کانگریس کے لیے کام کرنے والی ڈیجیٹل کمپنی پر انکم ٹیکس کا چھاپہ

Source: S.O. News Service | Published on 18th October 2021, 12:08 PM | ریاستی خبریں | ملکی خبریں |

نئی دہلی،18؍ اکتوبر (آئی این ایس انڈیا)  انکم ٹیکس ڈیپارٹمنٹ نے ملک کی اہم اپوزیشن پارٹی کانگریس کے لیے آسام اور دیگر ریاستوں میں الیکشن مینجمنٹ اور ڈیجیٹل مارکیٹنگ کرنے والی کمپنی ڈیزائن باکسڈ پر چھاپہ مارا ہے۔انکم ٹیکس حکام نے چندی گڑھ، موہالی، سورت اور بنگلور میں واقع کمپنی کے سات مقامات کی تلاشی لی ہے۔ اس کے علاوہ کمپنی کے ایم ڈی کے ہوٹل کے کمرے کی بھی تلاشی لی گئی ہے۔انکم ٹیکس ڈیپارٹمنٹ کی جانب سے جاری کردہ ایک ریلیز میں کہا گیا ہے کہ چھاپے کے دوران بہت سی مجرمانہ دستاویزات برآمد ہوئی ہیں جن میں بے حساب آمدنی اور جائیدادوں کی منتقلی کے ثبوت موجود ہیں۔انکم ٹیکس ڈیپارٹمنٹ کے مطابق کمپنی ایک انٹری آپریٹر کے ذریعہ رہائش کا اندراجکر رہی تھی۔ کمپنی پر حوالہ کے ذریعے کاروبار کرنے کا الزام بھی لگایا گیا ہے۔محکمہ کے مطابق کمپنی نے ٹیکس چوری کے مقصد سے آمدنی کو کم دکھایا ہے اور جان بوجھ کر اخراجات میں اضافہ کیا ہے۔ یہ گروپ بے حساب نقد ادائیگیوں میں بھی ملوث پایا گیا ہے۔محکمہ کے مطابق چھاپوں سے برآمد ہونے والی دستاویزات میں یہ بھی پایا گیا ہے کہ کمپنی کے ڈائریکٹرز کے ذاتی اخراجات بھی کمپنی کے کاروباری اخراجات کے طور پر درج کیے گئے ہیں۔ محکمہ کے مطابق ڈائریکٹروں اور ان کے پریوار کے ممبروں کے استعمال کیلئے لگژری گاڑیاں کمپنی کے ملازموں اور انٹری کرنے والوں کے نام پر خریدی  گئی ہیں۔ آئی ٹی کی چھاپہ ماری 12 اکتوبر کو کی  گئی تھی۔ 

ایک نظر اس پر بھی

جے ڈی ایس امیدواروں کی جیت کے ذریعے پارٹی کارکن اپنی طاقت کا مظاہرہ کریں: انیتاکمارسوامی

بنگلورو دیہی لوکل باڈیز حلقے سے ریاستی قانون ساز کونسل کیلئے ہورہے انتخابات کو جے ڈی ایس پارٹی نے سنجیدگی سے لیاہے اور اس انتخابات میں پارٹی امیدواروں کوکامیاب کرکے پارٹی کارکنوں کو اپنی طاقت کا مظاہرہ کرناہوگا۔یہ بات رکن اسمبلی انیتاکمار سوامی نے کہی۔

منگلورو : طلبہ کے درمیان گروہی تصادم - کئی طلبہ ہوئے زخمی -  پولیس نے مارا ہاسٹل پر چھاپہ - 6 طالب علم گرفتار ۔ مقامی لوگوں کا احتجاج ۔ ہاسٹل خالی کروانے کا مطالبہ  

شہر کے ایک ڈگری کالج میں زیر تعلیم اور گوجرکیرے علاقے میں واقع ہاسٹل میں قیام پزیر طلبہ کے دو گروہ آپس میں لڑ پڑے جس کے نتیجے میں بعض طلبہ زخمی بھی ہوگئے ۔ مار پیٹ اور تصادم کی اطلاع ملنے پر پولیس نے دیر رات ہاسٹل پر چھاپہ مار کر کئی طالب علموں کو گرفتار کر لیا ۔

چامنڈی پہاڑ پر زمین کھسکنے کے واقعات: نندی مجسمے کے راستے کو پیدل چلنے والے راستہ میں تبدیل کرنے اپیل

گزشتہ چند دنوں سے میسورو ضلع میں مسلسل بارشوں کی وجہ سے میسور کے قریب واقع چامنڈی پہاڑ پر زمین کھسکنے کے واقعات پیش آرہے ہیں جس کی وجہ سے پہاڑ پر واقع چامنڈیشوری دیوی کے درشن کو پہنچنے والے زائرین کو کافی پریشانیوں کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔

بھیما کوریگاؤں معاملے کی ملزم سدھا بھاردواج کی مشکلات میں اضافہ، ضمانت کے خلاف سپریم کورٹ پہنچی این آئی اے

چھتیس گڑھ کی معروف سماجی کارکن اور وکیل سدھا بھاردواج کو ممبئی ہائی کورٹ کی طرف سے دی گئی ضمانت کے خلاف قومی تحقیقاتی ایجنسی (این آئی اے) نے سپریم کورٹ میں عرضی دائر کی ہے۔