مغل سرائے:گائے کی چوری کے الزام میں دو نوجوانوں کی بھیڑ نے کی جم کرپٹائی

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 9th January 2018, 12:17 PM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

مغل سرائے،8؍جنوری(ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا)گؤرکشکوں کی شکل میں ہندتو دہشت گردی کا استعمال ملک میں تھمنے کا کا نام نہیں لے رہی ہے۔جس کاتازہ معاملہ اتر پردیش کے مغل سرائے سے سامنے آیا ہے، جہاں دو نوجوانوں کو گائے کی چوری کے الزام میں بھیڑ نے جم کرپٹائی کی اور پولیس کے حوالے کردیا۔میڈیا رپورٹ کے مطابق مغل سرائے کے سبھاش نگر میں ایک گھر سے دو ملزمان نے مبینہ طور پر گائے چوری کرکے بھاگ رہے تھے،بعد میں انہیں پکڑا گیا، اس دوران بھیڑ جمع ہوگئی،بعد میں جوانوں کوہی پولیس کو حوالے کردیا گیا،مارپیٹ کرنے والے افراد بلاخوف گھوم رہے ہیں۔ایس پی چندولی ایس کے سنگھ نے کہا کہ ابتدائی تحقیقات سے پتہ چلتا ہے کہ ملزم دونوں مقامی رہائشی گائے اور بچھڑے کو چوری کرکے بھاگنے کی کوشش کر رہے تھے،جب لوگوں نے انہیں گھر سے بھاگتے دیکھا تو انہوں نے اسے پکڑ کرپٹائی کی اور اسے پولیس کے حوالے کیا۔انہوں نے یہ بھی کہا ہے کہ ملزم کے خلاف چوری کامعاملی درج کرلیاگیا ہے۔ملزمان کو بھیڑ کی طرف سے مارے جانے پرایس پی نے کہا کہ نوجوانوں کو مارنے والوں پر سخت کارروائی کی جائے گی۔بتا دیں کہ حال ہی میں جنید قتل اور ملک بھر میں بھیڑ کی طرف مذہب کے نام پر ہو رہے تشدد کو لے کر جمعرات (29جون)کو خاموشی توڑتے ہوئے وزیر اعظم مودی نے کہا تھا کہ میں ملک کے موجودہ ماحول کولے کر میں اپنے درد کا اظہار کرنا چاہتا ہوں اور اپنی ناراضگی کابھی اظہار کرتاہوں۔ساتھ ہی پی ایم مودی نے بھی لوگوں کو خبردار کیا کہ گؤرکشا کے نام پر قتل برداشت نہیں کیاجائے گا۔

ایک نظر اس پر بھی

سرسی میں پرکاش رائے کے خطاب کردہ اسٹیج کوبی جے پی نے گائے کے پیشاب سے کیاپاک !

’ہمارا دستور ہمارا فخر‘کے موضوع پر اداکار دانشور پرکاش رائے نے سرسی میں جس اسٹیج سے خطاب کیا تھااس مقام کو اور راگھویندرامٹھ کلیان منٹپ کے احاطے کو بی جے پی کارکنان نے گائے کے پیشاب سے پاک کرنے کی کارروائی انجام دی۔

بھٹکل سرکاری اسپتال میں ایک بھی ڈاکٹر ڈیوٹی پر موجود نہ ہونے پر عوام اور مریض سخت برہم؛ احتجاج کی دھمکی کے بعددوسرے اسپتال کا ڈاکٹر پہنچا اسپتال

آج صبح سے بھٹکل سرکاری اسپتال میں ایک بھی ڈاکٹر موجود نہ ہونے کو لے کر مقامی عوام جو مریضوں کو لے کر اسپتال پہنچے تھے، سخت برہم ہوگئے اور اسپتال پر موجود نرس سمیت دیگر اسٹاف پر اپنا غصہ اُتارنے کی کوشش کی۔ اس موقع پر ڈیوٹی پر موجود نرس کو عوام نے آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے  دس منٹ ...