پرینکاگاندھی کابڑافیصلہ،یوپی اسمبلی انتخابات میں خواتین کودی جائے گی 40فیصدنمائندگی

Source: S.O. News Service | Published on 20th October 2021, 12:05 AM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

لکھنؤ،20؍اکتوبر(ایس او نیوز؍ایجنسی) کانگریس کی جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی نے اتر پردیش انتخابات کے لئے اپنا پہلا پتہ پھینک دیا ہے۔ انہوں نے لکھنؤ میں صحافیوں سے خطاب کرتے ہوئے اعلان کیا کہ اتر پردیش میں آئندہ سال ہونے والے اسمبلی انتخابات میں کانگریس خواتین کو 40 فیصد ٹکٹ دے گی۔ انہوں نے یہ بھی واضح کیا کہ وہ اتر پردیش کی ذمہ دار ہیں اس لئے وہ یہاں کے لئے اعلان کر رہی ہیں اور اگر ان کی مرضی چلتی تو وہ اس کو پچاس فیصد کر دیتیں۔ کانگریس کی ترجمان سپریہ شناتے نے پرینکا گاندھی کے اعلان سے پہلے بتایا کہ یہ ملک کی سیاست کے لئے ایک تاریخی دن ہے، انہوں نے کہا کہ اتر پردیش ایک بہت بڑے فیصلہ کن موڑ پر کھڑا ہے۔

پرینکا گاندھی نے کہا کہ کانگریس پارٹی نے یہ فیصلہ اس لئے کیا ہے تاکہ ریاست کی خواتین کو با اختیار بنایا جا سکے۔ انہوں نے اپنے بیان میں کہا کہ یہ فیصلہ الہ آباد کی ان طالبات کے لئے لیا ہے جن کی شکایت یہ ہے کہ ان کی یونیورسٹی میں لڑکوں اور لڑکیوں میں تفریق ہے، انہوں نے کہا یہ فیصلہ اس گنگا کنارے کی رہنے والی لڑکی کا ہے جو خود کو با اختیار بنانا چاہتی ہے، یہ فیصلہ اس لڑکی کے لئے ہے جس نے پریاگ راج میں ان کا ہاتھ پکڑ کر کہا تھا کہ وہ بڑی ہو کر سیاسی رہنما بننا چاہتی ہے، یہ فیصلہ اناؤ کی اس متاثرہ اور اس کی بھابھی کے لئے ہے، لکھیم پور کی بیٹیوں کے لئے ہے، صحافی رام کشیپ کی بیٹی کے لئے ہے۔ انہوں نے کہا کہ یہ فیصلہ ہر اس خاتون کے لئے ہے جو بدلاؤ چاہتی ہیں اور موجودہ ماحول کو صرف خواتین ہی بدل سکتی ہیں۔

انہوں نے اتر پردیش کی حکومت کو آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے کہا کہ یہاں ہر اس شخص کی آواز کچلی جا رہی ہے جو آواز اٹھا رہا ہے۔ انہوں نے اس موقع پر ان خواتین پولیس اہلکاروں کی پریشانیوں کا بھی ذکر کیا جنہوں نے ان کو چار بجے رات پکڑ کر سیتا پور میں حراست میں رکھا تھا۔ انہوں نے کہا جو خواتین انتخابات لڑنا چاہتی ہیں وہ درخواست دیں اور ان سے ملیں، کیونکہ خواتین کے مزاج میں نرمی اور فکر ہوتی ہے اس لئے وہ سماج کو بدل سکتی ہیں۔

واضح رہے کہ پرینکا گاندھی نے کہا ہے کہ اگر ان کا بس چلتا تو وہ خواتین کو اور زیادہ ٹکٹ دیتیں۔ انہوں نے کہا کہ اس کی نقل کانگریس پارٹی قومی پیمانہ پر بھی کرے گی، چونکہ ان کی ذمہ داری اتر پردیش کی ہے اس لئے انہوں نے یہ فیصلہ اپنی بہنوں کے لئے کیا ہے۔ پرینکا گاندھی نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ ابھی انہوں نے یہ طے نہیں کیا کہ وہ انتخابات لڑیں گی یا نہیں اور نہ ہی طے ہوا ہے کہ کون وزیر اعلی کا چہرہ ہوگا۔

ایک نظر اس پر بھی

بھیما کوریگاؤں معاملے کی ملزم سدھا بھاردواج کی مشکلات میں اضافہ، ضمانت کے خلاف سپریم کورٹ پہنچی این آئی اے

چھتیس گڑھ کی معروف سماجی کارکن اور وکیل سدھا بھاردواج کو ممبئی ہائی کورٹ کی طرف سے دی گئی ضمانت کے خلاف قومی تحقیقاتی ایجنسی (این آئی اے) نے سپریم کورٹ میں عرضی دائر کی ہے۔

قومی راجدھانی دہلی میں ’اومیکرون‘ کا خطرہ! 12 مشتبہ مریض ’ایل این جے پی‘ اسپتال میں داخل

 دہلی میں کورونا وائرس کے نئے ویرینٹ اومیکرون کا خطرہ منڈلا رہا ہے۔ خدشہ ظاہر کیا جا رہا ہے کہ کرناٹک کے بعد دہلی میں بھی اومیکرون داخل ہو چکا ہے تاہم مشتبہ افراد کی رپورٹ ابھی سامنے نہیں آئی ہے۔

بھٹکل میں’ نمَّا ناڈا اوکوٹا‘ کا تعارفی پروگرام : ملت کی سماجی وفلاحی خدمت ادارے کا اہم مقصد

ملت کے نوجوانوں کی روزگار حاصل کرنے  اور سرکاری سہولیات سےاستفادہ کرنےمیں رہنمائی اور عملی کام کرنےکا مقصد لےکر مینگلورو میں ایک سال پہلے بنیاد ڈالے گئے ’’نمَّا ناڈا وکوٹا‘‘ نامی ادارے کا تعارفی پروگرام بھٹکل کے گرین پیراڈائز میں 2نومبر 2021بروز جمعرات کی شام منعقد ہوا۔

ہندوستان میں کورونا کے 9,765 نئے کیسز، 477 اموات

گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ملک بھر میں کورونا وائرس کے کل 9,765 نئے کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔ نیز ملک میں کووڈ متاثرین کی کل تعداد اب تک بڑھ کر 3 کروڑ 46 لاکھ 06 ہزار 541 ہو گئی ہے۔ گزشتہ 24 گھنٹوں میں ملک بھر میں کووڈ کی وجہ سے کل 477 لوگوں کی موت ہوئی ہے۔ ملک میں کووڈ سے اب تک کل 4 لاکھ 69 ہزار 724 ...