بھوپال میں بچی کا عصمت دری کے بعد قتل 7پولیس افسر معطل-ملزمین کے خلاف سخت کارروائی کی ہدایت

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 10th June 2019, 11:00 AM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

بھوپال،10؍جون(ایس او نیوز؍یواین آئی) مدھیہ پردیش کے دارالحکومت بھوپال کے کملا نگر تھانہ علاقے میں 9 سالہ ایک بچی کا عصمت دری کے بعد قتل کردیاگیا ہے -اس معاملے میں اسسٹنٹ سب انسپکٹر (اے ایس آئی)سمیت 7پولیس افسروں کو معطل کردیاگیا ہے -پولیس انسپکٹر جنرل یوگیش دیشمکھ نے بتایا کہ کملانگر علاقے کی رہنے والی ایک بچی کی لاش آج صبح نہرو نگر کے نزدیک انڈین انسٹی ٹیوٹ آف فاریسٹ مینجمنٹ(آئی آئی ایف ایم)کے سامنے ایک نالے کے کنارے سے برآمد کی گئی-بچی کل رات گھر کے پاس ایک دکان میں گئی تھی،اس کے بعد وہ گھر نہیں لوٹی-دیشمکھ نے بتایا کہ پوسٹ مارٹم رپورٹ کے مطابق پہلے بچی کی عصمت دری کی گئی اور بعد میں اسے گلا دباکر قتل کردیاگیا-پولیس نے بتایا کہ ملزم کی شناخت کرلی گئی ہے اور اس کے فون کی لوکیشن کی بنیاد پر اسے تلاش کیا جارہا ہے -پولیس کو امید ہے کہ جلد ملزم کو پکڑ لیا جائے گا-وہیں،اس معاملے میں ایک اے ایس آئی،دو حوالدار اور چار کانسٹیبلوں کو معطل کردیاگیا ہے -بتایا گیا ہے کہ کل رات بچی کے لاپتہ ہونے کے بعد اس کے گھروالے تھانے پہنچے اور اس کے لاپتہ ہونے کی اطلاع پولیس کو دی تھی -اس دوران مدھیہ پردیش کے وزیر داخلہ بالا بچن نے آج کا کہا کہ دارالحکومت بھوپال کے کملا نگر تھانہ علاقے میں ایک بچی کے عصمت دری کے بعد قتل کے ملزم کی شناخت کرلی گئی ہے اور اسے گرفتار کرکے سخت سے سخت سزا جلد از جلد دلانے کی کوشش ہوگی-بچن نے یہاں میڈیا سے کہا کہ ملزم کی شناخت کرلی گئی ہے -اسے پکڑنے کے لئے پولیس ٹیم ممکنہ علاقوں میں گئی ہے-انہوں نے کہا کہ اس معاملے میں لاپرواہی برتنے والے پولیس افسروں کے خلاف بھی کارروائی کی جارہی ہے -تقریباً آدھادرجن پولیس افسروں کو معطل کیاجاچکا ہے -اس دوران رابطہ عامہ کے وزیر پی سی شرما بھی کملا نگر تھانے علاقے میں واقع متاثرہ کے گھر پہنچ کر اس کے گھروالوں سے ملاقات کی-

انہوں نے موقع پر ہی پولیس افسروں کو ملزمین کے خلاف سخت کارروائی کی ہدایت دی-وہیں اس معاملے میں متاثرہ کے گھروالوں نے الزام لگایا ہے کہ بچی کے گمشدہ ہونے کی اطلاع کل رات نو بجے ہی پولیس کو دی گئی تھی،لیکن اس نے فوری طورپر کوئی کارروائی نہیں کی -

ایک نظر اس پر بھی

نچلی عدالت نے چار ملزمین کو عمر قید اور ایک ملزم کو باعزت بری کیا، جمعیۃ علماء نچلی عدالت کے فیصلہ کو ہائی کورٹ میں چیلنج کرے گی:گلزاراعظمی

14 سالوں کے طویل انتظار کے بعدآج الہ آباد کی خصوصی عدالت نے رام جنم بھومی (ایودھیا دہشت گردانہ حملہ) معاملے میں اپنا فیصلہ سنایا اور پانچ میں سے ایک جانب جہاں چار ملزمین کو عمر قید کی سزا دی وہیں ناکافی ثبوت وشواہد کی بنیاد پر ایک ملزم کو باعزت بری کردیا۔

علاج کے لئے منگلور جانے والے توجہ دیں: منگلورو اور اڈپی کے اسپتالوں میں کل 17جون کو او پی ڈی خدمات رہیں گی بند

 بھٹکل اور اطراف سے کافی لوگ  علاج معالجہ کے لئے پڑوسی ضلع اُڈپی اور مینگلور کے اسپتالوں کا رُخ کرتے ہیں،  ان کے لئے  بری  خبر یہ ہے کہ کل  ڈاکٹروں کے احتجاج کے پیش نظر  مینگلور اور اُڈپی کے اسپتالوں میں باہری  مریضوں  کا علاج  نہیں ہوگا۔

آئی ایم اے معاملہ میں نرم رویہ اختیار کرنے کاسوال پیدا نہیں ہوتا: ضمیر احمد خان

آئی مانیٹری اڈوائزری (آئی ایم اے) نامی پونزی کمپنی کے دھوکہ دہی معاملہ میں نرم رویہ اختیار کئے جانے کا سوال پیدا نہیں ہوتا۔ خصوصی تحقیقاتی ٹیم (ایس آئی ٹی) کی جانب سے تحقیقات جاری ہیں۔اس پس منظر میں بی جے پی کی جانب سے عائد کئے جارہے الزامات بکواس ہیں۔