این آر آئی تاجر بھاسکر شیٹی مرڈر کیس۔ ملزم بیوی کوملا 2سال بعدجیل سے ضمانت پر رہائی کا پروانہ

Source: S.O. News Service | By Staff Correspondent | Published on 8th November 2018, 9:39 PM | ساحلی خبریں |

اڈپی 8؍نومبر (ایس او نیوز) دوسال قبل ہوئے مشہور این آر آئی تاجر بھاسکر شیٹی مرڈر کیس میں کلیدی ملزم کی حیثیت سے گرفتاربھاسکرشیٹی کی بیوی راجیشوری شیٹی کو ضلع سیشنس کورٹ سے مشروط ضمانت پر رہائی کا حکم سنایا گیا ہے۔

ویڈیو کانفرنس کے ذریعے عدالت میں سماعت کے بعد ڈسٹرکٹ سیشنس کورٹ کے جج وینکٹش نائک نے مشروط ضمانت دینے کا فیصلہ سناتے ہوئے کہا کہ ملزمہ راجیشوری کو ایک لاکھ روپے کا ضمانتی بانڈ دینا ہوگا اور اس کی چھوٹی بہن روپا شیٹی اور ایک دوسرے رشتے دار مہابلا کو ذاتی ضمانت دینی ہوگی۔اس کے علاوہ4فروری 2019کو اگلی سماعت کے دوران راجیشوری کو عدالت میں خود حاضر رہنا ہوگا۔گواہوں کو ڈرانے یا ان پر اثرانداز ہونے کی کوئی کوشش نہیں کرنی ہوگی۔ بصورت دیگر اس کی ضمانت منسوخ کی جائے گی۔عدالت نے راجیشوری کو یہ بھی حکم دیاہے کہ جیل سے رہائی کے دس دنوں کے اندر اسے اپنا پاسپورٹ جمع کروانا ہوگا اور عدالت کی اجازت کے بغیروہ ملک سے باہر نہیں جاسکے گی۔

یاد رہے کہ 28جولائی 2016کواین آئی آر تاجر بھاسکر شیٹی کا بہیمانہ قتل کرکے اس کی لاش جلادی گئی تھی جس میں ملزم کے طور پر مقتل کی بیوی راجیشوری شیٹی کے علاوہ مقتول کے بیٹے نونیت اور ایک نجومی نرنجن بھٹ،سرینواس بھٹ اورراگھویندرا کو پولیس نے گرفتار کرلیا تھا۔نجومی نرنجن بھٹ پر الزام ہے کہ اپنے گھر کے اندر ہی پوجا کے لئے ہوما کے لئے مختص گڈھے میں اس نے بھاسکر شیٹی کی لاش جلائی تھی۔

گرفتاری کے بعدراجیشوری کی ضمانت کی درخواست جب سیشنس کورٹ میں بار بار نامنظور ہوگئی تو اس نے سپریم کورٹ کا دروازہ کھٹکھٹایاتھا۔ سپریم کورٹ نے نچلی عدالت کو ہدایت دی تھی کہ چھ مہینے کی مدت میں تمام اہم گواہوں کے بیانات قلمبند کرنے کے بعد راجیشوری کو ضمانت دی جائے۔

معلوم ہوا ہے کہ امسال جون میں سیشنس کورٹ میں اس مقدمے کی سماعت شروع ہوئی اور جملہ167گواہوں میں سے 36اہم ترین گواہوں کے بیانات قلم بند کیے گئے۔اس کے بعد سپریم کورٹ کی ہدایت پر عمل کرتے ہوئے اب عدالت نے راجیشوری کو مشروط ضمانت دے دی ہے۔ توقع ہے کہ دو تین دن کے اندر کاغذی کارروائیاں مکمل ہوتے ہی اسے جیل سے رہا کیا جائے گا۔

ایک نظر اس پر بھی

کاروار:انکولہ ۔ہبلی ریلوے لائن کی سدراہ بنے ماحولیاتی این جی اوز کو ملنے والی مالی امداد کی جانچ کریں : رکن اسمبلی روپالی نائک کامرکزی ریلوے وزیر سے مطالبہ

ریاست کے ساحلی علاقے سے شمالی کرناٹک  کو جوڑنے والی ’قسمت کی ریکھا‘ انکولہ ۔ ہبلی ریلوے لائن کی تعمیرمیں جو ماحولیاتی اداروں ، این جی اوزاور ماہرین سدراہ بنے ہوئے ہیں دراصل یہ تمام  بیرونی ممالک کی  کروڑوں دولت کے تعاون سے بےبنیاد چیخ وپکار کررہے ہیں کاروار انکولہ کی رکن ...

کاروار میں انکولہ ۔ہبلی ریلوے لائن منصوبےکو جاری کرنےعوامی احتجاج : قومی شاہراہ بند کرنے پر احتجاجی پولس کی تحویل میں

انکولہ۔ ہبلی ریلوے لائن منصوبہ، سرحد علاقہ کاروار میں صنعتوں کا قیام سمیت مختلف مانگوں کو لے کر لندن برج پر قومی شاہراہ کو بند کرتے ہوئے احتجاج کی تیاری میں مصروف کنڑا چلولی واٹال پارٹی کے واٹال ناگراج سمیت 21جہدکاروں کو پولس نے گرفتار کرنے کے بعد رہاکردیا۔

لوک سبھاانتخابات کی تیاری میں مصروف الیکشن کمشن :اتراکنڑا  ضلع میں 11.40 لاکھ رائے دہندگان : 14ہزار ووٹرس آؤٹ تو 12ہزار ووٹرس اِن

الیکشن کمیشن  آئندہ ہونےو الے لوک سبھا انتخابات کی تیاری میں مصروف ہے۔اندراج و اخراج   اور ترمیم کے بعد تشکیل دی گئی  رائے دہندگان کی  فہرست کے مطابق ضلع کے 6ودھان سبھا حلقہ جات میں کل 11،40،316 ووٹر ہیں۔ چونکہ انتخابات کے قریب تک ووٹروں کے اندراج کے لئے موقع دیا گیا ہے تو رائے ...

شرالی میں قومی شاہراہ کی توسیع کو لےکر ہزاروں عوام  شاہراہ روک کیا  احتجاج : مجموعی استعفیٰ کا انتباہ اور الیکشن بائیکاٹ کا اعلان

تعلقہ کے شرالی میں دن بدن قومی شاہراہ کی توسیع کو لےکر معاملہ گرم ہوتا جارہاہے۔ شرالی میں قومی شاہراہ کی توسیع 45میٹر سے کم کرکے 30میٹر کئے جانےکی مخالفت کرتے ہوئے جمعرات کو ہزاروں لوگو ں نے قومی شاہراہ روک کر سخت احتجاج درج کیا۔ اس دوران عوامی مانگوں کو منظوری نہیں دی گئی تو ...