مینگلور: جنوبی کینرا کے سابق ڈپٹی کمشنر سسی کانت سنیتھل نے کہا؛ مستعفی ہونے کے بعد ایک ہی دن میں ہوگیا ’دیش دروہی‘ 

Source: S.O. News Service | Published on 3rd October 2019, 1:10 PM | ساحلی خبریں |

منگلورو3/اکتوبر(ایس او نیوز) ضلع جنوبی کینرا کے سابق ڈپٹی کمشنرآئی اے ایس آفیسر سسی کانت سینتھل نے کہا ’دس برس تک عوامی زندگی میں خدمات انجام دے کر مستعفی ہوتے ہی ایک دن کے اندر ہی مجھے دیش دروہی بنادیا گیا ہے‘

شہر میں منعقدہ ’گاندھی 150چنتنا یاترا‘ پروگرام میں ’باپو اور نیشنلزم‘ کے عنوان پر خطاب کرتے ہوئے سابق ڈی سی نے کہا کہ’یہ امتحان کی گھڑیاں ہیں۔ ہم میں سے بہت سارے لوگوں کو اپنی قومیت ثابت کرنے کے لئے مجبور کیا  جاتا ہے اور اس کے لئے وہ بھارت ماتا اور ایسے ہی کچھ شلوگن وضع کرلیتے ہیں۔“ انہوں نے کہا کہ ملک میں سب لوگ دیش سے پریم رکھتے تھے، لیکن کوئی کسی سے اس پر سوال نہیں کرتاتھا۔لیکن اب دیش کے نام پر نعرے بازی کرکے دیش بھکتی ثابت کرنے کے لئے کہا جاتا ہے۔میں آج بھی گاندھی کو ہی راشٹرا پتا مانتا ہوں۔یہ لوگ مجھے ’منا بھائی ایم بی بی ایس فلم کی طرح گاندھی گری کرنے والا سمجھ رہے تھے۔“

انہوں نے کہا کہ”جس طرح خاندانی تعلقات اور روایات کسی قانون کے چوکھٹے میں محدود نہیں رہ سکتے بلکہ اختلافات میں اتحاد کا مظاہرہ کرنا ہوتا ہے اسی طرح دیش کو بھی ایک خاندان تصورکرنا چاہیے۔لیکن دیش اور قومیت میں فرق ہے۔ ایک دیش کے لئے ایک ہی زبان ہونا ضروری نہیں ہے۔تمل، کنڑی، اور گجراتی جیسی مختلف زبانیں بولنے والوں نے متحد ہوکر دیش کی آزادی کی جنگ لڑی تھی۔اور یہی جذبہ گاندھی جی کا فلسفہ تھا۔اسی لیے گاندھی جی نے کہا تھا کہ قومیت کا مطلب انسانیت ہوتا ہے۔اور انسانیت کے مفاد میں قوم کو چھوڑنے کے لئے تیار رہنا ہی اصل قومیت ہوتی ہے۔لہٰذا گاندھی جی کے اہنسا نظریے پر اتحاد قائم کرنے والا دیش پریم ہی آج کی ضرورت ہے۔“

ایک نظر اس پر بھی

منگلورومیں بیچ سڑک پر بھاری ٹرک پھنس جانے سے ٹریفک جام۔ ایئر پورٹ اور دفتروں کو جانے والے ہوگئے پریشان

شہر کے شربت کٹّے کے پاس ایک بھاری ٹریئلر ٹرک ایئر پورٹ جانے والی بیچ سڑک پر پھنس جانے کی وجہ سے صبح کے وقت ٹریفک جام ہوگیا جس کی وجہ سے ایئرپورٹ جانے والے مسافر بہت ہی زیادہ پریشان ہوگئے۔ اس کے علاوہ اسکول جانے والے طلبہ اور دفتروں میں ڈیوٹی پر جانے والے بھی بری طرح پھنس کر رہ ...

بھٹکل میں تیز رفتار کاربے قابو ہوکر بجلی کے کھمبے سے ٹکراگئی، کار کو شدید نقصان، بڑا حادثہ ٹلا

  یہاں نوائط کالونی نیشنل ہائی وے پرایک کار بے قابو ہوکر تیز رفتاری کے ساتھ بجلی کے کھمبے سے ٹکرا گئی، حادثے میں کسی کو جانی نقصان نہیں پہنچا، البتہ کار کو شدید نقصان پہنچا ہے۔ حادثہ جمعرات صبح قریب سات بجے پیش آیا۔

بھٹکل نیشنل ہائی وے پر تیزرفتار بس، لاری سے ٹکراگئی؛ 25 سے زائد زخمی

یہاں وینکٹاپور نیشنل ہائی وے 66 پر ایک تیز رفتار بس، پارک کی ہوئی لاری سے  ٹکراگئی جس کے نتیجے میں بس پر سوار 25 سے زائد مسافر زخمی ہوگئے، جن میں سے دو کو کنداپور اور باقی کو بھٹکل سرکاری اسپتال میں داخل کیا گیا ہے۔