سنیل چھتری نے اپنے 100 ویں میچ میں دو گول داغے، ٹیم انڈیا 0-3 سے کامیاب

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 5th June 2018, 12:21 PM | اسپورٹس |

ممبئی،4؍جون(ایجنسی) ہندوستانی فٹبال ٹیم کے کپتان سنیل چھتری نے اپنے 100 ویں میچ میں دو گول داغے، جس سے ہندوستان نے انٹر کانٹینیٹل کپ فٹبال ٹورنامنٹ میں پیر کو کینیا کو 0-3 سے شکست دے کر فائنل میں اپنی جگہ یقینی کرلی۔

ہندوستان کی ٹیم اس جیت سے دو میچوں میں دو جیت کے ساتھ 6 پوائنٹ حاصل کرکے ٹاپ پر ہے. کینیا نے دو میچوں میں ایک شکست اور ایک جیت سے تین پوائنٹ ہیں اور وہ دوسرے مقام پر ہے۔

میچ کی شروعات تیز بارش کے درمیان ہوئی اور دونوں ٹیموں کے کھلاڑیوں کو پریشانی کا سامنا کرنا پڑا. ہندوستان کی طرف سے پہلی اچھی کوشش ساتویں منٹ میں ادانتا سنگھ نے کی. وہ بائیں طرف سے آگے بڑھے، لیکن باکس کے اندر ان کا کراس کافی سست رہا. جسے مخالف گول کیپر پیٹرک نے آسانی سے اپنے قبضے میں لے لیا۔

کینیا نے اس کے بعد پلٹ وار کیا. لیکن گول نہیں بناسکے. ہندوستان کو 14 ویں منٹ میں فری کک ملا لیکن ابرودھ تھاپا نے اسے سیدھے متاسی کے ہاتھوں میں دے دیا۔

دلچسپ میچ میں سنیل چھتری نے 68 ویں منٹ میں گول کرکے میزبان ٹیم کو 0-1 سے آگے کردیا. یہ چھتری کا 60 واں بین الاقوامی گول تھا۔

اس کے بعد جے جے لال پیکھلوا نے گول کیا اور ہندوستان کی سبقت 0-2 کی ہوگئی. سنیل چھتری نے اس کے بعد انجری ٹائم کے پہلے منٹ میں ایک اور گول کرکے ہندوستان کی 0-3 کی جیت کو یقینی بنادیا۔

واضح رہے کہ سنیل چھیتری نے اپنے ویڈیو پیغام میں کہا تھا کہ ان سبھی لوگوں کو، جن کو ہندوستانی فٹبال  سے امیدیں ختم ہوگئی ہیں، یا کوئی امید ہی نہیں ہے، ان سبھی سے ہم اسٹیڈیم آنے کی گزارش کرتے ہیں۔ انٹرنیٹ پر مذاق اڑانا یا تنقید کرنا زیادہ دلچسپ نہیں ہے، اسٹیڈیم آکر ہم پر چلّائیے۔ کینیا کے خلاف سنیل چھیتری بھارت کی جرسی میں اپنا 100 واں میچ بھی کھیلیں گے۔ وہ ہندوستان کے لئے 100 میچ کھیلنے والے دوسرے فٹبال کھلاڑی ہیں۔ چھیتری سے قبل سابق کپتان بائچنگ بھوٹیا نے اپنے ملک کے لئے 100 میچ کھیلے تھے۔

ایک نظر اس پر بھی

آئی پی ایل 2019:کولکاتہ نائٹ رائیڈرس نے تیز گیندباز مچل اسٹارک کا معاہدہ ختم کردیا 

آسٹریلیا کے تیز گیند باز مچل اسٹارک نے کہا کہ انڈین پریمیئر لیگ ٹیم کولکاتا نائٹ رائڈرس نے انہیں ٹیم سے ریلیز کر دیا ہے۔ انہیں اس کی معلومات ٹیم کے مالکان کی جانب سے ایس ایم ایس کے ذریعہ ملی۔