ہبلی۔دھارواڑ سینٹرل اسمبلی حلقہ کے نتائج پر روک؛ کیا مشین میں گڑبڑی کی شکایت درست نکلی ؟بی جے پی کے جگدیش شٹر کی جیت کا ہوا تھا اعلان

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 16th May 2018, 1:14 AM | ریاستی خبریں | ملکی خبریں |

بھٹکل 15/مئی (ایس او نیوز) کرناٹک اسمبلی انتخابات میں ایک طرف بی جے پی بڑی پارٹی بن کر سامنے آئی ہے وہیں شکست کھانے والے کئی کانگریسی اُمیدواروں نے الیکٹرانک ووٹنگ مشین کو اپنی ہار کا ذمہ دار ٹہرارہے ہیں، ایسے میں ہبلی ۔دھارواڑ سینٹرل اسمبلی حلقہ سے خبر موصول ہوئی ہے کہ یہاں کی الیکٹرانک ووٹنگ مشین میں جتنے ووٹ ڈالے گئے تھے، اُس سے زیادہ ووٹ مشین نے  شو کئے ہیں، جس کو دیکھتے ہوئے یہاں بی جے پی کی جیت کا اعلان ہونے کے بعد اُس پر روک لگادی گئی ہے۔

ذرائع سے ملی اطلاع کے مطابق ہبلی۔دھارواڑسینٹرل حلقہ میں بی جے پی اُمیدوار جگدیش شٹر کی جیت کا اعلان کیا گیا تھا، جس پر  کانگریسی اُمیدوار ڈاکٹر مہیش   نالواڈ   نے الیکشن آفسر سے الیکٹرانک ووٹنگ مشین کی شکایت کی، کاروائی کرتے ہوئے جب   پولنگ بوتھ نمبر 152 (A) کی الیکٹرانک ووٹنگ مشین کی جانچ کی گئی تو  مشین میں 207 ووٹ کم پائے گئے ، حالانکہ   وی وی پیاڈ نے مشین کے مقابلے میں 207 ووٹ زائد دکھادئے، جس کو دیکھتے ہوئے  الیکشن آفسر نے یہاں بی جے پی اُمیدوار کی جیت پر روک لگادی ہے۔

ڈاکٹر مہیش نالواڈ نے  انتخابی نتائج سے ناراض ، اپنے شکایتی خط میں  الیکشن آفسر سے  اس بات کا بھی مطالبہ کیا ہے کہ بیلٹ پیپر کے ذریعے دوبارہ انتخابات کرائے جائیں۔

بتایا گیا ہے کہ اس تعلق سے  متعلقہ علاقہ کے الیکشن آفسر ریاستی الیکشن آفسر سے  واقعے کے تعلق سے جانکاری دیں گے اور اُن سے ملاقات کے بعد اگلی کاروائی کریں گے۔

خیال رہے کہ ہبلی۔دھارواڑ اسمبلی حلقہ کے انتخابی نتائج پر روک لگانے کے بعد ریاست میں بی جے پی کی سیٹوں کی تعداد 104 سے گھٹ کر اب 103 ہوگئی ہے۔

واضح رہے کہ مینگلور ، بھٹکل اور کمٹہ کے کانگریسی اُمیدواروں نے بھی اپنی ہار پر تبصرہ کرتے ہوئے ان مشینوں پر ہی الزام لگایا ہے اور ان اُمیدواروں نے اپنی ہار پر سخت ناراضگی ظاہر کرتے ہوئے الیکشن آفسران سے  مشین کی جانچ کرنے اور ووٹوں کی دوبارہ گنتی کرانے کا مطالبہ کیا ہے۔ یاد رہے کہ الیکٹرانک ووٹنگ مشین پر یوپی اور بہار میں ہوئے انتخابات کے موقع پر بھی سوالیہ نشان لگ چکے ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

سائبر سیکورٹی کے نظام کو مستحکم کرنا ضروری 

دہشت گرداانہ حملوں اور سماج دشمن سرگرمیوں پر نظر رکھنے کے لئے جدید ترین ٹیکنالوجی کا استعمال کرتے ہوئے سائبر سیکورٹی قائم کی جارہی ہے جو کہ اس شعبے میں ہندوستان کی ایک اہم پیش رفت ہے۔

شرورمٹھ کے سوامی کی موت کثرت شراب نوشی اور ناجائز تعلقات کا نتیجہ ؟معاملہ کی تحقیقات اور جانچ کیلئے 7ٹیمیں تشکیل 

اڈپی شرورمٹھ کے سوامی لکشمی ورتیرتھ سوامی جی کی مشتبہ حالات میں ہوئی موت پر انہیں قتل کیے جانے کاشبہ ظاہر کیاگیاتھا جس کے نتیجہ میں اڈپی ضلع ایس پی نے اس معاملہ کی ہر زاویہ سے جانچ کے لیے پولیس کی 7ٹیمیں تشکیل دی گئی ہیں ۔ شرور علاقہ میں یہ افواہیں بھی اڑائی جارہی ہیں کہ سوامی ...

وزیر اعظم کی کسان بہبود ریلی کا ہفتہ کو انعقاد 

وزیر اعظم نریندر مودی کل شاہ جہاں پور میں کسان بہبود ریلی سے خطاب کریں گے۔ اس دوران وہ کسانوں کے لیے کئی اعلانات کر سکتے ہیں۔ وزیر اعظم کے سرکاری پروگرام کے مطابق مودی کل دہلی سے بریلی واقع اتر ترشول ہوائی اڈے پر اتریں گے اور وہاں سے ہیلی کاپٹر سے دوپہر 12 بج کر 20 منٹ پر روضہ واقع ...

وزیر اعظم مودی آئندہ ہفتہ جنوبی افریقہ سمیت کئی ممالک کے دورے پر

وزیر اعظم نریندر مودی اگلے ہفتے 23 سے 27 جولائی تک روانڈا، یوگنڈا اور جنوبی افریقہ کے دورے پر جائیں گے۔ جنوبی افریقہ کے دورے کے دوران وہ برکس کانفرنس میں بھی حصہ لیں گے جس میں بین الاقوامی امن اور سلامتی سمیت کئی عالمی مسائل پر بات چیت متوقع ہے۔وزارت خارجہ کے سکریٹری نے صحافیوں ...

عدم اعتماد تحریک میں مودی حکومت کو ملی بڑی کامیابی، اپوزیشن کواُٹھانی پڑی سخت ہزیمت

اپوزیشن کانگریس کو آج جمعہ کو اُس وقت سخت حزیمت کا سامنا کرنا پڑا، جب لوک سبھا میں ​عدم اعتماد کی تحریک پر 12 گھنٹے کی بحث کے بعد مودی حکومت نے اعتماد کا ووٹ حاصل کرلیا۔ عدم اعتماد کی تحریک کی مخالفت میں اور مودی حکومت کی حمایت میں 325 ووٹ پڑے جبکہ عدم اعتماد کی تحریک کی ...

نئی دہلی میں چھ ستمبر کو ہو گی پہلی امریکہ ۔بھارت مذاکرات: امریکی وزارت خارجہ

طویل انتظار اور بار بار تاریخ مقرر کرنے کے بعد بالآخر امریکہ اور بھارت کے درمیان پہلی مذاکرات چھ ستمبر کو نئی دہلی میں ہونی طے ہوئی ہے۔امریکہ نے ناگزیر وجوہات کا حوالہ دیتے ہوئے گزشتہ ماہ مذاکرات ملتوی کر دی تھی۔ مذاکرات بھارت اور امریکہ کے وزیر اور وزرائے دفاع کے درمیان ہونے ...

ہیلی کاپٹر اسکینڈل میں ای ڈی کے چارج شیٹ پر عدالت 23 جولائی کو کرے گی غور

دہلی کی ایک عدالت نے وی وی آئی پی ہیلی کاپٹر رشوت معاملے میں ای ڈی کی طرف سے دائر چارج شیٹ پر 23 جولائی کو نوٹس لے گی ۔ خصوصی جج اروند کمار نے تفتیشی افسر کے موجود نہ ہونے کا نوٹس لیتے ہوئے معاملے کو پیر کے لئے درج کر دیا ہے۔ ای ڈی نے کہا کہ اس نے تمام ملزمان کے خلاف الزامات کی حمایت ...