اننت کمار ہیگڈے کا نیا تنازعہ۔ دلت تنظیموں کو ’’کُتّے‘‘ قراردیا

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 21st January 2018, 1:41 PM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں |

بیلاری، 21؍جنوری (ایس او نیوز) اپنی زبان درازی اور بدگوئی کے لئے معروف مرکزی وزیر اننت کمار ہیگڈے نے دلت تنظیموں کو ’’کُتّے‘‘ قراردیتے ہوئے ایک نیا تنازعہ کھڑا کردیا ہے۔

بتایا جاتا ہے کہ مرکزی وزیر اننت کمارہیگڈے جب بیلاری میں ’جاب فیئر اینڈ اسکل ایکزی بیشن‘ میں شرکت کے لئے انسپکشن بنگلو سے نکلے تو سڑک پر دلت تنظیموں نے ان کا گھیراؤ کیا اور اس سے پہلے دستور کو بدلنے کا جو بیان انہوں نے دیا تھا اس کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کیا۔ اننت کمار کے ساتھ موجود رکن پارلیمان سری راملو نے احتجاجیوں کوسمجھانے بجھانے کی کوشش کی مگر وہ ناکام رہے ۔ اس کے بعد پولیس نے مداخلت کرتے ہوئے مظاہرین کو منتشر کردیا۔

انننت کمار جب ’جاب فیئر‘ کے مقام پر پہنچے اور خطاب کرنے لگے تو انہوں نے کہا کہ :’’ہم بھی بڑے ڈھیٹ(ہٹ دھرم) ہیں۔ ہمارے اندر قوم کی تعمیر کی صلاحیت اور طاقت موجود ہے۔ ہم سڑکوں پر بھونکنے والے کتوں (دلت تنظیموں اور مخالفین کی طرف اشارہ)سے ڈرنے والے نہیں ہیں۔ہمارے پیچھے ہٹنے کا سوال ہی پیدا نہیں ہوتا۔‘‘

یاد رہے کہ دسمبر 2017میں کوپل میں ایک پروگرام کے دوران اننت کمار ہیگڈے نے دستور ہند کو بدلنے کاعزم ظاہر کیا تھاجس کے بعد ملک بھر میں اس کے خلاف احتجاج ہوااور پارلیمنٹ سیشن کے دوران اننت کمار کو معافی مانگنی پڑی تھی۔

ایک نظر اس پر بھی

ساحلی کینرا میں کچھ لمحوں کے لئے بادلوں کی گرج کے ساتھ بارش؛ کمٹہ میں بجلی گرنے سے ایک مکان منہدم؛ تین شدید زخمی

کل شام کو کچھ دیر کے لئے ہوئی بادلوں کی گرج کے درمیان زوردار بارش سے ساحلی کینرا میں گرمی کا زور ٹوٹ گیا ہے اور لوگوں نے گرمی سے نجات ملنے پر راحت کی سانس لی ہے، البتہ  کمٹہ تعلقہ کے  برگی دیہات میں بجلی گرنے سے ایک مکان  کو شدید نقصان پہنچا ہے اور دیواریں گرنے سے گھر کے اندر ...

منگلورو: ایس ایس ایل سی امتحان میں طالب علم کوملے انگلش مضمون میں59 کی جگہ 97 مارکس!

ایس ایس ایل سی اور پی یو سی وغیرہ کے پبلک امتحانات میں پرچہ جانچنے یا پھر مارکس اینٹری کرنے میں گڑ بڑ کے معاملات ہر سال سامنے آتے رہتے ہیں۔امسال بھی منگلورو سے ملنے والی ایک خبر کے مطابق سینٹ ایلوشیئس ہائی اسکول کوڈیال بیل کے ایک طالب علم ایلسٹائر کیوین بنگیرا کے ساتھ بھی ایسا ...

کماراسوامی بنے کرناٹک کے نئے وزیراعلیٰ ؛ جی پرمیشور نے لیا ڈپٹی سی ایم کا حلف؛ بنگلور میں سیکولر پارٹیوں کے لیڈروں  کا میگا شو

طویل عرصہ سے چل رہے کرناٹک  کے اقتدار کی  جدوجہد بالاخر آج رنگ لائی اور کانگریس کی حمایت سے جے ڈی ایس سربراہ کماراسوامی نے وزیراعلیٰ کا حلف لیتے ہوئے  بی جے پی کے لئے کٹھے انگور ثابت ہوگئے۔ ان کے ساتھ جی پرمیشور نے ڈپٹی وزیراعلیٰ کا حلف لیا۔

سیول سروس میں دلچسپی رکھنے والوں کے لئے زبردست خوش خبری؛ مینگلور میں ایس سیول سروس اکیڈمی میں دی جارہی ہے بہترین کوچنگ

  ملک کی  ایڈمنسٹریشن میں مسلمانوں کی تعداد نہ کے برابر ہونے کی وجہ سےآج پورے ملک کے مسلمانوں میں تشویش کی لہر پائی جارہی ہے ، جس کو دیکھتے ہوئے نوجوانوں میں بیداری پیدا کی جارہی ہے کہ وہ بڑی تعداد میں  ملک کی ایڈمنسٹریشن میں شامل ہوکر   ملک کی ترقی میں اپنی صلاحیتوں کو بروئے ...

کرناٹکااسمبلی میں وزیراعلیٰ کے بطور کمارا سوامی کی حلف برداری ۔منگلورو میں امتناعی احکامات کا نفاذ

کانگریس اور جے ڈی ایس مشترکہ محاذ کی طرف سے آج شام ودھان سودا میں جنتا دل کے ریاستی سیکریٹری ایچ ڈی کمارا سوامی بطور وزیر اعلیٰ حلف لینے اور اعتماد کا ووٹ حاصل کرنے والے ہیں ۔ اس پس منظر میں شہر منگلورو میں حالات کو پر امن بنائے رکھنے کے لئے امتناعی احکامات کا نفاذ کردیا گیا ہے۔

آج کمار سوامی کرناٹک کے 24ویں وزیراعلیٰ کا حلف لیں گے مسلم لیڈر کو نائب وزیراعلیٰ بنانے کا وعدہ جے ڈی ایس پورا کرے گی؟

کانگریس جے ڈی ایس مخلوط حکومت کی حلف برداری تقریب کے لئے تیاریاں تقریباً مکمل ہوچکی ہیں۔ چہارشنبہ کی شام 4:30؍بجے ودھان سودھا کے روبرو ایچ ڈی کمار سوامی کرناٹک کے 24ویں وزیراعلیٰ کی حیثیت سے حلف لیں گے۔ ان کے ساتھ کے پی سی سی صدر ڈاکٹر جی پرمیشور نائب وزیراعلیٰ کی حیثیت سے حلف ...