عدلیہ نے منی لانڈرنگ معاملہ میں ویر بھدر سنگھ کے بیٹے کو طلب کیا 

Source: S.O. News Service | By Jafar Sadique Nooruddin | Published on 25th July 2018, 12:24 AM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

نئی دہلی:24/جولائی(ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا)دہلی کی ایک عدالت نے ہماچل پردیش کے سابق وزیر اعلی ویر بھدر سنگھ کے بیٹے وکرم آدتیہ اور دیگر کو منی لانڈرنگ کے ایک معاملے میں 27 اگست کو اس کے سامنے پیش ہونے کے لئے آج سمن بھیجا ہے ۔خصوصی جج اروند کمار نے منی لانڈرنگ معاملہ میں وکرم آدتیہ کے خلاف 21 جولائی کوای ڈی کی طرف سے دائر چارج شیٹ پر غور کیا۔ اس کیس میں ویر بھدر سنگھ بھی شامل ہیں۔ نتیش رانا اور این کے مٹا کی طرف سے دائر چارج شیٹ میں تارا نی انفراسٹکچر کے منیجنگ ڈائریکٹر واک ملا چندرشیکھر اور رام پرکاش بھاٹیہ نام کا ایک شخص بھی نامزد ہے۔ چندر شیکھر اور بھاٹیہ سی بی آئی کے معاملے میں بھی ملزم ہیں جس میں ویر بھدر سنگھ، ان کی بیوی پرتیبھا سنگھ اور دیگر کو بھی ملزم بنایا گیا ہے۔ای ڈی چارج شیٹ میں ویر بھدر سنگھ (83) اور ان کی بیوی پرتبھا سنگھ (62) کے علاوہ یونیورسل ایپل ایسوسی ایٹ کے مالک چنی لال چوہان ،ایل آئی سی ایجنٹ آنند چوہان اور دو دیگرملزمان پریم راج اور رلون کمار روچ کو بھی ملزم بنایا گیا ہے۔ ای ڈی کی طرف سے منی لانڈرنگ کی روک تھام قانون کی دفعات کے تحت نو جولائی 2016 کو گرفتار آنند چوہان کو اس معاملے میں دو جنوری کو ضمانت ملی تھی۔اس واقعہ سے متعلق سی بی آئی کے ایک اور کیس میں ویر بھدر سنگھ، اس کی بیوی اور چوہان کو دوسرے کے ساتھ چارج شیٹ میں نامزد کیا گیا ہے۔ سی بی آئی نے دعوی کیا تھا کہ ویر بھدر نے قریب دس کروڑ روپے کی جائیداد حاصل کی جو مرکزی وزیر کے طور پر ان کی مدت کے دوران ان کی کل آمدنی سے زیادہ تھی۔ 

ایک نظر اس پر بھی

جامعہ فیض ناصرمیں گزشتہ روز علماء کی زیر نگرانی طلباء وطالبات کا تعلیمی جائزہ

جامعہ فیض ناصر حضرت شیخ الاسلام کا لونی مملانا روڈ مظفر نگرمیں گزشتہ روز علماء کی زیر نگرانی طلباء وطالبات کا تعلیمی جائزہ لیا گیا واضح ہو کہ جامعہ فیض ناصر اپنے علاقہ کا وہ ادارہ ہے جو اکابر کی رہنمائی میں مسلسل ترقی کی راہ پر گامزن ہے موقع بموقع اکابرین علماء جامعہ میں قدم ...

ضلع شمالی کینرا میں جے ڈی ایس کا وجود نہیں ہے۔ آئندہ لوک سبھا میں کانگریس کا ہی امیدوار ہوگا۔ دیشپانڈے کا بیان

ریوینیو اور ضلع انچارج وزیر آر وی دیشپانڈے نے کہا ہے کہ ضلع شمالی کینرا میں جنتا دل ایس کا کوئی وجود نہیں ہے، بلکہ کانگریس پارٹی ضلع میں پوری طرح مستحکم ہے۔ اس لئے آئندہ لوک سبھا انتخاب میںیہاں سے کانگریس کا امیدوار ہی میدان میں اتارا جائے گا۔

جمعیۃعلماء مہاراشٹر کی مجلس عاملہ کی میٹنگ ؛ صوبائی سطح پر ممبر سازی کالیا گیا جائزہ؛ 2لاکھ ممبران بنانے کا نشانہ

جمعیۃعلماء ہند کے نئے ٹرم کی ممبر سازی پورے ملک میں جوش و خروش سے جاری ہے، اور اس کے لئے ماہ اکتوبر کے اختتام کو آخری حد مقرر کیا گیا ہے،جمعیۃعلماء مہاراشٹر کے کارکنان بھی پوری دلجمعی کے ساتھ ممبر سازی مہم میں لگے ہوئے ہیں ۔

شیوراج حکومت جادو دکھاکر جیتیں گے عوام کا دل

مدھیہ پردیش میں بی جے پی کو مسلسل چوتھی بار اقتدار میں واپسی کے لئے شیوراج حکومت اب جادوگروں کا سہارا لینے کی تیاری میں ہے۔’’ میجک اسپیل‘‘ کے اس یونیک قدم سے شیوراج حکومت عوام کے دل جیتنے کی کوشش کرتی نظر آ سکتی ہے۔ پی بی جے پی کے ترجمان رجنیش اگروال نے اس کی تصدیق کی ہے۔رجنیش ...

ضلع شمالی کینرا میں جے ڈی ایس کا وجود نہیں ہے۔ آئندہ لوک سبھا میں کانگریس کا ہی امیدوار ہوگا۔ دیشپانڈے کا بیان

ریوینیو اور ضلع انچارج وزیر آر وی دیشپانڈے نے کہا ہے کہ ضلع شمالی کینرا میں جنتا دل ایس کا کوئی وجود نہیں ہے، بلکہ کانگریس پارٹی ضلع میں پوری طرح مستحکم ہے۔ اس لئے آئندہ لوک سبھا انتخاب میںیہاں سے کانگریس کا امیدوار ہی میدان میں اتارا جائے گا۔

کمٹہ: پجاری وشویشورا بھٹ کے قتل کی سازش پہلے بھی رچی گئی تھی؛ پولس کی تحقیقات جاری

حال ہی میں کمٹہ مندر کے پجاری وشویشورا بھٹ کے قتل سے متعلق تحقیقات کے دوران یہ بات سامنے آئی ہے کہ اپنے خون کے رشتے دار پر بھروسہ ہی ان کے قتل کا سبب بنا ہے، کیونکہ انہیں نئی خریدی گئی زمین کی شدھی کرنے کی پوجا انجام دینے کے بہانے مرور کی طرف بلاکر لے جانے والا کوئی اجنبی نہیں ...

بھٹکل میں طبی سہولیات کا ایک جائزہ؛ تنظیم میڈیا ورکشاپ میں طلبا کی طرف سے پیش کردہ ایک رپورٹ

مجلس اصلاح و تنظیم بھٹکل کی جانب سے منعقدہ پانچ روزہ میڈیا ورکشاپ میں جو طلبا شریک ہوئے تھے، اُس میں تین تین اور چار چار طلبا پر مشتمل الگ الگ ٹیموں کو شہر بھٹکل کے مختلف مسائل کا جائزہ لینے اور اپنی رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت دی گئی تھی، اس میں سے ایک  ٹیم جس میں  حبیب اللہ محتشم ...