پانچ مرتبہ رکن پارلیمان بننے کے بعد بھی پانچ پیسے کا ترقیاتی کام نہیں ہوا۔اننت کمار ہیگڈے کے خلاف ہندو لیڈر چکرورتی سولی بیلے کا حملہ

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 28th December 2017, 8:15 PM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں |

بنگلورو 28؍دسمبر (ایس او نیوز) اننت کمار ہیگڈے جو اپنے متنازعہ بیانات کی وجہ سے ہر حلقے میں اعتراضات اور مذمت کا مرکز بنے ہوئے ہیں ان کے خلاف تبصرہ کرتے ہوئے ہندو دانشور اورنمو بریگیڈ؍یووا بریگیڈ کے بانی چکرورتی سولی بیلے نے سوال کیا ہے کہ اننت کمار کا ایجنڈہ اپنے حلقے کی ترقی ہے یا ہندوتوا کا پروپگنڈہ کرنے والی تقریر کرنا ہے؟
سولے بیلی نے کہا کہ اننت کمار ہیگڈے نے اپنے پارلیمانی حلقے میں کوئی ترقیاتی کام نہیں کیا ہے، اوروہ کسی کام کے لائق بھی نہیں ہیں۔حالانکہ رکن پارلیمان کے طور پر ترقی کے بہت سارے منصوبوں پر عمل کرنے اور اپنے حلقے کو سیاحوں کی دلکشی کا مرکز بنانے کے بے شمار مواقع ان کے پاس موجود تھے، مگر انہوں نے اس میں کوئی دلچسپی نہیں لی۔چکرورتی نے صاف لفظوں میں کہا کہ کوئی چاہے کتنی بار اسمبلی یا پارلیمنٹ کی سیٹ جیت جائے ، اگر وہ اپنے علاقے کی ترقی کے لئے کوشش نہیں کرتا تو پھر اس کا جیتنا اور نمائندگی کرنا فضول ہے۔

اپنے بیان کی مزید وضاحت کرتے ہوئے چکرورتی نے کہا کہ ضلع شمالی کینرا میں قدرتی وسائل کی بھرمار ہے ۔اس ضلع کو پہاڑی سلسلہ،ساحلی علاقہ ، ندیوں کے کنارے، آبشار، جنگلات وغیر ہ کی دولت سے قدرت نے مالامال کررکھاہے۔ مگر میں نے گزشتہ کچھ عرصے پہلے اس کے مختلف شہروں اور دیہاتوں کا دورہ کیا اور یہاں کے حالات دیکھے تو مجھے بہت ہی دکھ ہوا کہ پانچ پانچ مرتبہ پارلیمانی سیٹ جیتنے کے بعد اننت کمار ہیگڈے نے اس علاقے کی ترقی کے لئے کچھ بھی نہیں کیا ہے۔مگر بدقسمتی یہ ہے کہ  اس ضلع کو ایک  بہترین سیاسی لیڈر نصیب نہیں ہوا ہے۔بات صرف اننت کمار ہیگدے کی نہیں ہے ، ملیکا ارجن کھرگے ،دیشپانڈے اورکاگیری جیسے لیڈر بھی اس ضلع کو ترقی کے لحاظ سے اس مقام تک نہیں لے جاسکے، جہاں تک پہنچنا چاہیے تھا۔

چکرورتی نے کہا کہ مذہب سے لگاؤ الگ بات ہے اور صرف الیکشن کے پس منظر میں مذہبی جذبات کا استحصال کرنا دوسری بات ہے۔ گجرات کے الیکشن میں جس طرح نریندر مودی کے ترقیاتی ایجنڈے کے مقابلے میں کانگریس نے مذہب کا کارڈ کھیلا اور مندروں کے دورے شروع کیے ، بالکل اسی طرح اب کرناٹکا میں بھی سیاسی رنگ بدلتا جارہا ہے۔ سدارامیا جیسے لوگ مندروں میں جانے اور سوامی ویویکا نند کی جینتی منانے کی بات کرنے لگے ہیں۔مگر میرا ماننا یہ ہے کہ اس بار کا الیکشن مذہب، ذات پات اور طبقات کو الگ رکھ کر صرف کرناٹکا کی ترقی کو موضوع بناکر ہی لڑا جانا چاہیے۔اور میرا یہ پیغام بی جے پی، کانگریس اور جنتادل جیسی تمام سیاسی پارٹیوں اور لیڈروں کے لئے ہے۔ان سیاسی لیڈروں کو چاہیے کہ وہ اپنے شہر ، گاؤں اور علاقوں کے تعلق سے اپنے ترقیاتی منصوبے کے ساتھ عوام کے سامنے آئیں ، عوام کے دلوں کو توڑنے کے بجائے جوڑنے کی بات پر ووٹ طلب کریں۔پھر عوام جس کو اہل سمجھیں گے انہیں کامیابی سے سرفرا ز کریں گے۔

ایک نظر اس پر بھی

اترکنڑا ورکنگ جرنالسٹ اسوسی ایشن کے زیرا ہتمام ماحولیاتی تحفظ ورکشاپ کا انعقاد

ماحولیات سے لگاؤ، تحفظ،چیلنج اور حل کے سلسلے میں منعقد کیا گیا یہ ورکشاپ بہت ہی مفید ہے، اس ورکشاپ سے عوام ماحولیات کے متعلق جوبھی غلط فہمی ہے اس کو دور کرنے میں معاون ہونے کا رکن اسمبلی سنیل نائک نے خیال ظاہرکیا۔

بھٹکل کی لائن اسپورٹس سنٹر’اسکوائر آر ایس اے T20ٹورنامنٹ‘ کی چمپئین:فائنل میں 40رنوں سے رایل کو شکست

منکی کے کوچاپو میدان میں آر ایس اے منکی کی طرف سے منعقدہ ٹی 20کرکٹ ٹورنامنٹ کے فائنل مقابلے میں لائنس اسپورٹس سنٹر نے رایل اسپورٹس سنٹر کو 40رنوں سے شکست دے کر ’اسکوائر آر ایس اے چمپئین ٹروفی ‘ کا خطاب جیتا۔

شہید جوان گرو کو جلد معاوضہ ادا کرنے وزیر اعلیٰ ایچ ڈی کمار سوامی کی ہدایت ٹاؤن ہال کے روبرو ہزاروں لوگوں نے شہید جوانوں کو خراج عقیدت پیش کیا

جنوبی کشمیر کے ضلع پلوامہ کے لیتہ پور ہ میں کل ہوئے ہلاکت خیز خودکش آئی ای ڈی دھماکے کی وزیر اعلیٰ ایچ ڈی کمار سوامی نے آج پرزور مذمت کی ہے ۔ اس دہشت گردانہ حملہ میں شہید ہونے والے منڈیا ضلع کے ایچ گرو کے اہل خانہ سے انہوں نے تعزیت کی ہے ۔

پلوامہ میں ہوئے دہشت گرد حملے میں ہلاک ہوئے منڈیا ضلع کے شہید فوجی کی بیوی صدمہ سے دوچار اب بات کرنا چاہوں تو کس سے کروں: کلاوتی

جمعرات کو پلوامہ میں ہوئے دہشت گرد حملے میں ہلاک ہوئے منڈیا ضلع کے بہادر فوجی جوان ایچ گرو پانچ دن پہلے ہی اپنی چھٹی ختم کرکے کام پر لوٹے تھے ۔ 10مہینے پہلے انہوں نے گڈی گیری کالونی کی کلاوتی سے شادی کی تھی۔

ای بسیں: بی ایم ٹی سی کو80؍کروڑ سے ہاتھ دھوناپڑسکتا ہے 28؍فروری تک کاوقت ۔سبسیڈی کی رقم مرکز کو لوٹانی پڑے گی۔ لیزپر لینے یا خریدنے پر فیصلہ کرنے میں تاخیر

بنگلورو میٹرو پالیٹن ٹرانسپورٹ کارپوریشن( بی ایم ٹی سی) نے28؍فروری تک مرکز سے الیکٹرک بسیں حاصل نہیں کیں تو اسے 80 کروڑ روپئے کی سبسیڈی سے ہاتھ دھونا پڑے گا۔80ای بسوں کو شامل کرنے کا معاملہ تاخیر کا شکار ہوگیاہے۔

دس ہزار کروڑ روپئے کا بی بی ایم پی بجٹ تیار؟

بنگلور شہر اور بی بی ایم پی کی تاریخ میں پہلی مرتبہ امید کی جا رہی ہے کہ اس سال کا بی بی ایم پی بجٹ دس ہزار کروڑ روپئے کی حد کو پار کرنے والا ہے۔بجٹ میں موجود بعض منصوبوں کو دیکھتے ہوئے یہ کہنا علط نہیں ہوگا کہ شہر کے بلدی ادارہ کا بجٹ آئندہ کچھ ماہ میں منعقد ہونے والے لوک سبھا ...

11/26کے ممبئی دہشت گردانہ حملے میں مارے گئے کمانڈو سندیپ انی کرشنن کے والد نے پلوامہ دہشہ گردانہ حملے کی مذمت

11/26کے ممبئی دہشت گردانہ حملے میں مارے گئے این ایس جی کمانڈو سندیپ انی کرشنن کے والد نے پلوامہ دہشہ گردانہ حملے کی مذمت کرتے ہوئے کہاہے کہ ہندوستان کو دہشت گردانہ حملوں پر روک لگانے کے لئے کھوکھلی بحث ومباحثوں کی بجائے ٹھوس قدم اٹھانے چاہئیں۔