شرتھ مرڈر کیس :پانچ میں سے 4مشتبہ ملزمین پولیس حراست میں۔کلیدی ملزم مفرور۔تفتیش جاری۔ کرایے کا قاتل شامل رہنے کی بات سے پولیس کا انکار

Source: S.O. News Service | Published on 13th August 2017, 6:10 PM | ساحلی خبریں |

بنٹوال 13؍اگست (ایس او نیوز)بنٹوال کے بی سی روڈ پر ایک مہینے پہلے ہونے والے آر ایس ایس کارکن شرتھ مڈیوال کے قتل کا معاملہ لگتا ہے کہ اب اپنے انجام کی طرف بڑھ رہا ہے۔کیونکہ پولیس نے چار مشتبہ ملزمین کو حراست میں لینے اور ایک کلیدی ملزم فرار ہونے کی بات بتائی ہے۔
موصولہ رپورٹ کے مطابق حراست میں لیے گئے ملزمین کی شناخت ابھی پولیس نے ظاہر نہیں کی ہے۔ صرف اتنا بتایا ہے کہ چاروں ملزمین سے تفتیش جاری ہے ۔ اس سے پہلے میڈیا میں یہ خبر عام ہوگئی تھی کہ پولیس اس نتیجے پر پہنچی ہے کہ ممبئی سے بلائے گئے سپاری کِلّر (کرایے کا قاتل)نے یہ واردات انجام دی تھی اور پولیس اسے گرفتار کرنے میں کامیاب ہوگئی ہے۔لیکن پولیس سپرنٹنڈنٹ سدھیر کمار ریڈی نے واضح کیاہے کہ منگلورو سٹی کرائم برانچ کی ایک ٹیم تحقیقات کے لئے ممبئی گئی ہوئی تھی اور وہ اب واپس آگئی ہے۔ شرتھ کے قتل میں کوئی کرایے کا قاتل ملوث ہونے کی کوئی اطلاع نہیں ہے۔
تحقیقاتی ٹیم کے قریبی ذرائع نے بھی ایس پی سدھیرکمار کی وضاحت کی تائید کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس قتل میں مقامی افراد ہی ملوث ہیں۔ البتہ پانچواں ملزم جو ابھی تک فرار ہے وہ کلیدی ملزم ہوسکتا ہے، اور پولیس اس کی تلاش میں لگی ہوئی ہے۔لہٰذاتوقع کی جارہی ہے کہ اس پانچویں ملزم کے ہاتھ آتے ہی ان سب کی باقاعدہ گرفتاری عمل میں آئے گی۔
شرتھ مڈیوال کے قتل کے سلسلے میں ایک اور پہلو یہ ابھر کرسامنے آیا ہے کہ اس میں ریت مافیا کا بھی ہاتھ ہوسکتا ہے ، کیونکہ بعض مواقع پر شرتھ نے بنٹوال کے غیر قانونی ریت سپلائی مافیا کے خلاف آواز اٹھائی تھی اور ان سے مخاصمت مول لے بیٹھا تھا۔اس لئے پولیس کی تحقیقات میں یہ پہلو بھی شامل رہا ہے۔ بہرحال پولیس کی طرف سے ملزمین کی باقاعدہ گرفتاری کے بعد ہی قتل کے اس سنسنی خیز معاملے کی اصل حقیقت سامنے آنے کی امید ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل:مٹھلی میں شراب دکان کے خلاف خواتین سمیت سیکڑوں دیہی عوام کا احتجاج: بند نہیں کیا گیا تو سخت احتجاج کی دھمکی

تعلقہ کے مٹھلی گرام پنچایت حدود کے ریلوے اسٹیشن کے قریب شروع کی گئی نئی شراب کی دکان بند کرنے کی مانگ لے کر دیہات کے سیکڑوں مرد وخواتین بدھ کی شام دکان کا گھیراؤ کرتے ہوئے احتجاج کیا۔

شرالی :فورلین کی تعمیر 30میٹر کے بجائے 45میٹر کی چوڑائی کے ساتھ تعمیر کرنےکا مطالبہ لے کر میمورنڈم

تعلقہ کے شرالی سے گزرنے والی قومی شاہراہ 66کو فورلین میں منتقل کئے جانے والے توسیعی تعمیری کام کو 45میٹر کی چوڑائی کے ساتھ ہی کئے جانے کا مطالبہ لے کر شرالی گرام پنچایت صدر وینکٹیش نائک کی قیادت میں گاؤں کے عوام نے بھٹکل اسسٹنٹ کمشنر کو میمورنڈم سونپا۔

بھٹکل: کے ایف ڈی سی کے ذریعے ماہی گیروں کے قرضے معاف :راجیندرنائک

ریاستی ماہی گیر ترقی بورڈ (کے ایف ڈی سی )گذشتہ 47سالوں کی تاریخ میں پہلی مرتبہ نفع بخش راہ پر گامزن ہے ، بورڈ سے قرضہ لے کر گذشتہ 10-15سالوں سے ادا نہ کرتے ہوئے قرضہ نادہندوں کا 6057937روپئے قرضہ مکمل طورپر معاف کرنے کا بورڈ کے صدر راجیندر نائک نے اعلان کیا۔

کاروار :آئندہ ودھان سبھا انتخابات میں ضلع کے کسی بھی حلقہ سے امیدوار : اننت کمار ہیگڈے

آئندہ ودھان سبھا انتخابات سےپہلے ریاستی کانگریس کے دگج لیڈر اور وزیر برائے بڑی صنعت آر وی دیش پانڈے بی جے پی میں شامل ہونگے اور میں ودھان سبھا انتخابات کے میدان میں اترنے والا ہوں۔ ان خیالات کا اظہار شمالی کینرا کے رکن پارلیمان اننت کمار ہیگڈے نے کیا۔

کمٹہ:پابندی کے باوجود بغیر کسی رکاوٹ کے غیر قانونی ریت سپلائی جاری:معاملے میں افسران بھی ملوث ہونے کا الزام

ریت سپلائی پر پابندی عائد ہونےکے باوجود افسران کی شمولیت کے ساتھ بغیر کسی رکاوٹ کے ریت سپلائی جاری رہنے کا پتہ چلاہے۔تعلقہ کے ہیگڈے اور ماسور نامی مقامات پر بے دریغ ریت سپلائی جاری ہے، 407سواریوں ، آٹو رکشاکے ذریعے غیر قانونی طورپر ریت سپلائی ہورہی ہے، پابندی کے باوجود کسی خوف ...