بھٹکل : کووِڈ 19متاثرہ مریض کی موجودگی سے متعلق غلط جانکاری دے کر ’آروگیہ سیتو‘ ایپ نے اڑائی بھٹکل کے شہریوں کی نیند

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 6th May 2020, 12:54 PM | ساحلی خبریں |

بھٹکل6/مئی (ایس او نیوز)کورونا وباء پر قابو پانے کے اقدامات اور اس مرض کے پھیلاؤ کے تعلق سے عوام کو آگاہ رکھنے کے لئے مرکزی حکومت کی جانب سے ’آروگیہ سیتو‘ نامی ایپ جاری کیا گیا ہے اورخود وزیر اعظم نریندرا مودی نے عوام سے درخواست کی ہے کہ اس ایپ کو ڈاؤن لوڈ کرلیں۔   لیکن اس ایپ کی وجہ سے بھٹکل میں بہت سارے شہریوں کی نیندیں اڑگئیں کیونکہ پیر کے دن اس ایپ میں بتایا جارہاتھا کہ بھٹکل میں ایک کووِڈ 19کا مریض موجود ہے اور پھر منگل کے اس میں مزید 3مریضوں کی تعداد کا اضافہ دکھایاگیا اس طرح دو دن کے اندر بھٹکل میں چار مریض موجود ہونے کی خبر سے لوگوں میں تشویش کی لہر دوڑ گئی۔کیونکہ بعض لوگوں کے فون میں مریض ان سے چند ہی میٹر کے فاصلے پر موجود ہونے کی نشاندہی کی جارہی تھی۔

 آروگیہ سیتو ایپ، بلیو ٹوتھ اور جی پی ایس کے تحت کام کرتا ہے۔پہلی مرتبہ ڈاؤن لوڈ کرنے کے ساتھ ہی اس میں کچھ معلومات پوچھی جاتی ہیں، اور کچھ ذاتی تفصیلات درج کرکے اپنے آپ کو رجسٹر کروانا ہوتا ہے۔ایپ کے اوپری حصے میں ایک ’خطرے‘ کی اطلاع دینے والا سرخ نشان دکھائی دیتا ہے۔ اس نشان پر کلک کرنے سے کووِڈ 19کی تصدیق ہونے کی انفارمیشن ایپ میں درج ہوجاتی ہے۔اور ایسے فون سے قریب تر رہنے والے لوگوں کے فون میں اس ایپ کے ذریعے خطرے کی اطلاع فراہم کی جاتی ہے۔ 

 سمجھا جاتا ہے کہ پیر کے دن ایپ کا درست استعمال نہ جاننے والے کسی شخص نے جان بوجھ کر یا انجانے میں اس خطرے کے نشان پر کلک کیا ہوگا۔اس کے بعد شہر کے اندر 5کلو میٹر اور 10کلو میٹر کے فاصلے میں کووڈ مریض ہونے کی اطلاع ایپ میں دکھائی جانے لگی۔اس کے علاوہ 14افراد کے اندر بیماری کے آثار نظر آنے کی بات بھی ایپ میں درج ہوگئی تھی۔ اور یہ اطلاعات مختلف فون میں مختلف اعداد وشمار کے ساتھ دکھائی جارہی تھیں۔اس کی وجہ سے عوام کے اندر خوف، تشویش اور الجھن پیداہونا فطری بات تھی۔

 اس کے بارے میں ضلع پنچایت سی ای او محمد روشن نے بتایا کہ اس ایپ کو مرکزی حکومت کے ذریعے چلایا جاتا ہے۔اس میں ضلع انتظامیہ کا کوئی عمل دخل نہیں ہوتا۔ اس میں جو کوتاہی مل رہی ہے اور جو غلط معلومات دکھائی جارہی ہیں، اس کی اطلاع متعلقہ محکمہ کو دی جائے گی۔

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل:کورونا سے متاثرہ لوگ سونارکیری اسکول سے ویمن سینٹر منتقل؛ جےڈی نائیک سمیت کئی لیڈران کی رپورٹ آنی باقی

بھٹکل میں  کورونا کے تیسرے حملے میں جہاں ایک طرف دو لوگ جاں بحق ہوگئے وہیں   اب تک  بھٹکل میں 63 لوگ کورونا سے متاثر پائے گئے ہیں، بھٹکل کی ایک معروف  شخصیت مینگلور اسپتال میں ایڈمٹ ہیں تو دیگر لوگ بھٹکل سونارکیری اسکول اور بھٹکل تعلقہ سرکاری اسپتال میں داخل کئے گئے تھے ۔ اب ...

آج 16 پوزیٹیو آنے والوں میں تین دبئی سے اور آٹھ وجے واڑہ سے لوٹے لوگ شامل

بھٹکل کے آج جن 16 لوگوں کی رپورٹ کورونا  پوزیٹیو آئی ہے، اُن میں سے تین لوگ دبئی سے آئے ہوئے لوگ ہیں، آٹھ لوگ وجئے واڑہ ،  تین لوگ  اُترپردیش  اور مہاراشٹرا سے لوٹا ہوا ایک شخص بھی آج کی لسٹ میں شامل ہیں۔

کورونا اَپ ڈیٹ:جنوبی کینرامیں آج صبح سے اب تک ہوئی 2افراد کی موت۔ضلع میں ہلاک ہونے والوں کی تعداد ہوئی 22

جنوبی کینرا میں کورونا وباء کے اثرات بہت زیادہ سنگین صورت اختیار کرتے جارہے ہیں۔ آج صبح سے اب تک کووِڈ کے 2 مریض موت کا شکار ہوگئے ہیں جس کے بعد ضلع میں وباء کی وجہ سے ہلاک ہونے والوں کی تعداد 22ہوگئی ہے۔

بھٹکل میں نجی اسپتال کی نرس کو لگ گیا کورونا کا مرض۔ایس ایس ایل سی کی طالبہ نرس کی بیٹی کو کیا گیا ہوم کوارنٹین

ایک نجی اسپتال میں خدمات انجام دینے والی نرس کو کووِڈ کا مرض لاحق ہونے کے بعدایس ایس ایل سی کا امتحان دے رہی اس کی بیٹی کو امتحان سے باز رکھتے ہوئے ہوم کوارنٹین کیا گیا ہے۔

بھٹکل ٹاؤن، ہیبلے پنچایت اور جالی پنچایت علاقوں میں لاگو رہے گارات کا کرفیو۔سیل ڈاؤن کیے جارہے ہیں ’ہاٹ اسپاٹس‘

بھٹکل تعلقہ میں کورونا وباء کی بدلتی صورتحال پر قابو پانے کے لئے ضلع انتظامیہ نے لاک ڈاؤن قوانین میں دوبارہ کچھ سختی برتنے کافیصلہ کیا ہے۔اسی کے تحت جمعہ کے دن شام میں منعقدہ ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے اسسٹنٹ کمشنر بھرت ایس نے عوام کے لئے جو ہدایات جاری کیں اس کے مطابق ...

بھٹکل سے 200 سے زائد تھوک کے نمونے جانچ کے لئے روانہ؛ 16 کی رپورٹ پوزیٹیو آنے کی خبر

حال ہی میں بھٹکل میں   کورونا کے  جو تازہ معاملات سامنے آئے ہیں، اُس  میں مزید اضافہ کا خدشہ ظاہر کیا جارہا ہے۔ ذرائع سے ملی اطلاع کے مطابق  اب تک 184 لوگوں کے نمونے جانچ کے لئے روانہ کئے گئے ہیں جس میں سے بعض کی رپورٹ آچکی ہیں، اور بعض کی رپورٹس شام تک    آنے کی توقع ہے۔