2014 کے لوک سبھا انتخابات میں تمام ای وی ایم ہیک کئے گئے تھے: امریکن سائبر ایکسپرٹ کا دعویٰ؛ کیا ای وی ایم نے بی جے پی کو اقتدار دلایا ؟

Source: S.O. News Service | Published on 21st January 2019, 10:23 PM | ملکی خبریں | عالمی خبریں |

لندن 21؍جنوری (ایس او نیوز) امریکہ میں مقیم ایک سائبر ماہر سید شجاع نے دعویٰ کیا ہے کہ   ہندستان میں    سال 2014میں ہوئےعام انتخابات میں استعمال کی گئی  الیکٹرونک ووٹنگ مشین (ای وی ایم) کو  ہیک کیا گیا تھا۔ 543 سیٹوں والے اس الیکشن میں بی جے پی کو282 سیٹوں پر شاندار کامیابی حاصل ہوئی تھی اور سن 1984 کے بعد پہلی مرتبہ کسی واحد پارٹی کو اتنی  بڑی اکثریت سے کامیابی ملی تھی۔

لندن میں وڈیو کانفرنسنگ کے ذریعے   اخبارنویسوں سے گفتگو  کرتےہوئے سید شجاع  نے بتایا کہ وہ  نمونے کے طور پر بتا سکتا ہے کہ وہ   ووٹنگ مشین  کو کیسے ہیک کرسکتا ہے۔اس موقع پر سنئیر کانگریس لیڈر کپل سبل بھی موجود تھے۔

الیکٹرانک ووٹنگ مشین ہیک کرنے کے تعلق سے  سید شجاع کی پریس کانفرنس پر Thequint  نے تفصیلی رپورٹ شائع کی ہے۔

رپورٹ میں شجاع کا دعویٰ ہے  کہ جب   الیکٹرانک ووٹنگ مشین  کے ساتھ چھیڑ چھاڑ کے معاملے پر وہ اپنے ایک ساتھی کے ساتھ   حیدرآباد میں بی جے پی  کے اُس لیڈر  سے ملنے گئے تھے جن کو  مشین ہیک کرنے کے تعلق سے جانکاری تھی، جب  انہوں نے  اس تعلق سے سوال کرنے کی کوشش کی  تو  اُن پر گولیاں چلائی گئیں، شجاع کے مطابق اس کا ساتھی اُس  حملے میں ہلاک ہوگیا، مگر وہ (شجاع) زخمی ہوگیا تھا۔ شجاع کا کہنا ہے کہ  اس موقع پر واقعے پر پردہ ڈالنے کے لئے حیدرآباد میں فرقہ وارانہ  واقعہ  رونما کرایا گیا، شجاع کے مطابق معاملے کی سنگینی کو دیکھتے ہوئے اسے  ہندوستان چھوڑنا پڑا اور  امریکہ میں رہائش اختیار کرنی پڑی۔

سائبر کے اس ماہر نے اس بات کا بھی حیرت انگیز دعویٰ کیا ہے کہ  2014 میں بی  جے پی لیڈر گوپی ناتھ مُنڈے کی جو حادثاتی موت ہوئی تھی، وہ حادثہ نہیں تھا، بلکہ وہ قتل تھا۔ شجاع کے مطابق مشینوں کو ہیک کرنے کے بارے میں گوپی ناتھ مُنڈے کو معلوم تھا، اس لئے اُن کا قتل کرایا گیا۔ شجاع کایہ بھی کہنا ہے کہ  اُس وقت نیشنل انویسٹی گیشن ایجنسی (این آئی اے) کی طرف سے تنزیل احمد، گوپی ناتھ  مُنڈے کی موت کی جانچ کررہے تھے اور جیسے ہی اُنہیں پتہ چلا کہ مُنڈے کا قتل ہوا ہے، وہ  اس قتل کی ایف آئی آر درج کرنے والے تھے مگر رپورٹ درج کرنے سے پہلے ہی آفسر تنزیل احمد کو بھی راستے سے ہٹا دیا گیا اور اُن کا بھی قتل کیا گیا۔

ریلائنس کا تعاون :ای وی ایم تیار کرنے والی ٹیم میں شامل ہونے کا دعویٰ کرنے والے  سید شجاع کا کہنا ہے کہ  انتخابات کے دوران  ریلائنس  نے ای وی ایم ہیک  کرنے کے لئے بی جے پی آئی ٹی سیل کو کم فرکوئنسی کے  سگنل سپلائی کئے تھے۔ ڈاٹا سپلائی کرنے کے لئے ریلائنس جیو کے پاس نیٹ ورک ہے ، بی جےپی اس کا بھرپور فائدہ اٹھا رہی ہے۔ بھارت میں ایسی سہولیات حاصل ہونے  والے 9علاقے ہیں۔شجاع کے مطابق  خود ملازموں کو بھی اس بات کا شعور نہیں رہتا کہ ای وی ایم میں گڑ بڑی پیدا کی گئی ہے، وہ سمجھتے ہیں کہ ہم صرف ڈاٹا انٹری کررہے ہیں۔

تین ریاستوں میں بی جے پی کی ہار کا اصل سبب: شجاع کا دعویٰ ہے کہ ہماری ٹیم اگر  بی جے پی کی ہیکنگ کی  کوششوں کو نہ روکتی  تو بی جے پی چھتیس گڑھ ، مدھیہ پردیش اور راجستھان میں بھی جیت حاصل کرتی۔

سید شجاع کا کہنا ہے کہ  2009سے 2014تک وہ الکٹرانک کاپوریشن آف انڈیا لمیٹیڈ کے ساتھ کا م کررہے تھے۔ 

ای وی ایم اور گوری لنکیش  کا قتل : 2014کے لوک سبھا انتخابات میں سبھی ای وی ایم کو  ہیک  کئے جانے کی رپورٹ شائع کرنے کے لئے مقتول صحافی گوری لنکیش تیار تھیں۔ ای وی ایم میں استعمال کئے گئے کیبل کس نے تیار کئے تھے اس کی جانکاری حاصل کرنے کے لئے گوری لنکیشن نے آرٹی آئی کے ذریعے عرضی داخل کی تھی، شجاع کا دعویٰ ہے کہ اسی  کی بنیاد پر ان کا قتل کیا گیا۔

انہوں نے بتایا کہ بلیو ٹوتھ استعمال کرکے ای وی ایم کو  ہیک  کرنا ممکن نہیں ہے۔ان کے مطابق  ای وی ایم کو ہیک  کرنے کے لئے گرافائٹ پر منحصر ٹرانسمٹر کی ضرورت ہوتی ہے اور  2014میں یہی ٹرانسمٹر استعمال کئے گئے تھے۔

الیکشن کمیشن کا انکار: الیکٹرونک ووٹنگ مشین (ای وی ایم) ہیک کرنے کے دعوے کے کچھ دیر بعد ہی آج الیکشن کمیشن نے ایسے کسی اندیشہ کو مکمل طورپر خارج کرتے ہوئے کہاکہ وہ ایسا دعوی کرنے والوں کے خلاف قانونی کارروائی کرنے پر غور کررہا ہے۔

کمیشن نے ایک بیان میں امریکی ہیکر کے ذریعہ لندن میں منعقدہ پریس کانفرنس  کا ذکر کرتے ہوئے کہاکہ الیکشن کمیشن اپنی اس بات پر قائم ہے کہ ملک میں انتخابات کے دوران استعمال کی جانے والی ای وی ایم کے ساتھ چھیڑ چھاڑ نہیں کی جاسکتی۔ ہم یہ بات دہراتے ہیں کہ ای وی ایم کی مینوفیکچرنگ نہایت نگرانی میں اور سیکورٹی کے تحت بھارت الیکٹرانکس لمیٹڈ اور الیکٹرانکس کارپوریشن آف انڈیا لمیٹڈ کے ذریعہ کرائی جاتی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

کیرالہ میں آر ایس ایس کارکن گرفتار، پوچھ تاچھ میں ہوئے حیرت انگیز انکشافات

پڑوسی ریاست کیرالہ  کے کنور میں آر ایس ایس دفتر کے پاس واقع پولس پوسٹ پر بم پھینکے جانے کے الزام میں پولس نے آر ایس ایس کارکن کو گرفتار کرنے کی خبر موصول ہوئی ہے۔ ذرائع سے ملی اطلاع کے مطابق تمل ناڈو کے کوئمبٹور سے آر ایس ایس کا یہ ورکر بدھ کے روز گرفتار ہوا جس کے بعد اس سے سختی کے ...

اندرا جے سنگھ کے بیان پر کنگنا کا نازیبا تبصرہ؛ ایسی خواتین کی کوکھ سے عصمت دری کرنے والے پیدا ہوتے ہیں

نربھیا عصمت دری معاملہ مستقل خبروں میں بنا ہوا ہے اور اب مجرموں کو پھانسی دینے کا معاملہ سرخیوں میں ہے۔ نربھیا کے والدین ذرائع ابلاغ کے لئے سیلیبریٹی سے کم نہیں ہیں اور اسی وجہ سے حال ہی میں دہلی اسمبلی انتخابات میں یہ بات بہت تیزی کے ساتھ پھیلی کہ نربھیا کی والدہ اسمبلی چناؤ ...

راجستھان: کوٹہ میں بھی خواتین نے بنایا ’شاہین باغ‘، احتجاج کا سلسلہ 9 دنوں سے جاری

دہلی کے شاہین باغ سے تحریک لیکر ملک کے مختلف طول و عرض میں شہریت ترمیمی قانون، این آر سی اور این پی آر کے خلاف خواتین کے مظاہروں کا سلسلہ لگاتار جاری ہے۔ ت تکنیکی تعلیمی اداروں کے لیے مشہور راجستھان کے شہر کوٹہ میں بھی خواتین نے ایک ’شاہین باغ‘ قائم کر لیا ہے اور گذشتہ 9 روز سے ...

میری بیٹیوں پر مقدمہ درج ہوا تو امت شاہ پر کیوں نہیں؟ منور رانا

شہریت ترمیمی قانون (سی اے اے) کے خلاف مظاہرے میں شامل ہونے کی پاداش میں اپنی بیٹیوں کے خلاف مقدمہ درج لکھے جانے کے بعد اردو کے نامور شاعر منور رانا نے امت شاہ کی لکھنؤ ریلی پر سوال اٹھایا ہے۔ انہوں نے کہا کہ مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ نے جلسہ عام سے خطاب کر کے انتظامیہ کی طرف سے ...

ملک گیر احتجاج: ’شاہین باغ کی دبنگ دادیوں کو گمراہ کر کے ایل جی کے پاس لے جایا گیا‘

قومی شہریت ترمیمی قانون، این آر سی اور این پی آر کے خلاف شاہین باغ مظاہرین انتظامیہ نے واضح کیا ہے کہ احتجاج جاری رہے گا۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ دبنگ دادیوں کو گمراہ کر کے لیفٹننٹ گورنر سے ملاقات کرائی گئی تھی اور جو لوگ انہیں وہاں لے کر گئے تھے وہ شاہین باغ خواتین مظاہرین کی ...

جرمنی: سی ایس یو کی طرف سے پہلا مسلمان میئر اُمیدوار

اسلام اور جرمنی کی سیاسی جماعت کرسچن سوشل یونین کے مابین تعلقات کو ایک حساس اور مشکل موضوع تصور کیا جاتا ہے۔ لیکن اب اسی جماعت نے میئر کی سیٹ کے لیے ایک 37 سالہ مسلمان امیدوار اوزان ایبش کا انتخاب کیا ہے۔ اس مسلمان امیدوار کا انتخاب میونخ کے شمال میں واقع قصبے 'نوئے فارن‘ کی سی ...

کولمبیا میں حکومت مخالف مظاہروں میں جھڑپیں 

کولمبیا کے دارالحکومت بوگوٹا کی شاہراہوں پر حکومت مخالف مظاہروں میں پولیس اور مظاہرین کے درمیان جھڑپوں میں کم از کم چار افراد زخمی ہوگئے، جن میں سے تین پولیس اہلکار تھے۔ منگل کے روز بوگوٹا سٹی ہال میں 20 مظاہروں کی اطلاع دی گئی، جن میں سے بیشتر کو پر امن بتایا گیا۔

انڈونیشیا میں پل گرنے سے9 افراد دریا میں ڈوب کرہلاک؛ 17 کو بچالیا گیا

انڈونیشی جزیرے سماٹرا میں پیدل چلنے والے افراد کے لیے بنائے گئے پل کے گرنے سے نو افراد دریا میں ڈوب گئے ہیں۔ کسی حد تک کمزور پل دریا میں آنے والے زوردار سیلابی ریلے کو برداشت نہ کر سکا۔ اس سیلاب کی وجہ اتوار انیس جنوری کو ہونے والی زور دار بارش تھی۔

آسٹریلیا میں شدید ژالہ باری اور طوفان باد و باراں 

مختلف آسٹریلوی علاقوں کو آج زوردار طوفانِ باد و باراں کے ساتھ ساتھ شدید ژالہ باری کا سامنا رہا۔ انتہائی تیز ہوا، شدید بارش اور ژالہ باری نے لوگوں کو مالی نقصان پہنچایا ہے۔ کم از کم دو افراد ژالے لگنے سے زخمی ہوئے ہیں اور انہیں ہسپتال پہنچا دیا گیا ہے۔

روسی شہر پرم میں گرم پانی کی پائپ لائن پھٹنے سے پانچ افراد ہلاک

روسی شہر پَرم میں شدید گرم پانی کی پائپ لائن پھٹنے سے کم از کم پانچ افراد کے ہلاک ہونے کی تصدیق کر دی گئی ہے۔ کھولتا گرم پانی ایک ہوٹل کی بیسمنٹ کے کمروں میں داخل ہو گیا اور ان کمروں میں ٹھہرے افراد گرم پانی کی لپیٹ میں آ گئے۔ تین دوسرے افراد گرم پانی سے جھلس گئے ہیں اور انہیں ...