یلاپور ضمنی انتخاب:سپریم کورٹ کا فیصلہ نہیں آنے سے  شیورام ہیبار اور ان کے حمایتی الجھن کا شکار

Source: S.O. News Service | Published on 24th September 2019, 6:08 PM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں |

یلاپور 24/ستمبر (ایس او نیوز) کانگریس پارٹی سے استعفیٰ دے کر مخلوط حکومت گرانے کاسبب بننے اور اسپیکر کی طرف سے نااہل قرار دئے جانے والے یلاپور ایم ایل اے شیورام ہیبار اور ان کے حمایتی تشویش اور الجھن میں مبتلا ہوگئے ہیں، کیونکہ سپریم کورٹ کا فیصلہ آنے میں تاخیر ہونے کی وجہ سے ان کا سیاسی مستقبل یونہی ہوا میں معلق ہوکر رہ گیا ہے۔

بی جے پی میں شمولیت اور وزارتی قلمدان کے لالچ میں جن اراکین اسمبلی نے اپنا سیاسی مستقبل داؤ پر لگایا تھا ان میں شیورام ہیبار بھی شامل ہیں۔ نااہلی کے سلسلے میں تاحال سپریم کورٹ کا فیصلہ نہیں آنے سے ان کے لئے کوئی بھی قدم اٹھانا ممکن نہیں ہے۔ضمنی انتخاب کا اعلان ہوچکا ہے۔ شیورام ہیبار کے لئے بی جے پی داخلہ فی الحال ممکن نہیں ہے۔ کانگریس اور جنتا دل کے دروازے ان پر بند ہوچکے ہیں۔ ایسے وہ کیا کریں گے اور ان کے حمایتی اب کس کا ساتھ نبھائیں گے، اس سوال کا جواب نہیں مل رہا ہے۔زمینی حقائق کی بات کریں تو منڈگوڈ اور یلاپور کے علاقے میں شیورام ہیبار کو چاہنے والوں کی ایک بڑی تعداد موجود ہے۔اس حلقے میں کانگریس پارٹی کو مستحکم کرنے میں بھی ان کا بڑا اہم کردار رہا ہے۔علاقے کے کانگریسی لیڈروں پر ان کی پکڑ بھی مضبوط تھی۔ اسی وجہ سے جب شیورام ہیبار نے کانگریس سے استعفیٰ دیا تو بلاک کانگریس صدر اوردیگر مضافاتی یونٹس کے ذمہ داران شیورام ہیبار کی حمایت میں کھڑے ہوگئے تھے۔ ہیبار کو نااہل قرار دئے جانے کے بعدد کانگریس پارٹی نے ان کی حمایت کرنے والے پارٹی کے کئی ذمہ داروں کو ان کے عہدے ہٹا کر نئے لوگوں کو اس مقام پر بٹھا دیا ہے۔

 شیورام ہیبار کے حمایتی اس وجہ سے بھی کچھ مایوس دکھائی دے رہے ہیں کہ ہیبار کو بی جے پی میں شامل کرنے اور انتخابی اکھاڑے میں اتارنے کا موقع ہاتھ سے نکل جانے کے بعد شیورام کے بیٹے ویویک کو ٹکٹ دینے یا کوئی بڑا عہدہ دینے کے بارے میں بھی بی جے پی کی طرف سے کوئی اشارہ نہیں کیا جارہا ہے۔ لیکن اب بھی بہت سے حمایتیوں کی نظر سپریم کورٹ پر لگی ہوئی ہے اور وہ سوچ رہے ہیں کہ30 ستمبر سے قبل شاید سپریم کورٹ کا فیصلہ نااہل قرار دئے گئے اراکین اسمبلی کے حق میں آجائے گا اور شیورام ہیبار ہی بی جے پی کے ٹکٹ پر یلاپور حلقے سے امیدوار بنادئے جائیں گے۔

 اس دوران منڈگوڈ سے ملنے والی ایک خبر کے مطابق جنگلاتی زمین پر قبضہ داروں کے حقوق کے لئے جدوجہد کرنے والی اتی کرم ہوراٹا سمیتی کے ضلع صدر ویندرا نائک پر اتی کرم داروں کی طرف سے دباؤ بنایا جارہا ہے کہ وہ یلاپور حلقے سے الیکشن لڑیں تاکہ سیاسی قوت کے ساتھ وہ جنگلاتی زمین کے قبضہ داروں کو انصاف دلانے میں کامیاب ہوسکیں۔منڈگوڈ علاقے کے اتی کرم داروں کا احساس ہے کہ برسہابرس سے جنگلاتی زمین پر رہائش اور کھیتی باڑ ی کرنے والے ہزاروں افراد کے مسائل حل کرنے اورانہیں اپنے حقوق دلانے کے لئے رویندرا نائک کا انتخاب لڑنا بہت ہی بہتر ہوگا۔

دوسری طرف سرکاری طور پر یلاپور حلقے کے لئے انتخابی تیاریاں شروع ہوگئی ہیں۔ محکمہ زراعت کے جوائنٹ ڈائریکٹر ہونپّا گووندا گوڈا کو ضمنی انتخاب کے لئے الیکشن آفیسر مقرر کیا گیا ہے۔ تحصیلدار ڈی جی ہیگڈے معاون الیکشن آفیسر ہونگے۔نامزدگی فارم 23ستمبر سے تحصیلدار دفتر میں قبول کیے جانے کا اعلان کیا گیا ہے۔ 30ستمبر کو سرکاری تعطیل ہے اس دن کو چھوڑ کر بقیہ دنوں میں صبح 11بجے سے 3بجے تک نامزدگی فارم قبول کیے جائیں گے۔

ایک نظر اس پر بھی

منگلورو: جعلی کرنسی چھاپنے اور بازار میں چلانے والے دو ملزمین گرفتار 

بجپے پولیس اسٹیشن کے افسرا ن نے جعلی نوٹ چھاپنے اور اسے بازار میں چلانے کی کوشش کرنے والے دو ملزمین کو گرفتار کیا ہے اور ان کے قبضے سے جعلی نوٹ، کلر پرنٹر، موبائل فونس اور موٹر سائیکل ضبط کرلیے گئے ہیں۔

کوسموس اسپورٹس سنٹر بھٹکل کے زیراہتمام تعلیمی و تہنیتی ایوارڈ پروگرام کا شاندار انعقاد :وہی علم ،علم ہے جو اللہ سے جوڑے

کوسموس اسپورٹس سنٹر بھٹکل کے زیر اہتمام کوسموس تعلیمی و تہنیتی ایوارڈ کی تقریب بروز جمعرات کی رات 27فروری 2020کو مرکزی خلیفہ جماعت المسلمین بھٹکل کے قاضی مولانا خواجہ معین الدین اکرمی ندوی مدنی کی زیر سرپرستی  خلیفہ محلہ میں کامیابی کے ساتھ  منعقد ہوا۔

گنگولی کی توحید وومنس کالج میں ماحولیات اور قائدانہ صلاحیت پرپروگرام کا انعقاد : طلبا سرکاری منصوبہ جات کو سماج تک پہنچانے میں اہم رول ادا کریں

توحید وومنس ڈگری کالج گنگولی کے زیراہتمام نہرو یوتھ سنٹر اُڈپی، آسرے یوتھ کلب تراسی کے اشتراک سے کالج طلبا میں ماحولیات ،پانی کا غیر ضروری استعمال اور قائدانہ صلاحیت پیدا کرنے کے مقصد کو لے کر ’یوتھ پارلیمنٹ ‘ پروگرام کا انعقاد کیاگیا ۔

کنداپور اور بیندور پولیس نے دبئی سے سونا اسمگل کرنے کے الزام میں بھٹکل کے 13افراد کو کیا گرفتار

دبئی سے کالیکٹ ایئر پورٹ پر اترنے کے بعد غیر قانونی طور پر کاراور ٹرین کے ذریعے سونا اسمگل کرنے کے الزام میں کنداپور اور بیندور پولیس نے بھٹکل سے تعلق رکھنے والے 13افرد کو گرفتار کیا ہے اوران کے قبضے سے تقریباً51لاکھ روپے کا سونا ضبط کیا ہے۔

کرناٹک کے وجیا پور میں شہریت ترمیمی قانون کے خلاف زبردست احتجاجی مظاہرہ۔سیاسی و سماجی لیڈروں نے کیا 2لاکھ سے زائد افرادسے خطاب 

شہریت سے متعلقہ سی اے اے، این آر سی اور این پی آر قوانین کے خلاف”دستور بچاؤ“ عنوان کے تحت ایک زبردست احتجاجی مظاہرہ وجیاپور میں منعقد کیا گیا جس سے خطاب کرتے ہوئے سابق مرکزی وزیر یشونت سنہا نے کہا کہ ایسے قوانین کا نفاذ کرتے ہوئے مرکزی حکومت ملک کے آئین کی دھجیاں اڑانے کا کام ...

کرناٹک کے اقلیتی بجٹ میں 40فیصد تک کٹوتی کے آثار،2019/20کے 2950کروڑ کے مقابلے 2000کروڑ بھی مل گئے تو غنیمت

ایسے مرحلے میں جبکہ وزیر اعلیٰ بی ایس ایڈی یورپا کی طرف سے ریاستی بجٹ کی تیاری کا عمل تیزی سے جاری ہے۔ مختلف سرکاری محکموں کے افسروں سے وزیر اعلیٰ کی میٹنگوں کا سلسلہ بھی تکمیل کی طر ف گامزن ہے۔

انڈر ورلڈ ڈان روی پجاری کو بنگلورو لایا گیا؛ عدالت میں پیش ، 14؍ دنوں تک پولیس کی حراست میں

متعدد مقدمات میں پولیس کو مطلوب انڈرورلڈ ڈان روی پجاری کو پیر کی صبح اولین ساعتوں میں کرناٹکا پولیس کی ٹیم سنیگیل سے بنگلورو لے آئی۔ بنگلورو آمد کے بعد اسے شہر کی عدالت میں پیش کیا گیا جہاں اسے 14؍ دن کی پولیس حراست میں دیا گیا۔

ٹرمپ کے بھارت دورے سے ملک کو کوئی فائدہ نہیں : حزب مخالف لیڈر سدرامیا

امریکہ کے صدر ڈونالڈ ٹرمپ کے بھارت دورے سے ہمارے ملک کو کوئی فائدہ نہیں ہے۔ مودی بھی جب امریکہ کا دورہ کئے تھے تو  کیا ہمارے ملک کو فائدہ ہواتھا ؟ ۔ ودھان سبھا میں حزب مخالف لیڈر سدرامیا نے ٹرمپ کے دورے کو لے کر سوال کیا۔

آئین نے ہی ایک چائے بیچنے والے کو وزیر اعظم کا عہدہ دیا؛ بیدر ضلع کے بسواکلیان میں سیاہ قوانین کے خلاف جلسہ عام ۔ سابق وزیر اعلیٰ سدارامیا و دیگر کا خطاب

بیدر شہر کے تعلقہ اسٹیڈیم میں کل شام جوائنٹ ایکشن کمیٹی بسواکلیان کے زیر اہتمام مرکزی حکومت کی جانب سے نافذ کئے گئے سیاہ قوانین سی اے اے ، این آر سی ، این پی آر کے خلاف جلسہ عام منعقد ہوا۔جس میں بسواکلیان کے علاوہ ضلع بیدر ، کلبرگی ، عمرگہ ، سولہ پور، لاتو، نیلنگہ سے بھی عوام ...