منگلورو بم معاملے کی شفافیت کے ساتھ جانچ کا مطالبہ لے کر بھٹکل ایس ڈی پی آئی کی جانب سے حکومت کو  میمورنڈم؛ وزیرداخلہ سے مانگا گیا استعفیٰ

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 23rd January 2020, 8:45 PM | ساحلی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

بھٹکل:23؍جنوری(ایس اؤ نیوز)منگلورو ہوائی اڈے پر پائے گئے بم معاملےکی شفافیت کے ساتھ تفتیش کرتےہوئے حقائق کو عوام کے سامنے لانے اور ریاستی وزیر داخلہ بسورا ج بومائی کے استعفیٰ کا مطالبہ لےکر سوشیل ڈیموکرٹیک آف انڈیا (ایس ڈی پی آئی ) بھٹکل کی جانب سے بھٹکل تحصیلدار کے توسط سے حکومت کو میمورنڈم سونپا گیا۔

میمورنڈم میں کہاگیا ہے کہ منگلورو ہوائی اڈے پر بم کا پتہ چلتے ہی گولی بارکا بدلہ، اسلامی ملک کی تعمیر، جہادی دہشت گردوغیرہ فرضی کہانیاں گھڑ کر اقلیتی طبقے کو کٹہرے میں کھڑا کرنے کی بھرپور کوشش کی گئی ۔ جب پتہ چلا کہ ملزم مسلمان نہیں ہے  تو اس کو ذہنی معذور قراردینے کی کوشش کی جارہی ہے ۔ اتنا ہی نہیں  بم رکھنے جیسے ملک غداری کامعاملہ پٹاخے معاملے میں منتقل کیا گیا ہے ۔ حکومت ، اور انتظامیہ منگلورو بم معاملے میں دوغلے پن کا شکار ہونے سے سماجی صحت متاثر ہوئی ہے۔

میمورنڈم میں اس بات کا بھی تذکرہ کیاگیا ہے کہ دکشن کنڑا ضلع کے پتور تعلقہ ایشور منگیل کے قریب آلرپدوؤ میں دھماکہ خیز اشیاء تیار کرنے کے دوران پھنسے ملزمان کے متعلق ٹھیک سے جانچ نہیں کی گئی ہے۔ اس سے قبل سوجنیا عصمت دری اور قتل معاملے کے ملزم کو بھی ذہنی معذور کہتے ہوئے معاملے کو دبا دیاگیا۔ معاملے میں ملزم غیر مسلم  ہوتاہے تو اس کو ذہنی معذور بتا کر الزامات سے بری کرنے کی پرانی چال چلی جاتی ہے ۔ ہمیں شبہ ہے کہ منگلورو ہوائی اڈے بم معاملہ ، گولی بارمعاملے کو چھپانے اور سی اے اے کے خلاف ہورہے احتجاجات کارخ بدلنے کے لئے افسرشاہی  نے ناٹک  کھیلا ہے۔ ان تمام سازشوں کے حقائق کا پتہ لگانے کے لئے حالیہ یا سابق جج کی نگرانی میں جانچ کی جائے ۔

میمورنڈم میں مطالبہ کیا گیا ہے کہ جانچ سے پہلے ہی ملزم کو ذہنی معذور بتانے والے  وزیر داخلہ بسوراج بومائی استعفیٰ دیں۔ تحصیلدار وی پی کوٹرولی نے میمورنڈم وصول کیا۔ ایس ڈی پی آئی کے ضلع صدر توفیق بیاری ،تعلقہ صدر  وسیم منیگار وغیرہ موجود تھے۔

ایک نظر اس پر بھی

منگلوروکے ایک دیہات میں لگا نیا پوسٹرہندو بیوپاریو! ہمارے گاؤں میں آکر تجارت کرو:منفی پروپگنڈا کرنے والوں کومنھ توڑ جواب

کورونا وائرس کی وباء کو مسلمانوں کی سازش قرار دینے اور ان کے سماجی بائیکاٹ کرنے کی جو لہر چل پڑی ہے اور مختلف مقامات پر مسلمانوں کے داخلے اور آمد ورفت پر پابندی کے جو پوسٹرس، بیانرس اور آڈیو مسیج عام ہورہے ہیں اس سے سماج میں ایک عجیب تشویش پیدا ہوگئی ہے۔

ایمرجنسی معاملات میں کیرالہ کے مریضوں کا علاج مینگلور کے ڈیرلکٹہ اسپتال میں کرنےجنوبی کینرا ڈپٹی کمشنرکی رضامندی

کورونا وائرس کی وبا ء پھیلنے کے بعد کرناٹکا نے کیرا لہ کے ساتھ لگنے والی تمام سرحدیں بند کردی تھیں، جس کی وجہ سے مینگلور سے لگے کیرالہ کے سرحدی علاقہ  کاسرگوڈ اور اطراف سے علاج کے لئے منگلورو آنے والے مریض بری طرح متاثر ہوگئے تھے۔پھر یہ تنازعہ سپریم کورٹ تک جا پہنچا تھا۔ اور ...

بھٹکل سے ایک پرائیویٹ ڈاکٹر سمیت مزید 15 مشکوک لوگوں کے سیمپل جانچ کے لئے روانہ؛ کورونا سے متاثرہ خاتون کو مینگلور منتقل کرنے کی ہورہی ہے تیاری

آج بدھ کو بھٹکل کی ایک حاملہ خاتون کورونا سے متاثر ہونے کی تصدیق ہونے کے بعد اُس کی جانچ کرنے والی ایک ڈاکٹر سمیت قریب 15 لوگوں کے تھوک کے نمونے جانچ کے لئے روانہ کرنے کی اطلاع موصول ہوئی ہے۔ ذرائع نے اس بات کی بھی خبردی ہے کہ خاتون کے رابطے میں رہنے والے پانچ قریبی رشتہ داروں کو ...

ناکہ بندی معاملہ: کرناٹک اور کیرالہ کے درمیان تنازعہ کا تصفیہ، کیس بند

سپریم کورٹ نے کورونا وائرس ’كووڈ -19‘ کے بڑھتے پھیلاؤ کے سلسلے میں جاری ملک بھر میں لاک ڈاؤن کے پیش نظر کرناٹک حکومت کی جانب سے کیرالہ سے متصل سرحد سیل کر دیئے جانے کے معاملے کی سماعت منگل کے روز اس وقت بند کر دی جب اسے بتایا گیا کہ دونوں ریاستوں کے درمیان تنازعہ کا تصفیہ ہو گیا ...

بیدر میں مسجد کے مؤذن کی بے رحمی سے پٹائی؛ شدید زخمی مؤذن اسپتال میں داخل، حملہ آور اسسٹنٹ سب انسپکٹر معطل 

ایسے وقت میں جب کرناٹک میں کورونا وائر س کی روک تھام کے لیے لاک ڈاؤن جاری ہے، اس دوران ریاست کے مختلف حصوں میں فرقہ پرستوں کی جانب سے مسلمانوں پر حملوں کی وارداتیں پیش آرہی ہیں۔