن کے قیام کا مقصد لے کر جواب دینا چاہئے۔

کرناٹکا پرانت رعیت سنگھ کے ضلعی صدر شانتارام نایک نے پروگرام کی صدارت کی۔ جے ڈی ایس لیڈر عنایت اللہ شاہ بندری، جماعت اسلامی ہند کے ضلعی ناظم محمد طلحہ سدی باپا نے بھی موقع کی مناسبت سے خطاب کیا۔ سی پی آئی (ایم ) کے ضلع سکریٹری یمونا گاؤنکر نے افتتاحی کلمات پیش کرتے ہوئے نظامت کی۔ انجمن ڈگری کالج بھٹکل کے شعبہ کنڑا کے صدر پروفیسرآر ایس نایک نے استقبال کیا تو صحافی محمد رضا مانوی نے آخر میں  شکریہ اداکیا۔

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل میونسپل پارک کی تجدیدکاری میں بدعنوانی کا الزام۔ ڈپٹی کمشنر کے نام میمورنڈم

بھٹکل بلدیہ کے حدود میں بندر روڈ پر واقع سردار ولبھ بھائی پٹیل پارک کی تجدید کاری میں بدعنوانی کا الزام لگاتے ہوئے  آسارکیری کے عوام  نے بلدیہ انجینئر کو پارک میں طلب کرکے ڈپٹی کمشنر کے نام میمورنڈم دیا جس میں مطالبہ کیا گیا ہے کہ یہاں ہورہی بدعنوانی کی تحقیقات کروائی جائے۔

کاروار کے ہوم گارڈس دفتر اورکیگا شہری تحفظ مرکز میں یوم ِآزادی کی خصوصی تقریب

شہر میں ہوم گارڈس دفتر میں 72واں یوم ِ آزادی کا جشن پرچم کشائی کے ساتھ منایاگیا ۔ ضلعی آفیسر دیپک گوکرن  نے جھنڈا لہرانے کے بعد خطاب کرتے ہوئے کہاکہ ہمیں یہ آزادی کئی ایک مہان ہستیوں کی قربانی کے بعد ملی ہے۔ یہ ملک تکثریت میں وحدت پیش کرنے والا ایک انوکھا ملک ہے۔انہوں نے کہاکہ ...

کاروار : ضلع پنچایت اورمیڈیکل کالج میں یوم ِ آزادی کا جشن :ایمانداری سے اپنے فرائض کو انجام دینا  سچی دیش بھگتی  

اترکنڑا ضلع کے مرکزی مقام کاروار میں اترکنڑا ضلع پنچایت اور میڈیکل سائنس سنٹر میں  جوش و خروش کے ساتھ یوم آزادی کا جشن منایا ۔ جس کی مختصر تفصیل ذیل میں دی جارہی ہے۔ ...

بھٹکل میں یوم آزادی کا جشن پورے جوش وخروش کے ساتھ منایا گیا؛ تعلقہ انتظامیہ کی جانب سے اسسٹنٹ کمشنر نے لہرایا جھنڈا

ہر سال کی طرح امسال بھی بھٹکل میں پورے جوش و خروش کے ساتھ  یوم آزادی کی تقریب منائی گئی اور تعلقہ انتظامیہ سمیت مختلف سرکاری اور غیر سرکاری اداروں سمیت تعلیمی اداروں میں بھی  ترنگا جھنڈا لہرایا گیا۔

گنگولی سمندر میں ڈوب کر لاپتہ ہونے والے بھٹکل کے ماہی گیر کی آج برآمد ہوئی نعش

پڑوسی ضلع اُڈپی کے گنگولی سمندر میں ڈوب کر لاپتہ ہونے والے بھٹکل کے ایک ماہی گیر کی نعش آج کنداپور تعلقہ کے گوپاڑی نامی مقام سے برآمد ہوگئی ہے۔ ماہی گیر کی شناخت منجوناتھ موگیر (32) کی حیثیت سے کی گئی ہے۔

مہادائی فیصلے کا حکومت چیلنج کرے: سدرامیا

سابق وزیراعلیٰ اور ریاستی حکمران اتحاد کے چیرمین سدرامیا نے ریاستی حکومت سے کہا ہے کہ مہادائی مسئلے پر ٹریبونل کے فیصلے سے کرناٹک کو حالانکہ کچھ حد تک اطمینان ہوا ہے،

بنگلور میں یوم آزادی کی رنگارنگ تقریب؛ وزیراعلیٰ کماراسوامی نے کئی ایک مسائل کو حل کرانے کی، کی یقین دھانی

ہر سال کی طرح امسال بھی بنگلو رمیں  یوم آزادی کی رنگارنگ تقریب منعقد ہوئی جس میں وزیر اعلیٰ ایچ ڈی کمار سوامی نےپرچم کشائی کے بعد خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ریاست کی مخلوط حکومت نے تمام کو تعلیم ، صحت اور سماجی تحفظ کو اپنا مقصد بناتے ہوئے ریاست کی ترقی کے لئے انہی تین چیزوں کو ...

شکاری پور کی گلشن زبیدہ کالج میں جشن آزادی تقریب؛ حافظ کرناٹکی اور سو امی شر ی چننا بسوا نے دیا پُرزور خطاب

ضلع شموگہ کے شکاری پور میں واقع  گلشن زبیدہ کالج میں حسب روایت  اس با ر بھی نہایت شا ندار طر یقے سے جشن آزادی کا اہتمام کیا گیا ۔ گلشن تعلیمی ادارہ کے روح رواں جناب   حافظؔ کر نا ٹکی نے گلشن زبیدہ کی تا بندہ سیکو لر رو ایت کو ہند وستا ن کی سیکو لر رو ایت کا اعلا میہ بنا تے ہو ئے پر ...

اشتہاری مافیا کے بعد اب کچرا مافیا کو ختم کرنے بی بی ایم پی مستعد، دو ہفتوں میں شہر کے سبھی وارڈوں کے لئے گندگی کی نکاسی کے نئے کنٹراکٹ

برہت بنگلو رمہانگر پالیکے نے شہر میں اشتہاری مافیا پر روک لگانے کے لئے ہائی کورٹ کی یکے بعد دیگرے لتاڑ سے خوفزدہ ہوتے ہوئے اب کچرامافیاکو کچلنے کے لئے سخت قدم اٹھانے کا فیصلہ کیا ہے۔

فلیکس اور بینر ہٹانے کے لئے بی بی ایم پی کی مہم پر ہائی کورٹ برہم، 5؍ ستمبر تک مہلت دئے جانے کے اقدام پر عدالت نے بی بی ایم پی کو لیا آڑے ہاتھ

شہر بھر میں فلیکس اور بینر ہٹانے کے لئے برہت بنگلور مہانگر پالیکے کی طرف سے جاری مہم کی رفتار میں اور تیزی لانے پر زور دیتے ہوئے ریاستی ہائی کورٹ نے بی بی ایم پی کو تاکید کی ہے کہ آئندہ شہر میں فلیکس اور بینر لگاکر قانون شکنی کرنے والے افراد کے خلاف سخت کارروائی یقینی بنائی ...