کرناٹک کے نااہل ممبران اسمبلی کے ضمنی انتخابات لڑنے سے متعلق درخواست پر سپریم کورٹ کرے گا سماعت

Source: S.O. News Service | Published on 23rd September 2019, 7:21 PM | ریاستی خبریں | ملکی خبریں |

نئی دہلی،23ستمبر(ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا)  سپریم کورٹ نے کرناٹک کے نااہل ٹھہرائے گئے 17 ممبران اسمبلی کی 15 اسمبلی سیٹوں کے ضمنی انتخابات میں کھڑے ہونے کا مطالبہ سے متعلق عرضی پر سماعت کرنے کو لے کر پیر کو اتفاق جتایا۔جسٹس این وی رمن کی قیادت والی تین ججوں کی بنچ نے کہا کہ وہ نااہل ممبران اسمبلی کی درخواست پر 25 ستمبر کو سماعت کرے گی۔اس درخواست میں نااہل ممبران اسمبلی نے ضمنی انتخابات لڑنے کے لئے عبوری راحت کا مطالبہ کیا ہے۔نااہل ممبران اسمبلی کی جانب سے پیش سینئر وکیل مکل روہتگی نے بنچ سے کہا کہ ممبران اسمبلی کو نااہل ٹھہرانے کے اس وقت کے اسمبلی صدر کے آر رمیش کمار کے حکم کے مطابق یہ لوگ اس اسمبلی کی باقی مدت میں الیکشن نہیں لڑ سکتے، یہ مدت 2023 کو ختم ہوگی۔دریں اثنا، الیکشن کمیشن کے وکیل نے بنچ کو بتایا کہ 15 خالی اسمبلی سیٹوں کے ضمنی انتخابات مطلع کر دیئے گئے ہیں اور عدالت کو انتخابات پر روک نہیں لگانا چاہئے۔الیکشن کمیشن کے وکیل نے یہ بھی کہا کہ ممبران اسمبلی کو نااہل ٹھہرانے کا سابق اسمبلی اسپیکر کا حکم انہیں کرناٹک میں ضمنی انتخاب لڑنے کے ان کے حقوق سے محروم نہیں کر سکتا۔

ایک نظر اس پر بھی

شیواجی نگر حلقے سے کانگریس کا راست مقابلہ بی جے پی سے عوام کو حلقے کی فلاح کے حق میں فیصلہ لینا ہوگا۔ انتشار سے فرقہ پرست بی جے پی کو فائدہ ہوگا: رضوان ارشد

یواجی نگر اسمبلی حلقہ جو ان اسمبلی حلقوں میں شامل ہے جس کے اراکین اسمبلی نے بی جے پی کے آپریشن کنول کا حصہ بن کر اپنی رکنیت سے استعفیٰ دیا اور نا اہل قرار پائے اس حلقے میں 5دسمبر کو ضمنی انتخابات کے لئے تینوں اہم سیاسی جماعتوں سے امیدوار میدان میں آچکے ہیں۔

بیدر میں گرلزاسلامک آرگنائزیشن کی جانب سے یومِ اُردو کا انعقاد؛ ”ایک قدم...اُُردو کی بقاء ترقی و ترویج کیلئے“

گرلز اسلامک آرگنائزیشن آف انڈیا کرناٹک (بیدریونٹ) کی جانب سے یومِ اُردو بعنوان ”ایک قدم...اُردو کی بقا ء ترقی و ترویج کیلئے“کا انعقاد بیدر میں منعقد ہوا  جس میں مہمانِ خصوصی کی حیثیت سے خطاب کرتے ہوئے محترمہ ڈاکٹر سرورعرفانہ سی آر پی بھا لکی محکمہ تعلیمات عامہ بیدر نے کہا کہ ...