الیکشن کمیشن کرناٹک اسمبلی کی 15 سیٹوں کے ضمنی انتخابات کو ٹالنے پر رضامند

Source: S.O. News Service | Published on 26th September 2019, 7:17 PM | ریاستی خبریں | ملکی خبریں |

نئی دہلی،26؍ستمبر (ایس او نیوز؍ یواین آئی)  سپریم کورٹ میں کرناٹک اسمبلی انتخابات کے نااہل قرار دیئے گئے اراکین کی اسمبلی کی عرضی زیرالتوا ہونے کی وجہ سے الیکشن کمیشن 15 اسمبلی سیٹوں پر ہونے والے ضمنی انتخابات کو ٹالنے پر رضامند ہوگیا ہے۔

ان نااہل قرار دیئے گئے اراکین اسمبلی سے متعلق عرضی پر سپریم کورٹ میں سماعت کے دوران کمیشن نے ان ضمنی انتخابات کو ٹالنے پر رضامندی ظاہر کی۔ جج این وی رمن، جج سنجیو کھنہ اور جج کرشنا مراری پر مشتمل بنچ نے اس معاملہ کی آئندہ سماعت 22اکتوبر مقرر کی ہے۔

خیال رہے کہ کمیشن نے سنیچر کو مہاراشٹر اور ہریانہ اسمبلی انتخابات کی تاریخوں کا اعلان کرتے ہوئے 18 ریاستوں کی 64 اسمبلی سیٹوں کے ضمنی انتخابات کے ساتھ ساتھ کرانے کا اعلان کیا تھا۔

کرناٹک اسمبلی کے اسپیکر نے17 باغی اراکین اسمبلی کو نااہل قرار دیا تھا۔ ان 17 اراکین اسمبلی نے الیکشن کمیشن کو بھی اس معاملہ میں فریق بنانے کی عدالت سے اپیل کی تھی۔ الیکشن کمیشن کے وکیل نے عدالت میں شروع میں دلیل دی تھی کہ اسمبلی اسپیکر کے ذریعہ نااہل قرار دینے کی وجہ سے سیٹیں خالی ہوئی ہیں۔ اس لئے ان سیٹوں پر الیکشن ہونا چاہیے اور اس پر روک نہیں لگنی چاہیے۔

ایک نظر اس پر بھی

شیواجی نگر حلقے سے کانگریس کا راست مقابلہ بی جے پی سے عوام کو حلقے کی فلاح کے حق میں فیصلہ لینا ہوگا۔ انتشار سے فرقہ پرست بی جے پی کو فائدہ ہوگا: رضوان ارشد

یواجی نگر اسمبلی حلقہ جو ان اسمبلی حلقوں میں شامل ہے جس کے اراکین اسمبلی نے بی جے پی کے آپریشن کنول کا حصہ بن کر اپنی رکنیت سے استعفیٰ دیا اور نا اہل قرار پائے اس حلقے میں 5دسمبر کو ضمنی انتخابات کے لئے تینوں اہم سیاسی جماعتوں سے امیدوار میدان میں آچکے ہیں۔

بیدر میں گرلزاسلامک آرگنائزیشن کی جانب سے یومِ اُردو کا انعقاد؛ ”ایک قدم...اُُردو کی بقاء ترقی و ترویج کیلئے“

گرلز اسلامک آرگنائزیشن آف انڈیا کرناٹک (بیدریونٹ) کی جانب سے یومِ اُردو بعنوان ”ایک قدم...اُردو کی بقا ء ترقی و ترویج کیلئے“کا انعقاد بیدر میں منعقد ہوا  جس میں مہمانِ خصوصی کی حیثیت سے خطاب کرتے ہوئے محترمہ ڈاکٹر سرورعرفانہ سی آر پی بھا لکی محکمہ تعلیمات عامہ بیدر نے کہا کہ ...