شرنگیری:پولس تھانےمیں کیس درج ہونے کو لے کر بی کام کے متعلم ، اے بی وی پی کارکن نےکی خود کشی

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 12th January 2017, 12:14 AM | ساحلی خبریں |

چکمگلور:11/جنوری  (ایس او نیوز)نمو برگیڈ کے سولی بیلے چکرورتی پروگرام کو لے کر پولس تھانے میں درج ہوئے کیس میں بطور ملزم اپنا نام پیش ہونے پر دلی  بیزار گی کا اظہار کرتے ہوئے اے بی وی پی کے ایک کارکن، بی کام کے طالب علم نے خودکشی کرنے کی واردات چکمگلور ضلع شرنگیری میں پیش آئی ہے۔

مہلوک اے بی وی پی کارکن کی شناخت  شرنگیری جے سی بی ایم کالج شعبہ بی کام کے طالب علم ابھیشک (21)بتائی گئی ہے۔موصولہ اطلاعات کے مطابق7جنوری کو شرنگیری میں شہید فوجیوں کی یاد میں  ’’ فوجیوں کو سلام ‘‘ نامی منعقدہ پروگرام میں نمو برگیڈ کے سولی بیلے چکرورتی کو شریک ہونا تھا۔ لیکن این ایس یو آئی نامی طلبا تنظیم نے سولی بیلے چکرورتی کی پروگرام میں شرکت کی مخالفت کرتے ہوئے پریس کانفرنس کی تھی۔ اسی وجہ سے اے بی وی پی اور این ایس یو آئی کارکنان کے درمیان جھگڑا بھی ہوا تھا۔ معاملے کو شرنگیری پولس تھانے میں اے بی وی پی کے 4کارکنوں کے خلاف کیس درج ہواتھا، ان چار کارکنوں میں ایک ابھیشک بھی ہونے کی اطلاع موصول ہوئی ہے۔ اپنے ڈیتھ نوٹ میں ابھیشک نے لکھا ہے کہ معاملے کو لے کر داخل ہوئے کیس میں میرانام ہونے کی وجہ سے میری زندگی برباد ہوگئی ۔ شرنگیری پولس تھانےمیں کیس درج ہوا ہے۔ ابھیشک کی خود کشی کو لے کر اے بی وی پی کے کارکنان شرنگیری تعلقہ کے کالجوں کے طلبا کلاسوں کا بائیکاٹ کرتے ہوئے احتجاج پر اتر آئے ہیں۔ احتجاجیوں نے ابھیشک خود کشی کے لئے وجہ سبب بننے والوں کے خلاف کارروائی کا مطالبہ کیا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

مینگلور بند منانے والے، کیرالہ کے وزیراعلیٰ کی جوتیوں کے برابر بھی نہیں ہیں؛ ہندو شدت پسندتنظیموں پر یو ٹی قادربرس پڑے

وزیر غذا جناب یوٹی قادر نے وارتھا بھارتی ڈیلی میڈیا سنٹر کے لانچنگ پروگرام ہندو شدت پسند تنظیموں کی جانب سے مینگلور بند کرنے اور کیرالہ وزیراعلیٰ کی آمد کی مخالفت کرنے پر اُن تنظیموں کو آڑے ہاتھ لیا اور خوب برستے ہوئے  کہا کہ جن لوگوں نے فرقہ وارانہ ہم آہنگی ریالی کے خلاف ...

جے ڈی نائک کے گھر پہنچے ایم پی اننت کمار ہیگڈے؛ کیا وہ شادی کی مبارکبادی دینے پہنچے تھے یا بی جے پی میں شامل ہونے کی دعوت دینے ؟

سابق رکن اسمبلی ، کانگریس لیڈر جے ڈی نائک کے گھر سنیچر کی شام اترکینرا کے رکن پارلیمان اننت کمار ہیگڈے نے ملاقات کرتے ہوئے جے ڈی نائک کے بیٹے ڈاکٹر بھرت کو شادی  رچانے پر مبارکبادی پیش کی ۔

کاروار میں  کرناٹکا مادھیما اکیڈمی کے زیر اہتمام خاتون صحافیوں کے مسائل اور مواقع پر  سمینار

مارچ 6اور 7کو کرناٹکا مادھیما اکیڈمی اور محکمہ اطلاعات کے اشتراک سے ریاستی خاتون یونیورسٹی میں خاتون صحافیوں کے متعلق ’’ خاتون صحافی۔مسائل ، چیلنجس اور مواقع ‘‘ کے عنوان پر مذاکرے کا اہتمام کیا گیا ہے۔

ویلفئیر پارٹی کے زیراہتمام ضلعی سطح کے مضمون نویسی مقابلے میں پریتی کامت اول

ویلفئیر پارٹی آف انڈیا اترکنڑا ضلعی شاخ کے زیر اہتمام یوتھ اجلاس کی مناسبت سے منعقدکئے گئے ’’ نوجوانون  کی بیداری ۔ ملک کی ترقی ‘‘ ضلعی سطح کے مضمون نویسی مقابلے میں کاروار کی پریتی ونایک کامت نے پہلا انعام حاصل کیاہے۔ بھٹکل ودیا بھارتی ہائی اسکول کی ہشتم جماعت کے متعلم ...

بھٹکل: طلبا کے درمیان مطالعہ کتب کا شوق پیدا کرنے کے لئے ’’ میری مطالعہ کردہ کتاب ‘‘ نامی انوکھا مقابلہ

تعلقہ کنڑا ساہتیہ پریشد کی جانب سے سرکاری کنڑا ماڈل بائز اسکول  طلبا کے درمیان کتابوں کا تعارف کرنے کے سلسلے میں  ’’ میری مطالعہ کردہ کتاب ‘‘ نامی ایک انوکھا مقابلہ  منعقد کیا گیا۔