بھٹکل بدریہ کالونی میں نوجوان پر حملہ کا معاملہ؛ دکشن کنڑا اور اُڈپی سے آئے تھے حملہ آور، پڑوسی اضلاع میں پہلے سے چل رہے ہیں مقدمات

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 7th December 2021, 5:51 PM | ساحلی خبریں |

بھٹکل 7ڈسمبر (ایس او نیوز) پیر کی شب  بدریہ کالونی میں ہوئے ایک نوجوان صدام حُسین پر  حملہ کے تعلق سے پولس  نے بتایا کہ  اس پر جانوروں کو چرانے والے ایک گینگ نے حملہ کیا تھا۔

اُترکنڑا کی ایس پی محترمہ  سومن ڈی   پینیکر نے ساحل آن لائن سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ  اتوار کو بھٹکل مضافاتی پولس نے  جانوروں کو چرانے کے الزام میں دو لوگوں کو گرفتار کیا تھا، پھر ان کے مزید ایک ساتھی کو پیر کے روز گرفتار کیا   گیا تھا،   اسی گینگ کے افراد نے  پیر کی شب کو  بدریہ کالونی میں   گھس کر صدام حُسین پر حملہ کیا ہے۔ ایس پی نے بتایا کہ کسی بھی حملہ آور کو بخشا نہیں جائے گا، پولس اس تعلق سے سخت کاروائی کرے گی جس کے لئے ایک ٹیم تشکیل دی گئی ہے۔

بتاتے چلیں کہ بھٹکل میں  سڑک کنارے سوئے ہوئے جانوروں اور آوارہ گردی کرنے والے جانوروں کو چرانے کے الزام میں بھٹکل مضافاتی پولس نے اتوا رکو پڑوسی ضلع   اُڈپی کے کارکلا کے رہنے والے  جلیل (34) اور  دکشن کنڑا کے مُلکی کے رہنے والے  مصطفیٰ محی الدین (30) کو گرفتار کیا تھا، پیر کو ان کے ایک ساتھی  بھٹکل  کے ابراہیم کو بھی گرفتار کیا تھا جبکہ پولس کو اس تعلق سے مزید ایک شخص کی تلاش ہے۔  پولس کا کہنا ہے کہ  ان گرفتاریوں کو لے کر  جانوروں کو چرانے والے گینگ   نے اس شک کی بنیاد پر کہ صدام حُسین نے   اس تعلق سے پولس کو خبر دی تھی، بدریہ کالونی میں  گھس کر صدام حُسین پر جان لیوا حملہ کیا  جس میں صدام بری طرح زخمی ہوگیا ہے۔ 

پولس نے بتایا کہ زخمی صدام نے  اپنی شکایت میں  اپنے اوپر حملہ کرنے والوں میں سے  چار کے نام بتائے ہیں جس میں  بشیر،  جبار،  مناف اور جبالی شامل ہیں، اُس  نے یہ بھی بتایا ہے کہ جملہ سات لوگوں نے اس پر حملہ کیا تھا ۔

پولس کا کہنا ہے کہ  دکشن کنڑا، اُڈپی اور بھٹکل کے بعض لوگوں پر مشتمل یہ گینگ سڑک کنارے آوارہ گردی کرنے والے جانوروں کو   رات کے اندھیرے میں چراتی ہے  اور گاڑیوں میں ٹھونس کر  جانوروں کو لے جاتی ہے، اگر  ایسا کرنے کے دوران کوئی ان کی طرف دیکھتا ہے اور   کسی طرح کی مزاحمت کرنے کی کوشش کرتا ہے تو اُنہیں تلواروں سے ڈرایا اور دھمکایا جاتا ہے۔   پولس نے بتایا کہ بھٹکل میں جانوروں کو چرانے والے لوگوں سمیت صدام پر حملہ کرنے والوں کے خلاف اُڈپی اور مینگلور کے پولس تھانوں میں  پہلے سے معاملات درج  ہیں جس میں بعض پر قتل کے مقدمات بھی چل رہے ہیں۔

 

اس نیوز سے منسلک   پہلے شائع شدہ  رپورٹ:

بھٹکل میں نامعلوم لوگوں کا ایک نوجوان پرحملہ؛ نوجوان شدید زخمی۔ کنداپور شفٹ

ایک نظر اس پر بھی

کاروار: دانتوں میں درد اور سردرد جیسی عام بیماریوں پر اسپتال نہ جائیں ،شدید بیمار پڑنے یا ایمرجنسی کی صورت میں ہی اسپتال کا رخ کریں: کاروار اور ہوناور میں پانچ دنوں تک اسکول بند

شدید بیمار پڑنے اور ایمرجنسی ہونے پر ہی سرکاری، پرائیویٹ  اسپتال یا سوپر اسپیشالٹی اسپتال کا رُخ کریں اور معمولی بیمار مثلاً دانتوں کا درد، سر میں درد وغیرہ پر  اسپتالوں کا رُخ نہ کیا جائے، ایسی عام بیماریوں کے لئے مقامی ڈاکٹروں کے ذریعے علاج کراسکتے ہیں۔ اس طرح  کا حکم حکومت ...

جامعہ اسلامیہ بھٹکل کے ہونہار فرزند کابڑا کارنامہ ۔ انٹرنیشنل سطح پر روشن کیا بھٹکل کانام

کہتے ہیں کہ درخت اپنے پھل سے پہچانا جاتا ہے اور تعلیمی ادارے اپنے فارغین کی لیاقت اور صلاحیت سے پہچانے جاتے ہیں، ہندوستان میں بڑے تعلیمی اداروں کا نام کچھ شخصیات نے ہی روشن کیا ہے ،  الحمد للہ بھٹکل کے دینی و عصری تعلیم گاہوں کے طلبہ و طالبات بھی بڑی حد تک اپنی مادر علمی کی نیک  ...