کرناٹک میں کورونا اب چھ ہزار کے ہندسے کو بھی پار کرگیا؛ بنگلور میں پھر دو ہزار سے زائد معاملات؛ ریاست میں 83 لوگوں نے گنوائی جان

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 31st July 2020, 1:12 AM | ریاستی خبریں |

بنگلور 30 جولائی (ایس او نیوز) ریاست کرناٹک میں کورونا  کے معاملات میں کمی آنے کے بجائے روز بروز   اضافہ ہی دیکھا  کیا جارہا ہے، گذشتہ چار پانچ دنوں سے ہر روز ریاست میں  کورونا کے پانچ پانچ ہزار سے زائد معاملات درج کئے جارہے تھے، مگر آج ایک ہی دن کورونا نے پھر ایک بار اگلے پچھلے تمام ریکارڈ توڑتے ہوئے چھ ہزار کے ہندسے کو پار کردیا ہے۔ محکمہ صحت کی جانب سے جاری کی گئی ہیلتھ بلٹین کے مطابق آج جمعرات کو  ریاست بھر سے 6128 معاملات درج کئے گئے ہیں۔ 

آج پھر ایک بار بنگلور میں سب سے زیادہ یعنی 2233 پوزیٹیو کیسس کی تصدیق کی گئی ہے، جبکہ بلٹین کے مطابق آج ایک ہی دن  ریاست کے مختلف اضلاع سے 83 لوگوں نے اپنی جانیں بھی گنوائیں ہیں۔ جس کے ساتھ ہی ریاست میں کورونا سے مرنے والوں کی تعداد بڑھ کر 2230 ہوگئی ہے۔ آج صرف بنگلور سے ہی 22 لوگوں کے مرنے کی اطلاعات ملی، جبکہ  میسور میں 9،  دھارواڑ میں 8، جنوبی کینرا اور  کلبرگی میں 7، 7  اور  ہاسن میں آج 6 لوگوں کی موت واقع ہوئیں۔

آج میسور سے 430، بلاری سے 343، اُڈپی سے 248، بنگلور دیہی سے 224، کلبرگی سے 220، بیلگاوی سے 202، جنوبی کینرا سے 198، دھارواڑ سے 180، رائچور سے 166، شموگہ سے 143، باگلکوٹ اور چکمنگلور سے 126، وجئے پور سے 124، شمالی کینرا سے 120،رام نگرم سے 106 اور ٹمکور سے 104 کورونا پوزیٹیو کے معاملات درج کئےگئے ہیں۔

رپورٹ کے مطابق ریاست میں اب تک 46694 کورونا سے متاثرہ لوگصحت یاب ہوکر گھر جاچکے ہیں، لیکن اب بھی کورونا کے 69700 معاملے ایکٹیو ہیں۔

راحت بات یہ رہی کہ  آج کورونا سے صحت مند ہوکر گھر جانے والوں کی تعداد بھی سب سے زیادہ ریکارڈ کی گئی جس کے مطابق 3793 لوگ ڈسچارج ہوئے۔ آج بنگلور سے بھی 1912 کورونا سے متاثرہ لوگ ڈسچارج ہوئے۔

ایک نظر اس پر بھی

کیرالہ میں پیش آیا چٹان کھسکنے کا خطرناک حادثہ۔ 15ہلاک اور60سے زائدافراد ہوگئے لاپتہ۔ ملبے میں دب گئیں 30جیپ گاڑیاں 

کیرالہ کے مشہور تفریحی مقام ’مونار‘ سے قریب ’ایڈوکی‘ میں چٹان کھسکنے کا ایک خطرناک حادثہ پیش آیا جس میں تاحال 15افراد ہلاک ہونے اور 60سے زیادہ لوگ لاپتہ ہونے کے علاوہ 30جیپ گاڑیاں چٹان کے ملبے میں دب کر رہ جانے کی خبر ہے۔

کورونا کی وبا اور دعوت رجوع الی اللہ، اس عنوان کے تحت جماعت اسلامی ہند، کرناٹک کی 15 روزہ مہم کا آغاز

  کورونا کی وبا سے اس وقت پوری انسانیت پریشان ہے۔ اس مرض کا مقابلہ کرنے کیلئے حفاظتی اور احتیاطی تدابیر اختیار کرتے ہوئے لوگ اپنے رب سے رجوع ہوں۔ کورونا جیسی بیماریوں پر قابو پانے کیلئے طبی علاج کے ساتھ روحانی اور اخلاقی طاقت کا ہونا بھی ضروری ہے۔

کرناٹک سے 40 امیدوار سیول سرویسز امتحان میں کامیاب

کرناٹک سے زائداز 40 امیدواروں نے 2019 کے یونین پبلک سرویس کمیشن (یو پی ایس سی ) سیول سرویس امتحان میں کامیابی حاصل کی اور اب آئی اے ایس ، آئی ایف ایس اور آئی پی ایس اور دیگر میں ملازمت حاصل کریں گے۔