آئی پی ایل 2020: ڈیوڈ وارنر-ردھیمان ساہا کی طوفانی بلے بازی،دہلی کیپٹلز کوحیدرآباد کے ہاتھوں 88 رن سے شکست

Source: S.O. News Service | Published on 28th October 2020, 10:34 AM | اسپورٹس |

دبئی،28؍اکتوبر(ایس او نیوز؍ایجنسی) سنرائزرس حیدر آباد نے پلے آف میں جگہ بنانے کی امیدوں کو زندہ رکھتے ہوئے آج دہلی کیپٹلز کو 88 رن سے بڑی شکست دی۔ دہلی جو کہ دو پوائنٹ حاصل کر پلے آف میں پہنچنے والی پہلی ٹیم بننے کا خواب دیکھ رہی تھی، ان کے خوابوں کو پہلے تو حیدر کے کپتان ڈیوڈ وارنر اور ردھیمان ساہا کی سلامی جوڑی نے طوفانی بلے بازی سے دھچکا پہنچایا، اور پھر راشد خان کی دھاردار گیندبازی نے تابوت پر آخری کیل کا کام کیا۔

دہلی کیپٹلز کے کپتان شریئس ایر نے آج ٹاس جیت کر پہلے گیندبازی کا فیصلہ کیا اور ان کا فیصلہ پورے میچ کے دوران کبھی بھی درست ثابت ہوتا ہوا نظر نہیں آیا۔ حیدر آباد کے کپتان ڈیوڈ وارنر اور ردھیمان ساہا کی سلامی جوڑی نے 9.4 اوور میں 107 رن کی تیز طرار شراکت داری کی، اور قابل غور بات یہ ہے کہ آئی پی ایل کے اس سیزن میں پاور پلے (شروعاتی چھ اوور) میں سب سے زیادہ 77 رن کا ریکارڈ اپنے نام کیا۔

بہر حال پہلا وکٹ کپتان وارنر کا گرا جنھوں نے 2 چھکوں اور 8 چوکوں کی مدد سے 34 گیندوں پر 66 رن کی اننگ کھیلی، اور پھر دوسرا وکٹ ردھیما ساہا کی شکل میں گرا جنھوں نے 2 چھکوں اور 12 چوکوں کی مدد سے 45 گیندوں پر 87 رن بنائے۔ اس کے بعد حیدر آباد کا مزید کوئی وکٹ نہیں گرا۔ جب ساہا آؤٹ ہوئے تو اس وقت ٹیم کا اسکور 14.3 اوور میں 170 رن تھا۔ ساہا نے منیش پانڈے کے ساتھ 63 رنوں کی شراکت داری کی اور دلچسپ بات یہ ہے کہ 50 سے زائد رن تنہا ساہا نے ہی بنائے۔ ساہا کے آؤٹ ہونے کے بعد منیش پانڈے نے تیز کھیلنا شروع کیا اور 31 گیندوں پر 1 چھکا و 4 چوکے کی مدد سے ناٹ آؤٹ 44 رن بنائے۔ ولیمسن 10 گیندوں پر 11 رن بنا کر ناٹ آؤٹ رہے۔ مقررہ 20 اوور میں حیدر آباد نے 2 وکٹ کے نقصان پر 219 رنوں کا پہاڑ کھڑا کر دیا جسے عبور کرنا دہلی کے لیے آسان نہیں تھا۔

دہلی کی طرف سے اس سیزن میں سب سے کامیاب گیندباز رہے کگیسو رباڈا آج سب سے زیادہ خرچیلے ثابت ہوئے اور انھیں کوئی وکٹ بھی حاصل نہیں ہوا۔ رباڈا نے 4 اوور میں 54 رن دیے۔ 1 وکٹ نارخیا (4 اوور میں 37 رن) اور 1 وکٹ روی چندر اشون (3 اوور میں 35 رن) کو حاصل ہوا۔ بقیہ گیندبازوں کو کوئی وکٹ نہیں ملا۔ اکشر پٹیل نے 4 اوور میں 36 رن، تشار دیشپانڈے نے 3 اوور میں 35 رن اور مرکس اسٹوئنس نے 2 اوور میں 15 رن دیے۔

دہلی کی بلے بازی جب شروع ہوئی تو پہلا جھٹکا پہلے اوور کی تیسری ہی گیند پر شکھر دھون کی شکل میں لگا جو بغیر کوئی رن بنائے سندیپ شرما کا شکار ہو گئے۔ مرکس اسٹوئنس بھی محض 5 رن بنا کر دوسرے اوور میں پویلین لوٹ گئے۔ سلامی بلے باز اجنکیا رہانے اور سمرن ہٹمایر نے تیزی سے رن بنانے کی کوشش کی، لیکن اسپن کے جادوگر راشد خان نے ان دونوں کو اپنے پہلے ہی اوور میں آؤٹ کر دہلی کو بیک فٹ پر دھکیل دیا۔ پہلے ہٹمایر 16 کے انفرادی اسکور پر بولڈ ہوئے، اور پھر اجنکیا 19 گیندوں پر 26 رن بنا کر ایل بی ڈبلیو آؤٹ ہو گئے۔ اس وقت دہلی کا اسکور 6.5 اوور میں 4 وکٹ کے نقصان پر 55 رن تھا۔

امید کی جا رہی تھی کہ کپتان شریئس ایر اور رشبھ پنت کوئی کرشمہ دکھائیں گے، لیکن حیدر آباد کی بہترین گیندبازی کے سامنے وہ بھی کچھ نہیں کر سکے۔ کپتان شریئس ایر 7 رن بنا کر وجے شنکر کی گیند پر ولیمسن کوآسان کیچ تھما بیٹھے۔ جلد ہی اکشر پٹیل نے محض 1 رن بنا کر راشد خان کا شکار ہو گئے۔ سولہویں اوور کی آخری گیند پرکگیسو رباڈا (3 رن) بھی بڑا شاٹ کھیلنے کی کوشش میں نٹراجن کی یارکر کو سنبھال نہیں سکے اور بولڈ ہو گئے۔ اگلی ہی گیند پر کافی دیر سے جدوجہد کر رہے رشبھ پنت بھی 35 گیندوں پر 36 رن (1 چھکا 3 چوکے) بنا کر آؤٹ ہو گئے اور اس کے ساتھ ہی ایک طرح سے دہلی کی امیدیں بھی ختم ہو گئیں۔

آخر میں تشار پانڈے نے کچھ اچھے ہاتھ دکھائے اور 9 گیندوں پر 1 چھکا و 2 چوکے کی مدد سے ناٹ آؤٹ 20 رن بنائے، لیکن دوسری طرف روی چندرن اشون 5 رن بنا کر اور نارخیا 1 رن بنا کر آؤٹ ہو گئے، گویا کہ پوری ٹیم 19 اوور میں ہی 131 رن بنا کر آل آؤٹ ہو گئی۔ یہ دہلی کی لگاتار تیسری شکست ہے۔

حیدر آباد کی طرف سے گیندبازی میں آج ایک بار پھر راشد خان ہیرو رہے جنھوں نے 4 اوور میں محض 7 رن دے کر 3 وکٹ حاصل کیے۔ 2-2 وکٹ سندیپ شرما اور ٹی نٹراجن کو حاصل ہوئے جنھوں نے 4-4 اوور میں بالترتیب 27 اور 26 رن دیے۔ 1-1 وکٹ شہباز ندیم، جیسن ہولڈر اور وجے شنکر کو ملا جنھوں نے بالترتیب 1 اوور میں 8 رن، 4 اوور میں 46 رن اور 1.5 اوور میں 11 رن دیے۔

ایک نظر اس پر بھی

آئی پی ایل فائنل میں چنئی نے دی کولکاتا نائٹ رائڈرس کو شکست، چنئی بنا چوتھی مرتبہ آئی پی ایل چیمپئن

سلامی بلے باز ڈو پلیسسز (86) کی بہترین نصف سنچری کے ساتھ روبن اتھپا کے (31) اور معین علی کے (ناٹ آؤٹ37) کی جارحانہ اننگز کے نتیجے میں چنئی سپر کنگس نے کولکاتا نائٹ رائڈرس کو  27 رنوں سے شکست دے دی اور چوتھی بار آئی پی ایل چمپئن بننے کا فخر حاصل کرلیا۔ 

آئی پی ایل 2021: کولکاتہ تیسری مرتبہ آئی پی ایل کے فائنل میں ، راہل ترپاٹھی نے چھکا لگا کر دلائی جیت

)  آئی پی ایل 2021 کا خطابی مقابلہ اب کولکاتہ نائٹ رائیڈرس اور چنئی سپرکنگس کے درمیان کھیلا جائے گا ۔ کے کے آر نے کوالیفائر 2 کے میچ میں دہلی کیپیٹلز کو 3 وکٹوں سے شکست دیدی ہے ۔ دہلی کی ٹیم پوائنٹس ٹیبل پر سرفہرست رہی تھی اور اس کو کوالیفائر 1 میں چنئی سپرکنگس نے شکست دی تھی ۔ میچ ...

چنئی نے ریکارڈ بنایا، نویں بار آئی پی ایل کے فائنل میں پہنچی، دہلی کو دی شکست

دبئی میں کھیلے گئے کوالیفائنگ مقابلہ میں چنئی سپر کنگس (سی ایس کے) نے دہلی کیپیٹلس کو شکست دے کر فائنل میں اپنی جگہ بنا لی ۔ سی ایس کے کپتان دھونی نے ایک شاندار پاری کھیلتے ہوئے چھہ گیندوں میں 18 رن بنائے اور آخری گیند پر چوکا لگاکر ٹیم کو جیت دلائی۔رابن اتھپا اور رتو راج ...