پارٹی ضابطے کی خلاف ورزی کا الزام ۔الیکشن سے پہلے ہی ضلع شمالی کینرا میں گرے بی جے پی کے چار وکٹ !

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 12th January 2018, 11:16 PM | ساحلی خبریں |

کاروار12؍جنوری (ایس او نیوز)پارٹی ڈسپلن کی خلاف ورزی کرنے کے الزام میں بی جے پی نے ضلع سطح کے اپنے چار اہم لیڈروں کے خلاف تادیبی کارروائی کی ہے اور انہیں پارٹی سے معطل کرنے کے احکامات جاری کیے ہیں۔

تادیبی کارروائی کی زد میں آنے والوں میں بی جے پی کے سابق ضلعی صدر پرساد کاروارکر، دیہی منڈل صدر راجن کولمبکر، ضلع سکریٹری پورنیما مہیکر اور ضلع کے خصوصی مدعو ناگراج جوشی کانام شامل ہے۔ پارٹی کے ضلعی صدر کے جی نائک نے بتایا کہ ان چاروں نے بی جے پی لیڈر وکرم آدتیہ پر بے بنیاد الزامات لگائے تھے، جس کی پاداش میں انہیں معطل کردیا گیا ہے۔ان کی جگہ پر متعلقہ عہدوں پر دوسرے لیڈروں کو فائز کرنے کے احکامات بھی جاری ہوئے ہیں۔

پریس کانفرنس کے دوران کے جی نائک نے اپنے بعض اراکین کے غیر ذمہ دارانہ بیانات اور رویے کی تفصیل بتاتے ہوئے کہا کہ نیشنل اور ریجنل پارٹیوں میں اندرونی مسائل کا ہونا عام بات ہے۔ان مسائل کو اپنے سینئر قائدین کے علم میں لاکر حل کیا جاناچاہیے ۔ اس سے ہٹ کر جھوٹے الزامات لگانا اور بیانات جاری کرنا غلط بات ہے۔ان چاروں نے جس قسم کے الزامات اوربیانات جاری کیے ہیں اس میں سچائی نہیں ہے اور اس سے بی جے پی کے وقار پر حرف آنے اور کلنگ لگانے کاکام ہوا ہے۔

ریاستی انتخابات اگلے چار مہینوں میں ہونے جارہے ہیں۔ سیاسی پارٹیاں ایک دوسرے پر کیچڑ اچھالنے کی کارروائی کا آغاز بھی کرچکی ہیں۔ایسے موقع پر بی جے پی کی طرف سے تادیبی کارروائی اور اپنے چار اہم لیڈروں کی معطلی سے ضلعی سطح پر پارٹی کے اندر تفریق اور انتشار کا آغاز ہونے کے امکانا ت بھی پیدا ہوگئے ہیں۔اور اس کے نتیجے میں انتخابات کے دن قریب تر ہونے تک اور بہت سارے موڑ آنے کا اندیشہ اپنی جگہ برقرار ہے۔ کیونکہ ایک سابق ضلع صدر کو تادیبی کارروائی کرتے ہوئے معطل کرنا ضلع میں بی جے پی کی تاریخ میں پہلا موقع بتایا جاتا ہے۔
 

ایک نظر اس پر بھی

22نومبر کووزیر اعظم نریندرمودی کے ہاتھوں رکھا جائے گا ’سٹی گیس ‘ کا سنگ بنیاد۔ منصوبے میں منگلورو شہر بھی شامل

مرکزی حکومت کی اسکیم’سٹی گیس‘ کا سنگ بنیاد وزیر اعظم نریندر مودی ہاتھوں22نومبر کو شام 4بجے نئی دہلی کے وگیان بھون میں رکھا جائے گا۔ اس منصوبے کے تحت آئندہ رسوئی گیس سلینڈروں کے بجائے براہ راست پائپ کنکشن کے ذریعے گھر گھر پہنچائی جائے گی۔

کاروار میں اترکنڑا ماہی گیروں کی جانب سے احتجاج کے بعد گوا حکومت پربڑھ گیا مچھلی کی درآمد پر لگائے گئے نئے قانون کو ہٹانے کا دبائو

کاروار میں اترکنڑا ماہی گیروں کی جانب سے احتجاج کے بعد گوا حکومت  مچھلی کی درآمد پر لگائے گئے نئے قانون کو ہٹانے کا دبائو بڑھ گیا ہے۔ کاروار میں ہوئے  سخت احتجاج کو دیکھتے ہوئے پیر کو گوا کے پنجی میں آل انڈیا فشرمین کانگریس (AIFC) اور گوا بوٹ یونین کے درمیان مسئلہ کے حل کے لئے ...

ضلع اُترکنڑا میں 23،24،25 نومبر کو ووٹرلسٹ میں ناموں کے  اندراج کے لئےچلائی جائے گی خصوصی مہم : کاروار میں ڈپٹی کمشنر ایس ایس نکول کا بیان

ہندوستانی الیکشن کمیشن کی ہدایات کے مطابق 23،24اور 25نومبر کو اترکنڑا ضلع میں ووٹرس کے نام اندراج کے لئے خصوصی مہم کا اہتمام کئے جانے کی اطلاع ڈپٹی کمشنر ایس ایس نکول نے دی۔