بنگلورو سےلاپتہ سات بچوں میں سے 4بچے منگلورو میں پائے گئے

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 13th October 2021, 7:39 PM | ساحلی خبریں |

منگلورو :13؍ اکتوبر(ایس اؤ نیوز)بنگلورو سے لاپتہ ہونے والے سات  بچوں کے معاملے نے لوگوں کو اُس وقت حیرت میں ڈال دیا جب  ایک لڑکی اور تین  لڑکے  مینگلور میں  پائے گئے۔

بنگلورو سے اتوار کو سات بچے اپنے گھروں سے لاپتہ ہوگئےتھے۔ جن میں سے تین بچے پیر کو ہی بنگلورو میں پائے گئے تھے تو بقیہ چار بچوں کی تلاش جاری تھی۔ مگر اب خبر ملی ہے کہ امرت ورشنی ، رائین سدھارتھ ، چنتن  اور بھومی نامی بچے منگلورو میں پائے گئےہیں۔بتایا گیا ہے کہ  20سالہ لڑکی امرت ورشنی   دیگر  بچوں کی رہنمائی کررہی تھی ، اس کی باتیں سن کر ہی بچے گھر سے لاپتہ ہونےکی بات کہی جارہی ہے۔

ذرائع سے ملی اطلاع کے مطابق پیر کی رات بنگلورو سے ایک پرائیویٹ بس کے ذریعے امرت ورشنی اور تین بچے منگل کی صبح منگلورو پہنچے ۔ صبح 7بجے شہر کے امبیڈکر سرکل پر چاروں  لوگ بس سے اترے تو پڑوس میں ہی کھڑے ہوئے آٹو ڈرائیوروں کی نظر میں آگئے۔ بچے وہاں موجود چند افراد کے پاس موبائیل لےکر بات کرنےکی کوشش میں تھے تو دوسرے بچے یہاں لاڈج کہاں ملے گی پوچھ رہے تھے اور اسی طرح زیورات گروی رکھنے کے متعلق بھی معلومات حاصل کرتے دیکھے گئے۔ بچوں کی چال چلن پرآٹو ڈرائیور پرشانت اور رمیش کو شبہ ہواکہ کہیں یہ بنگلورو سےلاپتہ ہونے والے بچے تو نہیں ہیں؟۔

آٹو میں موجود پیر کا اخبار دیکھاتو ڈرائیوروں کو یقین ہوگیا کہ بنگلورو سے لاپتہ ہونےوالے بچے یہی ہیں۔ آٹوڈرائیورنے  بچوں سے بات کرتےہوئے سب کچھ معلومات حاصل کیں ۔ بچے آٹو میں بیٹھ گئے ،بچوں سےکہاگیا کہ  پولس تھانہ جائیں گے تو جواب ملاکہ چلئے۔ ڈسٹ بین میں پھینکے گئے بیگ لے کر پانڈیشور پولس تھانہ پہنچ کر بچوں کو پولس کو سونپ دیا۔ اس کے بعد پولس  نے بچوں کے والدین سے رابطہ کرتےہوئے انہیں بلا بھیجا۔ سرپرست پولس تھانہ پہنچے تو بچوں کو ان کے حوالے کئے جانے کی جانکاری پولس نے دی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل کے اعلیٰ افسران کے خلاف ہتک ذات مقدمہ درج ہونے کا معاملہ : سرکاری ملازمین سنگھا کی کڑی مذمت

18اکتوبر کو بھٹکل میونسپالٹی کے دکانوں کی نیلامی میں شریک ہوئے بھٹکل اسسٹنٹ کمشنر، تحصیلدار اور چیف آفیسر کے خلاف بغیر کسی وجہ کے ، غیرقانونی طورپر ہتک ذات کا معاملہ درج کئےجانے کی کرناٹکا ملازمین سنگھ بھٹکل شاخ نے مذمت کی ہے۔

کاروار: طلبا اور روزگار وں کےلئے تعلقہ ، ضلعی ، ریاستی اور قومی سطح کا تقریری مقابلہ : 18سے 29سال کی عمر والے توجہ دیں؛ قومی سطح پر اول آنے پر دولاکھ روپیہ انعام

یوتھ اینڈ اسپورٹس وزارت کے تعاون سے نہرو یوا کیندر کی جانب سے تعلقہ ، ضلع، ریاستی اور قومی سطح پر ہندی اور انگریزی زبانوں میں  تقریری مقابلوں کا انعقاد کئے جانے نہرو یوا کیندر کے ذمہ داروں نے پریس ریلیز کے ذریعے جانکاری دی ہے۔

بھٹکل جماعت اسلامی ہند اور سدبھاؤنا منچ بھٹکل کے اشتراک سے’حضرت محمد  ﷺ مثالی رہنما‘ کے عنوان پر پروگرام کا انعقاد

آخری نبی حضرت محمد ﷺ کی تعلیمات کو ریاستی عوام کے سامنے پیش کرنےکی غرض وغایت لے کر جماعت اسلامی ہند کرناٹکا کی طرف سے 17سے 26اکتوبر تک منائی جارہی ’سیرتؐ مہم ‘ کی مناسبت سے بھٹکل کے دعوت سنٹر میں 26اکتوبر بروزمنگل کو  منعقدہ سیرت پروگرام میں مقررین نے اپنے خیالات کا اظہار ...

بھٹکل ہیبلے گرام پنچایت انتظامیہ پر رشوت خوری کا الزام : خصوصی میٹنگ میں الزام ثابت کرنے کا مطالبہ

تعلقہ کے ہیبلے گرام پنچایت کے چند ممبران نے گرام پنچایت انتظامیہ  پر رشوت خوری کا الزام عائد کئےجانےکو لےکر ہیبلے پنچایت ہال میں پنچایت ممبران کی  خصوصی میٹنگ منعقد ہوئی ۔