نا بالغ والی بال کھلاڑی نے کوچ پر لگائے الزام ، ہوٹلوں میں لے جا کر کرتا تھا ریپ

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 25th July 2018, 9:54 PM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

ریواڑی،25جولائی(ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا)ریواڑی کے ایک گاؤں کی رہنے والی نا بالغ والی بال کھلاڑی نے اپنے ہی کوچ پرعصمت دری کرنے جیسے سنگین الزام لگائے ہیں۔ اپنی تحریری شکایت میں متاثرہ نے پولیس سپرنٹنڈنٹ کو بتایا کہ اس کا کوچ اسے روہتک، سونی پت ،گروگرام سمیت کئی مقامات پر ہوٹلوں میں لے جا کر اس کی ڈھائی سالوں سے عصمت دری کر رہا تھا۔

متاثرہ کو ملزم کوچ نے کسی کو بتانے پر جان سے مارنے کی دھمکی دی تھی۔ اب متاثرہ کی شکایت پر پولیس نے ملزم کے خلاف پوکسواور دیگر دفعات کے تحت معاملہ درج کرکے جانچ شروع کر دی ہے لیکن ابھی ملزم کی گرفتاری نہیں ہوئی ہے۔

متاثرہ نے بتایا کہ کوچ نے گزشتہ ماہ پھر کہیں باہر مقابلہ میں حصہ لینے کیلئے کہا۔ لیکن کھلاڑی نے اپنے اہل خانہ کے ساتھ اس کوچ کے ساتھ جانے سے صاف انکار کر دیا۔ایک باصلاحیت کھلاڑی ہونے کی وجہ سے ان کے کنبے کو اس سے بہت امیدیں تھیں۔ لیکن کھیل سے منھ موڑ لینے کی بات پر انہیں شک ہوا۔ اس کے بعد پوچھ گچھ کرنے پر اس نے ساری بات اپنی ماں کو بتائی۔

متاثرہ نے بتایا کہ کوچ نے اس بات کا ذکر کرنے پر اسے اور اس کے گھر والوں کو جان سے مارنے کی دھمکی دی تھی۔ شکایت میں اہل خانہ نے الزام لگایا کہ اب کوچ انہیں بھی جان سے مارنے کی دھمکی دے رہا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

جے پی سی سے جانچ کرانے کا راستہ ا بھی کھلا ہے، عام آدمی پارٹی نے کہا،عوام کی عدالت اورپارلیمنٹ میں جواب دیناہوگا،بدعنوانی کے الزام پرقائم

آپ کے راجیہ سبھا رکن سنجے سنگھ نے کہا ہے کہ رافیل معاملے میں جمعہ کو آئے سپریم کورٹ کے فیصلے کے باوجود متحدہ پارلیمانی کمیٹی (جے پی سی) سے اس معاملے کی جانچ پڑتال کرنے کا اراستہ اب بھی کھلا ہے۔

رافیل پر سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد ، راہل گاندھی معافی مانگیں: بی جے پی

فرانس سے 36 لڑاکا طیارے کی خریداری کے معاملے میں بدعنوانی کے الزامات پر سپریم کورٹ کی کلین چٹ ملنے کے بعد کانگریس پر نشانہ لگاتے ہوئے بی جے پی نے جمعہ کو کہا کہ کانگریس پارٹی اور اس کے چیئرمین راہل گاندھی ملک کو گمراہ کرنے کیلئے معافی مانگیں۔

بھٹکل کے مرڈیشور میں دو لوگوں پر حملے کی پولس تھانہ میں دو الگ الگ شکایتیں

تعلقہ کے مرڈیشور میں کل جمعرات کو  دو لوگوں پر حملہ اور پھر جوابی حملہ کے تعلق سے آج مرڈیشور تھانہ میں دو الگ الگ شکایتیں درج کی گئی ہیں اور پولس نے دونوں پارٹیوں کی شکایت درج کرتے ہوئے چھان بین شروع کردی ہے۔