بھارت بند کی وجہ سے مینگلوراور اُڈپی میں پرائیویٹ بس سروس ہوگی متاثر؛ ٹرانسپورٹ سروس نہ ہونے سے اسکول اور کالجس بھی بند ہونے کے امکانات

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 9th September 2018, 1:48 PM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں |

منگلورو 9؍ستمبر (ایس او نیوز) پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں روز افزوں اضافے کے خلاف کانگریس اور دیگر تنظیموں نے 10ستمبر کو جو آل انڈیابند کا اعلان کیا ہے، اسے دیکھتے ہوئے منگلورو اور اڈپی ضلع میں پرائیویٹ بس والوں نے اپنی سروس بند رکھنے کا فیصلہ کیا ہے۔

کینرا بس اونرس ایسو سی ایشن کے صدر راج ورما بلّال اوردکشن کنڑا بس اونرس ایسو سی ایشن کے صدر دلراج آلوا کی طرف سے جاری کی گئی پریس ریلیز کے مطابق پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں مسلسل اضافے کے باوجود بسوں کے کرایے پر نظر ثانی نہ کرنے کے خلاف متعلقہ محکمہ جاتی افسران کے سامنے احتجاجی مظاہرہ کیا جائے گا۔

اُدھر سرکاری بس سروس بھی بند کئے جانے کا اعلان کرنے کے بعد  پورے ضلع دکشن کنڑا اور اُڈپی میں ٹرانسپورٹ سروس بند ہوجائے گی جس کے نتیجے میں  اسکولوں اور کالجس میں بھی چھٹی ڈکلیر کرنا ضروری ہوجائے گا۔ اس سلسلے میں  مینگلور اور اُڈپی میں کئی ایک تعلیمی اداروں نے  پیر 10 ستمبر کو چھٹی کا اعلان کردیا ہے۔

منگلورو کے تاجروں نے بند کے دوران کاروبار جاری رکھنے کے لئے مانگی سیکیوریٹی
ایک طرف ایندھن کی بڑھتی قیمتوں کے خلاف10ستمبرکو ملک گیر بند کا اعلان کیاگیا ہے تو دوسری طرف  منگلورو کے تاجروں نے کاروبار جاری رکھنے کا فیصلہ کرتے ہوئے اپنے لئے تحفظ کا مطالبہ کیا ہے۔

اطلاع کے مطابق مینگلور کے اولڈ بندر ہول سیل کیرانہ اینڈ ایلائڈ مرچنٹس ایسو سی ایشن نے سیکیوریٹی طلب کی ہے کہ بند کے دوران کوئی ناخوشگوار واقعہ پیش نہ آئے اس بات کو یقینی بنانے  انہیں پوری طرح تحفظ فراہم کیا جائے۔اس ضمن میں تاجروں کی ایسو سی ایشن نے ڈپٹی کمشنر سسی کانت سینتھل اور سٹی پولیس کمشنر ٹی آر سریش کو دئے گئے میمورنڈم میں کہا ہے کہ :’’12اور13ستمبر کو گوری ۔گنیش تہوار منایا جانے والا ہے۔ اس وجہ سے ہم لوگ ایک دن کے لئے اپنا کاروبار معطل نہیں کرسکتے۔ ایسوسی ایشن کے تمام اراکین10ستمبر کو حسب معمول اپنا کاروبار جاری رکھیں گے۔لہٰذا ہمیں کاوربار پرامن طریقے پرجاری رکھنے کے لئے تحفظ فراہم کیا جائے۔‘‘

ایک نظر اس پر بھی

چیتے کی کھال فروخت کرنے کے دوران کنداپور میں بھٹکل کے پانچ افراد سمیت دس گرفتار

یہاں شاستری سرکل کے قریب غیر قانونی طورپر چیتے کی کھال فروخت کرنے کے الزام میں بینگلور کی سی آئی ڈی فوریسٹ یونٹ  نے دس افراد کو گرفتار کرلیا ہے جس میں پانچ کا تعلق بھٹکل، تین کا تعلق بیندور اور ایک ایک کا تعلق ، منڈگوڈ اور  ہوناورسے ہے۔ گرفتاری کی یہ واردات جمعہ کی دوپہر کو ...

مینگلور کے قریب پڈیل ہائی وے پر گیس ٹینکر اُلٹ گئی؛ گیس رسنے کی اطلاع کے بعد نیشنل ہائی وے بند

یہاں پڈیل۔ مرولی ہائی وے پر ایک گیس سے بھری ٹینکر اُلٹ جانے سے  گیس رسنا شروع ہوجانے  سے نیشنل  ہائی وے کو پولس نے بند کردیا ہے جس کے نتیجے میں  سڑک کے دونوں کنارے  ٹریفک نظام درہم برہم ہوگیا ۔ بتایا گیا ہے کہ پولس نے حفاظتی اقدامات کے تحت آس پاس کے سبھی علاقوں کے مکینوں کو ...

کاروار:انکولہ ۔ہبلی ریلوے لائن کی سدراہ بنے ماحولیاتی این جی اوز کو ملنے والی مالی امداد کی جانچ کریں : رکن اسمبلی روپالی نائک کامرکزی ریلوے وزیر سے مطالبہ

ریاست کے ساحلی علاقے سے شمالی کرناٹک  کو جوڑنے والی ’قسمت کی ریکھا‘ انکولہ ۔ ہبلی ریلوے لائن کی تعمیرمیں جو ماحولیاتی اداروں ، این جی اوزاور ماہرین سدراہ بنے ہوئے ہیں دراصل یہ تمام  بیرونی ممالک کی  کروڑوں دولت کے تعاون سے بےبنیاد چیخ وپکار کررہے ہیں کاروار انکولہ کی رکن ...

کاروار میں انکولہ ۔ہبلی ریلوے لائن منصوبےکو جاری کرنےعوامی احتجاج : قومی شاہراہ بند کرنے پر احتجاجی پولس کی تحویل میں

انکولہ۔ ہبلی ریلوے لائن منصوبہ، سرحد علاقہ کاروار میں صنعتوں کا قیام سمیت مختلف مانگوں کو لے کر لندن برج پر قومی شاہراہ کو بند کرتے ہوئے احتجاج کی تیاری میں مصروف کنڑا چلولی واٹال پارٹی کے واٹال ناگراج سمیت 21جہدکاروں کو پولس نے گرفتار کرنے کے بعد رہاکردیا۔

کانگریس تشہیری کمیٹی کے نئے صدر ایچ کے پاٹل نے عہدہ کا جائزہ لے لیا ملک کواچھے دن کا وعدہ کرکے اقتدار پرآئی بی جے پی کے لیڈروں نے ملک کوبے روزگاروں کا مرکز بنا دیاہے:وینو گوپال

سابق ریاستی وزیر ایچ کے پاٹل نے آج کرناٹک پردیش کانگریس تشہیری کمیٹی کے صدر کی حیثیت سے عہدہ کاجائزہ لے لیا ۔

بی جے پی کوابھیشک منوسنگھوی نے کہا ، کرناٹک میں کھلواڑہوتاتوقانونی منصوبہ تیارتھا

کرناٹک کے تازہ سیاسی واقعات کے پس منظر میں کانگریس کے سینئر لیڈر ابھیشیک منو سنگھوی نے جمعرات کو کہا کہ اگر بی جے پی ریاست کی مخلوط حکومت کو غیر مستحکم کرنے کے لیے اپنے ’آپریشن لوٹس‘پر آگے بڑھتی تو اس کومنہ توڑجواب دینے کے لیے کانگریس نے منصوبہ تیار کر رکھا تھا۔