بھٹکل میں کووڈ ٹیکہ کی مانگ میں اضافہ : بیداری کے بعد عوام کا رخ اسپتال کی طرف

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 2nd May 2021, 6:09 PM | ساحلی خبریں |

بھٹکل:2؍ مئی (ایس اؤ نیوز) کورونا سے لڑنے کی قوت بخشنے والے کووڈ انجکشن کی مانگ  دن بدن بڑھتی جارہی ہے، خدشہ ظاہر کیا جارہاہے کہ حالات یوں ہی جاری رہے تو اگلے کچھ دنوں کے اندر ہی انجکشن ختم ہوسکتا ہے اور  انجکشن کی قلت ہوسکتی ہے۔

شہر میں جب   45اور60برس سے زائد عمروالوں کو یہ انجکشن دئیے جانے  کی مہم شروع کی گئی تھی  تو بہت کم لوگ انجکشن لگوارہے تھے ۔ اب اپریل ختم ہونے تک انجکشن لینے والوں کی تعداد میں اضافہ درج کیا جارہا ہے۔

ابتدا میں لوگ  انجکشن لگوانے میں پش و پیش سے کام لے رہے تھے اور حالات سے تعلقہ انتظامیہ کے افسران بھی  کافی پریشان  تھے  کیونکہ پورے اترکنڑا ضلع میں بھٹکل انجکشن لگوانے کے معاملے میں بالکل آخری نمبر پر تھا۔ اب جب کہ کورونا کی دوسری لہر کا قہر جاری  ہے ،  متاثرین اور اموات میں اضافہ ہونے کے بعد کووڈ کا ٹیکہ  لینے میں  عوام آگے آرہے ہیں  اور اعتماد کی فضا پیدا ہورہی ہے۔ اس تعلق سے بھٹکل کے ذمہ داران کا خود پہل کرکے ٹیکہ لگوانا بھی لوگوں کے دلوں میں بیٹھے خدشات کو دور کرنے میں کارآمد ثابت ہوئے ہیں

تعلقہ استپال کی میڈیکل آفیسر ڈاکٹر سویتا کامت نے بتایا کہ   کووڈ ٹیکہ  کے متعلق ہر طبقے کے شکوک و شبہات کودور کرنا ہمارے لئے لئے ایک چیلنج بن گیا تھا۔ اس موقع پر ہم نے سبھی طبقات کے لیڈران کے ساتھ میٹنگ کا انعقاد کرتے ہوئے انجکشن کے متعلق مفصل جانکاری دی اور خود ذمہ داران کو انجکشن لگوانے میں پہل کرنےکی اپیل کی۔ جب ذمہ داران یکے بعد دیگرے انجکشن لگوانے لگے اور انہیں کوئی سائڈ افکٹ نہیں نظر آیا تو عوام آہستہ آہستہ انجکشن کے لئے سرکاری اسپتال سمیت سنٹروں کی طرف رُخ کرنے لگے۔   انہوں نے بتایا کہ تعلقہ کے 12مقامات پر انجکشن لگوانے کے سنٹر قائم کئے گئے ہیں۔ انجکشن لینے کے بعد چند ایک لوگوں کو معمول بخار آتا ہے اس کے سوا کوئی سائڈ افکٹ نہیں  ہے ۔ ابھی تک 45سال سے زائد عمر والے 4256افراد۔ 60سے زائد عمر والے 5770اور 1060کورونا وارئیرس سمیت کل 11086لوگوں نے کووڈ انجکشن لگوایا ہے۔

یومیہ 15-20آکسیجن سلینڈرچاہئے:بھٹکل تعلقہ اسپتال میں عام دنوں میں یومیہ کم سے کم 10آکسیجن سلینڈر استعمال ہوتے ہیں۔ لیکن جب سے کووڈ کی دوسری لہر کی شروعات ہوئی ہے  آکسیجن کے استعمال میں اضافہ ہواہے۔ ہر دن کم سے کم 15-20آکسیجن سلینڈراستعمال ہورہے ہیں۔ کنداپور سے بروقت آکسیجن سلینڈروں کی سپلائی ہورہی ہے۔ ڈاکٹر سویتا کامتھ نے بتایا کہ  کووڈ کے متاثرین میں اضافہ ہونےپر بھی  بھٹکل میں اکسیجن کی کمی نہیں ہوگی کیونکہ یہاں  وافر مقدار میں اکسیجن  کی سپلائی ہورہی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل میں کورونا معاملات میں ہورہا ہے اضافہ؛ آج بھی 64 کی رپورٹ آئی پوزیٹیو؛ بھٹکل میں سات علاقوں کوقرار دیا گیا کنٹیمنٹ زون

جس طرح ریاست کرناٹک میں اب ضلع اُترکنڑا میں کورونا کے معاملات میں روز بروز اضافہ دیکھا جارہا ہے اور ضلع اُترکنڑا پوری ریاست میں کورونا پوزیٹیو معاملات میں  تیسرے نمبر پر پہنچ گیا ہے، اُسی طرح بھٹکل میں بھی کورونا کے معاملات میں  تشویش کی حد تک اضافہ دیکھا جارہاہے۔

بھٹکل: شمالی کینرا میں کووڈ وباء کا بدلتا منظر نامہ : سب سے آخری پوزیشن والا ضلع پہنچ گیا سب سے آگے ؛ کون ہے ذمہ دار ؟

کورونا کی دوسری لہر جب ساری ریاست کو اپنی لپیٹ میں لے رہی تھی تو ضلع شمالی کینرا پوزیٹیو معاملات میں گزشتہ لہر کے دوران سب سے آخری پوزیشن پر تھا۔ لیکن پچھلے دو تین دنوں سے بڑھتے ہوئے پوزیٹیو اورایکٹیو معاملات کی وجہ سے اب یہ ضلع ریاست میں سب سے  اوپری درجہ میں پہنچ گیا ہے۔ بس ...

کورونا کرفیو کی وجہ سے لاری ڈرائیوروں کو سفرکے دوران کھانے پینے اور لاری کی مرمت کا مسئلہ درپیش:ڈرائیور، کلینر اور گیاریج والوں کی زندگی پنکچر

کورونا وائرس پر لگام لگانے کے لئے حکومتوں کی طرف سے  نافذ کئے گئے سخت کرفیو کی وجہ سے ہوٹل ، ڈھابے ،گیاریج ، پنکچر کی دکانیں وغیرہ بند ہیں ، جس کے نتیجے میں  ضروری اشیاء سپلائی کرنےوالی لاریوں کے ڈرائیوروں کو سفر کے دوران میں کئی مشکلات درپیش ہیں۔

کرناٹکا میں کورونا کے بڑھتے معاملات کے چلتے سرکاری اسپتالوں میں ڈیالسس کی خدمات بند : حکومت کی خاموشی پر فاؤنڈیشن کا اقدام

پیشگی احتیاطی تدابیر اورمنظم و منضبط نظام کے بغیر  کورونا وائرس پر  کنٹرول کرنے میں ناکامی  اور کووڈ ٹیکہ  کی سپلائی بند ہوجانے سے ایک طرف عوام پہلے سے پریشان ہیں، ایسے میں    حکومت کی ایک  اورنظرا ندازی  نے ریاست کرناٹک کے ہزاروں ڈیالسس کے مریضوں کو مشکلات میں ڈال دیا ہے۔

بھٹکل سمیت ساحلی کرناٹکا میں 'ٹاوکٹے' طوفان کا اثر؛ طوفانی ہواوں کے ساتھ جاری ہے بارش؛ کئی مکانوں کی چھتیں اُڑ گئیں، بھٹکل میں ایک کی موت

'ٹاوکٹے' طوفان جس کے تعلق سے محکمہ موسمیات نے پیشگی  اطلاع دی تھی کہ    یہ طوفان  سنیچر کو کرناٹکا اور مہاراشٹرا کے ساحلوں سے ٹکرارہا ہے،   اس اعلان کے عین مطابق  آج سنیچر صبح سے  بھٹکل سمیت اُترکنڑا اور پڑوسی اضلاع اُڈپی اور دکشن کنڑا میں طوفانی ہواوں کےساتھ بارش جاری ہے جس ...

ساحلی کرناٹکا میں 'ٹاوکٹے' طوفان کی دستک ۔ محکمہ موسمیات نے جاری کیا 16 مئی تک ریڈ الرٹ

ساحلی کرناٹکا کی طرف  بڑھتے  'ٹاوکٹے' طوفان کے پیش نظرمحکمہ موسمیات نے 16مئی تک ریڈ الرٹ جاری کرتے ہوئے مچھیروں اور عوام الناس کو دریا، سمندراورنشیبی و ساحلی علاقوں سے دور رہنے کی ہدایت دی ہے۔