پورے ملک میں جوش وخروش کے ساتھ منایا جارہا ہے جشن عید میلاد النبیؐ

Source: S.O. News Service | By Staff Correspondent | Published on 21st November 2018, 12:29 PM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

نئی دہلی،21 نومبر (ایس او نیوز) آج یعنی 21 نومبر کو عید میلاد النبی کا تیوہار منایا جارہا ہے۔ مسلمانوں کے لئے یہ دن بے حد خاص ہوتا ہے۔ مسلمان اسے تیوہارکے طورپرمناتے ہیں۔ عید میلاد النبی پیغمبرحضرت محمد صلی اللہ علیہ وسلم کی یوم ولادت کے طورپرمنایا جاتا ہے۔ مسلمان آخری نبی حضرت محمد مصطفیٰ صلی اللہ علیم وسلم کے امتی ہیں۔

پیغمبرحضرت محمد صلی اللہ علیہ وسلم کا پورا نام محمد ابن عبداللہ بن عبدالمطلب تھا اوران کی پیدائش مکہ شہرمیں ہوئی تھی۔ مکہ کے قریب غارحرا میں آپ صلی اللہ علیہ وسلم پر وحی نازل ہوئی تھی، غارحرا میں جو وحی نازل ہوئی تھی، وہ قرآن مقدس کی شکل میں موجود ہے۔ حالانکہ جشن عید میلاد النبی سے متعلق مسلمانوں میں اختلاف ہے۔ تاہم جولوگ عید میلاد النبی مناتے ہیں وہ انتہائی تزک واحتشام کےساتھ اس کا اہتمام کرتے ہیں۔

ملک کے مختلف شہروں، علاقوں اورگاوں میں جشن عید میلاد النبی کا انعقاد کیا جارہا ہے۔ اس موقع پردینی اجلاس کا اہتمام، قرآن خوانی، جلسہ سیرت النبی اورنعتیہ مشاعرے کا انعقاد کیا جارہا ہے۔ لکھنو، حیدرآباد، گلبرگہ، دہلی، ممبئی، بنگلورو، جے پور، کولکاتا سمیت پورے ملک میں انتہائی جوش وخروش کے ساتھ عید میلاد النبی کااہتمام کیا جارہا ہے۔

ملک کے مختلف حصوں میں بیشترمسلمان عید میلاد النبی کا جشن مناتے ہیں۔ دراصل اسلامی کلینڈرکے لحاظ سے اسلامی سال کے  تیسرے مہینے ربیع الاول کی 12 ویں تاریخ کو 571 عیسوی میں حضرت محمد صلی اللہ علیہ وسلم کی پیدائش ہوئی تھی، اسی مناسبت سے مسلمان عید میلاد النبی مناتے ہیں۔ حالانکہ اس بارے میں بھی امت مسلمہ میں اختلاف ہے۔ ایک طبقے کا ماننا ہے کہ حضوراکرم صلی اللہ علیہ وسلم کی پیدائش 9 ربیع الاول کو ہوئی تھی۔

ایک نظر اس پر بھی

سرمائی سیشن میں رافیل اور آر بی آئی کی خودمختاری کامسئلہ اٹھایاجائے گا:غلام نبی آزاد

کانگریس کے سینئر لیڈر غلام نبی آزاد نے پیر کو کہا کہ پارلیمنٹ کے سرمائی اجلاس میں رافیل طیارے سودے کی تحقیقات کے لئے مشترکہ پارلیمانی کمیٹی (جے پی سی)کے قیام کا مطالبہ اور ریزرو بینک کی خود مختاری اور جانچ ایجنسیوں کے مبینہ غلط استعمال سمیت کئی دیگر مسائل اٹھائے جائیں گے ۔

مودی حکومت غیر قانونی طریقے سے سوچھ توانائی کے پیسے کوکہیں اورلگارہی ہے: سیتا رام یچوری

کمیونسٹ پارٹی (سی پی ایم)کے سیکریٹری جنرل سیتا رام یچوری نے پیر کو الزام لگایا کہ مرکز کی بی جے پی حکومت ریاستوں کو جی ایس ٹی میں ان کے حصے کی ادائیگی کے لئے سوچھ توانائی فنڈ کی رقم غیر قانونی طور پر استعمال کر رہی ہے۔

اقلیتی تعلیمی پروگرام میں آندھرا پولیس کے ذریعہ زیادتی کی پاپولر فرنٹ نے کی مذمت

پاپولر فرنٹ آف انڈیا کے جنرل سکریٹری ایم محمد علی جناح نے آندھرا پردیش میں پاپولر فرنٹ کے ایک تقسیمِ اسکالرشپ پروگرام میں کچھ پولیس افسران کی خلل اندازی اور جھوٹے الزامات میں تنظیم کے زونل سکریٹری و دیگر ضلعی لیڈران کی من مانی گرفتاری اور انہیں زدوکوب کرنے کے طریقے کی سخت ...

کاروار : نجومی اور جوتشی سے اپنے مستقبل کو معلوم کرنے کے بجائے اپنی سوچ وفکر کو بدلیں  : کروالی اتسوا میں کرشماتی ماہر ڈاکٹر ہولیکل نٹراج  

دنیا میں فریب،دھوکہ عام بات ہے مگر دھوکہ کے جال میں پھنسنا بڑی بےو قوفی اور غلط بات ہے۔ گھر توڑ کر واستو(توہم پرستی کے چلتے گھر کے دروازے اور کھڑکیوں کے رخ کو متعین کرنےو الا نجوم ) صحیح کرنے کے بجائے اپنی ذہنی سوچ وخیال کو بدل لیجئے۔ کرشموں کا کچا چٹھا نکالنےمیں ماہر ڈاکٹر ...