کرناٹک کے ضلع گدگ میں ماں نے اپنے بچوں کی تعلیم کے لئے ٹی وی خریدنے کے لئے "منگلسوتر" بیچ دیا

Source: S.O. News Service | Published on 2nd August 2020, 10:22 PM | ریاستی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

گدگ،2؍اگست(ایس او نیوز؍ایجنسی) ریاست کرناٹک کے ضلع گدگ کی ایک خاتون نے کووڈ 19 وباء کے درمیان ٹی وی کے ذریعے کلاس جاری رکھنے کے کرناٹک حکومت کے فیصلے کے بعد اپنے بچوں کے لئے ٹیلی ویژن سیٹ خریدنے کے لئے اپنا "منگلسوتر" فروخت کر دیا۔ کستوری نامی خاتون جو دو بچوں کی ماں ہیں ، نے اپنا "منگلسوتر" بیچ کر ایک ٹیلی ویژن سیٹ 20،000 میں خریدا۔ اس ماں نے یہ فیصلہ اس وقت لیا جب بچوں کے اسکول کے اساتذہ نے انہیں ٹیلی ویژن سیٹ کے ذریعے کلاس لینے کو کہا۔ کستوری نے میڈیا کو بتایا ، "میں روزانہ بچوں کو ہمسائے کے گھر نہیں بھیج سکتی تھی اور ان کے لئے تعلیم حاصل کرنا ضروری تھا۔ ہمارے پاس ٹی وی سیٹ خریدنے کے سوا اور کوئی آپشن نہیں تھا۔

کستوری کا کہنا ہے کہ "میں اور میرے شوہر ہم دونوں روزانہ مزدوری کر کے خانے والے لوگ ہیں اور کورونا وائرس کے دوران ہمارے پاس کام یا رقم نہیں ہے۔" کستوری نے خوشی کا اظہار کرتے ہوئے کہا ، "میں نے اپنے" منگلسوتر کو 20،000 روپے میں بیچا اور ایک ٹی وی 14،000 روپے میں خریدا ، "اب ، میرے بچے گھر میں ہی تعلیم حاصل کرسکتے ہیں۔"

کستوری کی بیٹی نے کہا ، "ہمارے پاس کئی مہینوں سے ٹی وی نہیں تھا لیکن اب جب ہمارے پاس یہ آگیا ہے ، تو ہم خوب پڑھیں گے اور اپنی والدہ کے لئے ایک اچھا 'منگلسوتر' خریدیں گے۔"

ایک نظر اس پر بھی

کانگریس اور جے ڈی ایس لینڈریفارم ترمیمی ایکٹ کی سخت مخالف، کسانوں کے حقوق اورزمین کی حفاظت کیلئے جدوجہدکریں گے:سدارامیا

کسانوں کے حقوق کے ساتھ ان کی زمینوں سے بھی بے دخل کرنے پرآمادہ ریاستی حکومت کے لینڈریفارم ایکٹ کے ترمیمی مسودہ کے خلاف اسمبلی سیشن میں نہایت سختی کے ساتھ آوازاٹھائیں گے۔

یلاپورمیں بھیانک سڑک حادثہ؛ لاری کی ٹکر میں کار پر سوار چاروں لوگ ہلاک

 ضلع اُترکنڑا کے یلاپور نیشنل ہائی وے پر ہوئے ایک بھیانک سڑک حادثے میں ایک ہی خاندان کے چار افراد جائے وقوع پر ہی ہلاک ہوگئے جن کی شناخت  روی نائر (58)، پشپا روی نائر (55)، ہریندرناتھ نائیر (62) اور پدماکشی نائیر (86) کی حیثیت سے کی گئی ہے۔

مودی-نتیش قسم کسانوں کی کھاتے ہیں اور دوستی سرمایہ داروں سے نبھاتے ہیں: کانگریس

کانگریس جنرل سکریٹری اور پارٹی کے میڈیا سیل انچارج رندیپ سنگھ سرجے والا نے جمعرات کو پٹنہ میں زرعی بلوں کو لے کر مرکزی حکومت اور حکومت بہار کے خلاف محاذ کھولتے ہوئے کہا کہ مودی جی اور نتیش بابو قسم کسانوں کی کھاتے ہیں اور دوستی مٹھی بھر سرمایہ داروں سے نبھاتے ہیں۔