فارمولین کے مسئلے پر گوا میں بیرونی ریاست کی مچھلیوں پر لگی پابندی۔ ساحلی علاقوں میں مچھلی فروشوں کو لگا زبردست جھٹکا

Source: S.O. News Service | Published on 6th November 2018, 8:32 PM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں |

اڈپی6؍نومبر (ایس او نیوز) پڑوسی ریاست گوا کی حکومت نے بیرونی ریاستوں سے آنے والی مچھلیوں میں فارمولین نامی کیمیکل کی موجودگی پر سخت قدم اٹھاتے ہوئے مچھلیوں کی درآمد پر پابندی لگادی ہے۔اس سے خاص کر ساحلی کرناٹکا کے ماہی گیروں اور مچھلی کے تاجروں کو زبردست جھٹکا لگا ہے۔کیونکہ ساحلی کرناٹک کے مختلف مقامات سے روزانہ ہر ٹرک میں 6سے7ٹن مچھلیوں کے ساتھ 15تا20ٹرک مچھلیاں گوا میں فروخت کی جاتی تھیں۔

خیال رہے کہ حکومت گوا کی طرف سے بیرونی ریاستوں سے فروخت کے لئے لائی جانے والی مچھلیوں کو فارمولین سے پاک رکھنے کی ہدایت جاری کیہے اور اس کے لئے فوڈ اینڈ ڈرگ ڈپارٹمنٹ کی طرف سے سرٹفکیٹ لازمی قرار دیا گیا ہے۔ اس کے علاوہ مچھلیاں سپلائی کرنے والے ٹرکس کو انسولیٹ کرنا اوراس میں سے سڑک پر گندا پانی نہ چھوڑنے کا بندوبست کرنا بھی ضروری کیا گیا ہے۔ مچھلی کے تاجروں نے ان قوانین پر عمل کرنے کے لئے کچھ مہلت طلب کی تھی، لیکن حکومت گوا کے افسران سرحد پر ہی چیکنگ کررہے ہیں اور ان کے قوانین کے مطابق عمل نہ کرنے والے ٹرکس کو گوا میں داخل ہونے کی اجازت نہیں دے رہے ہیں۔اس وجہ سے ساحلی کرناٹکا کے مچھلیوں کے ٹرکس ماجالی چیک پوسٹ پر قطاردرقطار کھڑے نظر آرہے ہیں۔

اس صورتحال پر تبصرہ کرتے ہوئے’ملپے ماہی گیر ایسوسی ایشن‘ کے صدر ستیش کندر نے کہا کہ :’’ہم نے فارمولین کے تعلق سے ملپے میں مچھلیوں کا معائنہ کیا۔ ابتدا میں تملناڈو سے آنے والی مچھلیوں کے اندر فارمولین پایا گیا ۔ لیکن اب اس کی مسلسل جانچ اور نگرانی کی وجہ سے مچھلیوں کو محفوظ کرنے کے لئے فارمولین کا استعمال مکمل طورپر بند ہوگیا ہے۔ لیکن حکومت گوا کی جانب سے اچانک کیے گئے فیصلے کی وجہ سے ماہی گیر اور تاجروں کوکروڑوں روپوں کا نقصان ہوا ہے۔ ایک تو مانسون اور اس کے بعد طوفان کی وجہ سے سمندر میں ماہی گیری پر پابندی لگی تھی اور گوا کی حکومت کی پابندی سے دوسرا زبردست جھٹکا لگاہے۔‘‘

ایک نظر اس پر بھی

چیتے کی کھال فروخت کرنے کے دوران کنداپور میں بھٹکل کے پانچ افراد سمیت دس گرفتار

یہاں شاستری سرکل کے قریب غیر قانونی طورپر چیتے کی کھال فروخت کرنے کے الزام میں بینگلور کی سی آئی ڈی فوریسٹ یونٹ  نے دس افراد کو گرفتار کرلیا ہے جس میں پانچ کا تعلق بھٹکل، تین کا تعلق بیندور اور ایک ایک کا تعلق ، منڈگوڈ اور  ہوناورسے ہے۔ گرفتاری کی یہ واردات جمعہ کی دوپہر کو ...

مینگلور کے قریب پڈیل ہائی وے پر گیس ٹینکر اُلٹ گئی؛ گیس رسنے کی اطلاع کے بعد نیشنل ہائی وے بند

یہاں پڈیل۔ مرولی ہائی وے پر ایک گیس سے بھری ٹینکر اُلٹ جانے سے  گیس رسنا شروع ہوجانے  سے نیشنل  ہائی وے کو پولس نے بند کردیا ہے جس کے نتیجے میں  سڑک کے دونوں کنارے  ٹریفک نظام درہم برہم ہوگیا ۔ بتایا گیا ہے کہ پولس نے حفاظتی اقدامات کے تحت آس پاس کے سبھی علاقوں کے مکینوں کو ...

کاروار:انکولہ ۔ہبلی ریلوے لائن کی سدراہ بنے ماحولیاتی این جی اوز کو ملنے والی مالی امداد کی جانچ کریں : رکن اسمبلی روپالی نائک کامرکزی ریلوے وزیر سے مطالبہ

ریاست کے ساحلی علاقے سے شمالی کرناٹک  کو جوڑنے والی ’قسمت کی ریکھا‘ انکولہ ۔ ہبلی ریلوے لائن کی تعمیرمیں جو ماحولیاتی اداروں ، این جی اوزاور ماہرین سدراہ بنے ہوئے ہیں دراصل یہ تمام  بیرونی ممالک کی  کروڑوں دولت کے تعاون سے بےبنیاد چیخ وپکار کررہے ہیں کاروار انکولہ کی رکن ...

کاروار میں انکولہ ۔ہبلی ریلوے لائن منصوبےکو جاری کرنےعوامی احتجاج : قومی شاہراہ بند کرنے پر احتجاجی پولس کی تحویل میں

انکولہ۔ ہبلی ریلوے لائن منصوبہ، سرحد علاقہ کاروار میں صنعتوں کا قیام سمیت مختلف مانگوں کو لے کر لندن برج پر قومی شاہراہ کو بند کرتے ہوئے احتجاج کی تیاری میں مصروف کنڑا چلولی واٹال پارٹی کے واٹال ناگراج سمیت 21جہدکاروں کو پولس نے گرفتار کرنے کے بعد رہاکردیا۔

کانگریس تشہیری کمیٹی کے نئے صدر ایچ کے پاٹل نے عہدہ کا جائزہ لے لیا ملک کواچھے دن کا وعدہ کرکے اقتدار پرآئی بی جے پی کے لیڈروں نے ملک کوبے روزگاروں کا مرکز بنا دیاہے:وینو گوپال

سابق ریاستی وزیر ایچ کے پاٹل نے آج کرناٹک پردیش کانگریس تشہیری کمیٹی کے صدر کی حیثیت سے عہدہ کاجائزہ لے لیا ۔

بی جے پی کوابھیشک منوسنگھوی نے کہا ، کرناٹک میں کھلواڑہوتاتوقانونی منصوبہ تیارتھا

کرناٹک کے تازہ سیاسی واقعات کے پس منظر میں کانگریس کے سینئر لیڈر ابھیشیک منو سنگھوی نے جمعرات کو کہا کہ اگر بی جے پی ریاست کی مخلوط حکومت کو غیر مستحکم کرنے کے لیے اپنے ’آپریشن لوٹس‘پر آگے بڑھتی تو اس کومنہ توڑجواب دینے کے لیے کانگریس نے منصوبہ تیار کر رکھا تھا۔