این آر آئی تاجر بھاسکر شیٹی مرڈر کیس۔ ملزم بیوی کوملا 2سال بعدجیل سے ضمانت پر رہائی کا پروانہ

Source: S.O. News Service | By Staff Correspondent | Published on 8th November 2018, 9:39 PM | ساحلی خبریں |

اڈپی 8؍نومبر (ایس او نیوز) دوسال قبل ہوئے مشہور این آر آئی تاجر بھاسکر شیٹی مرڈر کیس میں کلیدی ملزم کی حیثیت سے گرفتاربھاسکرشیٹی کی بیوی راجیشوری شیٹی کو ضلع سیشنس کورٹ سے مشروط ضمانت پر رہائی کا حکم سنایا گیا ہے۔

ویڈیو کانفرنس کے ذریعے عدالت میں سماعت کے بعد ڈسٹرکٹ سیشنس کورٹ کے جج وینکٹش نائک نے مشروط ضمانت دینے کا فیصلہ سناتے ہوئے کہا کہ ملزمہ راجیشوری کو ایک لاکھ روپے کا ضمانتی بانڈ دینا ہوگا اور اس کی چھوٹی بہن روپا شیٹی اور ایک دوسرے رشتے دار مہابلا کو ذاتی ضمانت دینی ہوگی۔اس کے علاوہ4فروری 2019کو اگلی سماعت کے دوران راجیشوری کو عدالت میں خود حاضر رہنا ہوگا۔گواہوں کو ڈرانے یا ان پر اثرانداز ہونے کی کوئی کوشش نہیں کرنی ہوگی۔ بصورت دیگر اس کی ضمانت منسوخ کی جائے گی۔عدالت نے راجیشوری کو یہ بھی حکم دیاہے کہ جیل سے رہائی کے دس دنوں کے اندر اسے اپنا پاسپورٹ جمع کروانا ہوگا اور عدالت کی اجازت کے بغیروہ ملک سے باہر نہیں جاسکے گی۔

یاد رہے کہ 28جولائی 2016کواین آئی آر تاجر بھاسکر شیٹی کا بہیمانہ قتل کرکے اس کی لاش جلادی گئی تھی جس میں ملزم کے طور پر مقتل کی بیوی راجیشوری شیٹی کے علاوہ مقتول کے بیٹے نونیت اور ایک نجومی نرنجن بھٹ،سرینواس بھٹ اورراگھویندرا کو پولیس نے گرفتار کرلیا تھا۔نجومی نرنجن بھٹ پر الزام ہے کہ اپنے گھر کے اندر ہی پوجا کے لئے ہوما کے لئے مختص گڈھے میں اس نے بھاسکر شیٹی کی لاش جلائی تھی۔

گرفتاری کے بعدراجیشوری کی ضمانت کی درخواست جب سیشنس کورٹ میں بار بار نامنظور ہوگئی تو اس نے سپریم کورٹ کا دروازہ کھٹکھٹایاتھا۔ سپریم کورٹ نے نچلی عدالت کو ہدایت دی تھی کہ چھ مہینے کی مدت میں تمام اہم گواہوں کے بیانات قلمبند کرنے کے بعد راجیشوری کو ضمانت دی جائے۔

معلوم ہوا ہے کہ امسال جون میں سیشنس کورٹ میں اس مقدمے کی سماعت شروع ہوئی اور جملہ167گواہوں میں سے 36اہم ترین گواہوں کے بیانات قلم بند کیے گئے۔اس کے بعد سپریم کورٹ کی ہدایت پر عمل کرتے ہوئے اب عدالت نے راجیشوری کو مشروط ضمانت دے دی ہے۔ توقع ہے کہ دو تین دن کے اندر کاغذی کارروائیاں مکمل ہوتے ہی اسے جیل سے رہا کیا جائے گا۔

ایک نظر اس پر بھی

21مارچ سے ایس ایس ایل سی امتحانات : اترکنڑا ضلع میں کل 9766طلبا و طالبات کی سالانہ امتحانات میں شرکت

طلبا کی تعلیمی  زندگی کا پہلا اہم مرحلہ   ایس ایس ایل سی کے سالانہ امتحانات 21مارچ 2019سے 04 اپریل 2019منعقد ہونگے ۔ جس کے لئے اترکنڑا ضلع محکمہ  تعلیمات عامہ پوری طرح تیار رہنے کی  ڈپوٹی ڈائرکٹر کے منجوناتھ نے اطلاع دیتے ہوئے جانکاری دی ہے کہ اترکنڑا تعلیمی ضلع کے 5تعلقہ جات میں ...

اُڈپی : آر ایس ایس مسلمانوں سے زیادہ دلت مخالف ہے: سابق بجرنگ دل لیڈر مہیندر کمار

 آر ایس ایس حقیقت میں  دلت، شودر، مظلوم ، پسماندہ طبقات ، ہندو  اور ملک مخالف ہےوہ  مسلم مخالف نہیں ہے ،کیونکہ  یہ سب صرف نوجوانوں کو غلط راستے پر لے جانےکے لئے انہیں استعمال کرتی ہے۔ اگر اس کو اب نہیں سمجھیں گے تو پھر ایک بار ملکی آزادی کے لئے جدوجہد کی ضرورت پڑے گی۔ سماجی مفکر ...

بھٹکل کے ایک اُردو اسکول کے کمپائونڈ میں خون کے دھبے اور کھڑکی کے ٹوٹے گلاس پائے جانے کے بعد زبردست ہاتھاپائی ہونے کا شبہ

یہاں مدینہ کالونی ، محی الدین اسٹریٹ  میں واقع  اُردو ہائیر پرائمری اسکول  کی دیوار اور صحن پرجابجا  خون کے دھبے سمیت ایک کھڑکی کا شیشہ ٹوٹا ہوا پائے جانے  کے بعد شبہ ظاہر کیا جارہا ہے کہ یہاں رات کو زبردست ہاتھاپائی یا ماردھاڑ کی واردات رونما ہوئی ہے۔ واقعے کے بعد  اسکول کے ...

ضلع شمالی کینرا کا انتخاب۔ منووادی اور غیر منووادیوں کے درمیان مقابلہ ہے؛ سیکولراُمیدوار کو جیت دلانا اہم مقصد ہونا چاہئے؛ سابق وزیر آر این نائک کا بیان

درپیش پارلیمانی انتخابات اور خاص کرکے ضلع شمالی کینرا کی سیٹ کو کانگریس کی طرف سے جنتا دل ایس کو مختص کیے جانے کے بعد سابق وزیر اور کانگریسی لیڈر ایڈوکیٹ آر این نائک نے تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ اس بار ہونے والا انتخاب پارٹیوں کی جیت یا پارلیمان میں امیدواروں کی تعداد بڑھانے والا ...