اُڈپی میں سدرامیا کاکانگریس سماویش سے خطاب : ساحلی پٹی پر کانگریس استحکام کے لئے سدبھاؤنا یاترا کا اہتمام

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 7th November 2019, 7:08 PM | ساحلی خبریں |

اُڈپی:07؍نومبر(ایس اؤ نیوز)فی الوقت رائے دہندگان بی جےپی سے کافی بیزار اور مایوس ہیں، بی جےپی کا واحد متبادل کانگریس ہی ہے، دستور، جمہوریت کی بقا کے لئے کانگریس کا دوبارہ اقتدار میں آنا ضروری ہے، جس کے لئےکارکنان کی قوت درکار ہونے کا ودھان سبھا میں حزب مخالف لیڈر سدرامیا نے خیال ظاہر کیا۔

شہر کے پوربھون میں کانگریس سماویش کا افتتاح کرنے کے بعد خطاب کرتےہوئے سدرامیا نے کہاکہ ساحلی پٹی پر کانگریس  کمزور ہے یہ بات سچ ہے مگر اس کو مضبوط و مستحکم کرنا ہے  ، اس سے پہلے جس طرح اُلال سے اُڈپی تک جس طرح سدبھاؤنا یاترا کی گئی تھی پارٹی کے استحکام کے لئے دوبارہ ایسی یاترا کرنےکااعلان کیا۔

بی جے پی پر سخت تنقید کرتےہوئے سدرامیا نےکہاک بی جے پی ایک جھوٹی پارٹی ہے، عوام کے سروں میں جھوٹ اور نفرت بھر کر اقتدار پایا ہے، سدرامیا ، راہل گاندھی مسلمانوں کے حمایتی ، ہندو مخالف ہونےکا شوشہ چھوڑا ہے، ہم بی جےپی کی طرح ڈھونگی ہندونہیں ہیں، خالص ہندو ہیں، مسلم ، عیسائی ، ہندو کو بیک وقت ایک ساتھ متحدہ طورپر لے کر چلنے والی پارٹی کانگریس ہے۔ بی جےپی کو اقتدار کی تقسیم پر اعتماد نہیں ہے، پسماندہ ، اقلیت، دلت اور عورتوں کو اقتدار دینے کےلئےوہ تیار نہیں ہیں، اسی لئے ریزوریشن رد کرنےکےلئے بی جےپی لیڈر راماجوئس سپریم کورٹ میں رٹ عرضی داخل کرنےکا حوالہ دیتےہوئے تنقید کی ۔

بی جےپی اپنے 6سالہ اقتدار میں کوئی بہتر کام نہیں کیا ہے، نوٹ بندی، جی ایس ٹی کے نام پر غریبوں کو پریشان کرنا ہی ان کا سب سے بڑا کارنامہ بتاتے ہوئے تنقید کی۔ کسانوں کی آمدنی دوگنی نہیں ہوئی ، جی ڈی پی پاتال کو پہنچ رہی ہے، بیرونی ممالک سے کالا دھن نہیں آیا۔ عالمی بھوک فہرست میں بھارت، نیپال، پاکستان سے بھی پیچھے ہے۔ غربت اور روزگار میں اضافہ ہورہاہے، صنعت کار ی بند ہورہی ہے۔ سدرامیا نے کہاکہ ملک کی تاریخ میں مودی جیسا جھوٹا وزیرا عظم کبھی  دیکھنا ممکن نہیں ہے۔

بی جےپی میں کوئی ایسا نہیں ہے جس نے ملک کی آزادی میں شریک ہواہو، اسی لئے سردار ولبھ بھائی پٹیل سے ناانصافی کا بہانہ بنا کر انہیں اغواء کیاگیا ہے۔ امبیڈکر، گاندھی جی بھی ہمارے ہیں، سدرامیان نے سوال کیا کہ دستور بدلنے والوں ، گاندھی جی کے قاتل گوڈسے کو پوجنے والوں کی  حقیقت میں  کیا کوئی اخلاقی حیثیت بھی ہے۔ انہوں نے کانگریس حکومت کی طرف سے جاری کئے گئے کئی اسکیموں کا تذکرہ کرتےہوئے بتایا کہ بی جےپی منصوبہ بند سازش سے جھوٹ کو پھیلانےکا الزام لگایا۔

پروگرام میں مہیلاکانگریس کی صدر پشپا امرناتھ، کانگریس ضلع صدر اشوک کمار، لیڈرران ونئےکمار سورکے ، پرمود مدھواراج،  وشوناتھ نارائن سوامی ، گوپال پجاری ، جی اے باوا، عبدالغفور ،روشنی اولی ویرا وموجود تھے۔

ایک نظر اس پر بھی

منگلورو:مختلف مذاہب سے تعلق رکھنے والے نوجوان جوڑے کو ہراساں کرنے پر 3افراد گرفتار

منگلورو میں مول پولیسنگ ایک اور تازہ واقعہ پیش آیا ہے جس کے بعدشہر سے 17کلو میٹر دوری پر واقع موکّا ساحل پر چہل قدمی کررہے مختلف مذاہب سے تعلق رکھنے والے ایک جوڑے کو ہراساں کرنے اور لڑکے پٹائی کرنے کے الزام میں پولیس نے 3افراد کو گرفتار کرلیا ہے۔

شیرور کی گرین ویلی نیشنل اسکول اور کالج میں سالانہ کھیل مقابلوں کا انعقاد : کھیل کے دوران دوستی بنائیں کیونکہ دوستی ہمیشہ قائم رہتی ہے: ڈی وائی ایس پی ہری رام شنکر

شیرور کی مشہور و معروف اسکول گرین ویلی نیشنل اسکول اور پی یوکالج کا سال 2019کا مشترکہ سالانہ  اسپورٹس ڈے  کا انعقاد 16نومبر 2019بروز سنیچر کو کالج صحن میں منعقد ہوا۔

منگلورو میں بیاریس انسٹی ٹیوٹ آف ٹیکنالوجی کے زیر اہتمام’ ملت کی تعلیمی  ترقی میں مساجدکی جماعتوں کا کردار‘ ورکشاپ کا انعقاد: نشیلی اشیاء کی لت سے نوجوان کا تحفظ بہت ضروری : سید محمد بیاری

مسلم نوجوان نشیلی اشیاء (ڈرگس) کے عادی بنتے جارہے ہیں ان کی جوانیاں ڈرگس میں برباد ہورہی ہیں، ملت کا مستقبل سنوارنے والے نوجوانوں کا غلط راہ پر چلے جانے اورتعلیم سے محروم ہونے میں نشیلی اشیاء کی لت کے عادی ہونا ایک بڑا اہم سبب ہے۔ اس کے ازالے کے لئے پولس کے تعاون سے ہر ایک مسلم ...

ریاست میں ڈینگو بخار سے عوام پریشان : جنوری سے ابھی تک 14757افراد ڈینگو میں مبتلا

ریاست میں ڈینگو بخار کا ہنگامہ جاری ہے، محکمہ صحت اور خاندانی فلاح وبہبودی کے مطابق یکم جنوری سے ابھی تک 14757افراد ڈینگو میں مبتلا پائے گئے ہیں، جس سے پچھلے ایک دہے میں سب سے زیادہ ڈینگو معاملات امسال درج کئے گئے ہیں۔