کمٹہ کے ایک ہوٹل مالک نے ذہنی اپاہج پر پھینکا گرم پانی ؛ شخص بری طرح زخمی

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 18th May 2017, 12:11 PM | ساحلی خبریں |

کمٹہ:18/مئی (ایس اؤنیوز)ذہنی عدم توازن کا شکارایک معمرشخص پر ہوٹل مالک کی جانب سے گرم پانی پھینکے جانے کی واردات  منگل کی دیر رات پیش آئی ہے۔

ذرائع سے ملی اطلاع کے مطابق تعلقہ کے باڈ دیہات کے سریش رام نائک (55)وہ ذہنی اپاہج شخص ہے جو ہوٹل مالک کے ظلم کا شکار ہواہے۔ کمٹہ نئے بس اسٹانڈ کے سامنے بدھ کی صبح سریش زخموں سے تڑپ رہا تھاتومقامی عوام نے توجہ دی اور علاج کے لئے کمٹہ سرکاری اسپتال میں داخل کیا۔ چالوکیہ ہوٹل مالک اور باڈ گرام پنچایت کے نائب صدر روی کانت نائک پر الزام لگایا گیا ہے کہ اسی نے اس شخص پر گرم پانی پھینک کر ذہنی اپاہج شخص پر ظلم ڈھایا ہے۔ گرم پانی پھینکے جانے سے جسم پر جہاں تہاں جلے ہوئے زخم دیکھے گئے ہیں۔ اسپتال میں زیر علاج سریش نائک کے مطابق ہوٹل مالک روی کانت نائک کے خلاف مقامی پولس تھانے میں کیس درج کرلیا گیا ہے اور جانچ جاری ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل میونسپالٹی عمارت پر پتھرائو کا معاملہ؛ بی جے پی لیڈرس گوند نائک اور کرشنا نائک سمیت چارگرفتار

 بھٹکل میونسپالٹی عمارت پر پتھرائو ، توڑپھوڑ اور پولس عملہ پر حملہ کے تعلق سے پولس نے ایک بڑی کاروائی کرتے ہوئے بی جے پی لیڈر گوند نائک کو آج  گرفتار کرلیا ہے۔ ذرائع سے ملی اطلاع کے مطابق پولس  ہبلی کے ایک مکان سے تین لوگوں کو گرفتار کرنے میں کامیاب ہوئی ہے، جبکہ ایک سنگھ کا ...

بھٹکل میونسپالٹی عمارت پر پتھراؤ اور توڑپھوڑ کے معاملے میں مزید 2گرفتار : گرفتاریوں کی تعداد بڑھ کر اب 9

بھٹکل میونسپالٹی عمارت پر ہوئے پتھراؤ اور توڑپھوڑ کے معاملے میں پولس نے مزید دو لوگوں کو گرفتارکرلیا ہے، جس کے ساتھ ہی اس معاملہ میں گرفتارشدگان کی تعداد اب 9ہوگئی ہے۔

بھٹکل میونسپالٹی عمارت پر پتھرائو کا معاملہ؛ایم پی شوبھا کرندلاجے نے پولس سے کہا؛ بی جے پی کارکنان کی گرفتاری بند کی جائے؛ لیڈران کو گرفتار کرنے کی صورت میں دی دھمکی

بی جے پی لیڈر شوبھا کرندلاجے نے آج منگل کو بھٹکل ٹائون پولس تھانہ پہنچ کر بھٹکل ڈی وائی ایس پی سے نہایت ترش لہجہ میں کہا کہ وہ بی جے پی کارکنان کی گرفتاری کا سلسلہ فوری طور پر بند کرے۔ شوبھا نے کہا کہ پولس نے اب تک 9 لوگوں کو گرفتار کیا ہے، اگر پولس مزید لوگوں کو گرفتار کرتی ہے تو ...