مغل سرائے:گائے کی چوری کے الزام میں دو نوجوانوں کی بھیڑ نے کی جم کرپٹائی

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 9th January 2018, 12:17 PM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

مغل سرائے،8؍جنوری(ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا)گؤرکشکوں کی شکل میں ہندتو دہشت گردی کا استعمال ملک میں تھمنے کا کا نام نہیں لے رہی ہے۔جس کاتازہ معاملہ اتر پردیش کے مغل سرائے سے سامنے آیا ہے، جہاں دو نوجوانوں کو گائے کی چوری کے الزام میں بھیڑ نے جم کرپٹائی کی اور پولیس کے حوالے کردیا۔میڈیا رپورٹ کے مطابق مغل سرائے کے سبھاش نگر میں ایک گھر سے دو ملزمان نے مبینہ طور پر گائے چوری کرکے بھاگ رہے تھے،بعد میں انہیں پکڑا گیا، اس دوران بھیڑ جمع ہوگئی،بعد میں جوانوں کوہی پولیس کو حوالے کردیا گیا،مارپیٹ کرنے والے افراد بلاخوف گھوم رہے ہیں۔ایس پی چندولی ایس کے سنگھ نے کہا کہ ابتدائی تحقیقات سے پتہ چلتا ہے کہ ملزم دونوں مقامی رہائشی گائے اور بچھڑے کو چوری کرکے بھاگنے کی کوشش کر رہے تھے،جب لوگوں نے انہیں گھر سے بھاگتے دیکھا تو انہوں نے اسے پکڑ کرپٹائی کی اور اسے پولیس کے حوالے کیا۔انہوں نے یہ بھی کہا ہے کہ ملزم کے خلاف چوری کامعاملی درج کرلیاگیا ہے۔ملزمان کو بھیڑ کی طرف سے مارے جانے پرایس پی نے کہا کہ نوجوانوں کو مارنے والوں پر سخت کارروائی کی جائے گی۔بتا دیں کہ حال ہی میں جنید قتل اور ملک بھر میں بھیڑ کی طرف مذہب کے نام پر ہو رہے تشدد کو لے کر جمعرات (29جون)کو خاموشی توڑتے ہوئے وزیر اعظم مودی نے کہا تھا کہ میں ملک کے موجودہ ماحول کولے کر میں اپنے درد کا اظہار کرنا چاہتا ہوں اور اپنی ناراضگی کابھی اظہار کرتاہوں۔ساتھ ہی پی ایم مودی نے بھی لوگوں کو خبردار کیا کہ گؤرکشا کے نام پر قتل برداشت نہیں کیاجائے گا۔

ایک نظر اس پر بھی

چامراج نگر زہریلے پرسادسے ہلاکتوں کا معاملہ: گروہی مفاد پرستی نے لی 15بے قصوروں کی جان۔ مندر کے پجاری نے دی تھی سپاری !

چامراج نگر کے سولواڈی گاؤں میں مندر کا زہریلا پرساد کھانے کے بعد ہونے والی15بھکتوں کی ہلاکتوں کے پیچھے اسی مندر کے چیف پجاری کی سازش کا خلاصہ سامنے آیا ہے۔ ...

وزیراعظم مودی کا حملہ:4سال پہلے کسی نے سوچابھی نہیں تھا کہ سکھ فسادمعاملے میں کانگریس لیڈر کوسزا ملے گی

وزیر اعظم نریندر مودی نے 1984سکھ مخالف فسادات میں انصاف میں تاخیر کا خاکہ پیش کرتے ہوئے منگل کو کہا کہ کسی نے نہیں سوچا تھا کہ کانگریس لیڈر کو معاملے میں مجرم ٹھہرایا جائے گا۔

کرناٹکا کے کولار میں اسکول کی دیوار گرنے سے ساتویں جماعت کی طالبہ فوت

کولار ضلع کے ملباگل تعلق میں آنے والے گنا گنٹے پالیہ سرکل میں واقع مرارجی دیسائی اقامتی اسکول کے احاطے میں بیت الخلاء کی دیوار گرنے کے نتیجے میں ایک ساتویں  جماعت کی طالبہ کی موت واقع  ہوگئی۔ مہلوک کی شناخت جوسنا کی حیثیت سے کی گئی ہے۔

مینگلور: پولیس کے خوف سے سائڈلیتے وقت ٹرک الٹ گیا۔ کلینر کی موت۔ برہم عوام نے کیا راستہ روک کر احتجاج

منگلورو شہر کے مضافات تھوکٹو میں پولیس نے گاڑی روکنے کے لئے کہاتوکیرالہ کی طرف جانے والے ایک ٹرک کے ڈرائیور نے اپنی گاڑی سائڈ میں لے جانے کی کوشش کی جس کے دوران گاڑی الٹ گئی اوراس کے نتیجے میں وسنت کمار (25سال) نامی کلینر ہلاک ہوگیا، جو کہ شکاری پور کا رہنے والا تھا۔ 

چامراج نگر مندر حادثے کے ذمہ داروں کو بخشا نہ جائے: جی پرمیشور

باگلکوٹ ضلع کے ایک نجی شکر کے کارخانے میں بائلر پھٹنے کی وجہ سے ہلاک افراد کے ورثاء کو ریاستی حکومت کی طرف سے پانچ لاکھ روپیوں کا معاوضہ دینے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ یہ بات آج ریاستی اسمبلی میں نائب وزیراعلیٰ ڈاکٹر جی پرمیشور نے بتائی۔

سکھ فسادات: میرے خلاف نہ کوئی ایف آئی آر اور نہ ہی چارج شیٹ، کمل ناتھ نے کہا،بی جے پی جھوٹ پھیلارہی ہے

مدھیہ پردیش کے وزیراعلیٰ کمل ناتھ نے 1984 کے سکھ فسادات پر اٹھ رہے سوالوں پر جواب دیاہے۔کمل ناتھ نے کہاہے کہ 1984 کے سکھ فسادات میں ان کے خلاف کوئی بھی ایف آئی آر یا چارج شیٹ نہیں ہے۔انہوں نے کہا کہ اب اس مسئلے کواٹھانے کے پیچھے صرف سیاست ہے۔انہوں نے کہاکہ جس وقت میں کانگریس کا جنرل ...