کانکنی کے معاملہ میں دفتر وزیر اعلیٰ سے ہی دھاندلی: کمار سوامی

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 14th January 2018, 12:46 PM | ریاستی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

بنگلورو،13؍ جنوری(ایس اونیوز؍عبدالحلیم منصور) سابق وزیراعلیٰ اور ریاستی جنتادل (ایس) صدر نے الزام لگایا ہے کہ دفتر وزیراعلیٰ سے ہی غیر قانونی کانکنی کے دھندہ کو بڑھاوا مل رہا ہے 2014-15کے دوران 2062کروڑ روپیوں کی ہیرا پھیری کرکے غیر قانونی کانکنی کی گئی ہے۔ آج ایک اخباری کانفرنس سے مخاطب ہوکر کمار سوامی نے کہاکہ وزیر برائے سائنس واراضیات کا قلمدان برائے نام ہے۔ وہ صرف لنگایت طبقے کی سیاست میں الجھے ہوئے ہیں جبکہ بلاری ضلع کے سنڈور تعلقہ کے قریب سبینا ہلی علاقہ میں میسور منرل کمپنی کو کانکنی کے اختیارات کا کنٹراکٹ دیا گیا ہے۔اس کمپنی نے مچنڈی انٹرپرائزز کے ساتھ غیر قانونی معاہدہ کرکے تین سرکاری کمپنیوں کو کانکنی کے ٹھکوں سے محروم کردیا ہے۔اس علاقہ میں 30لاکھ میٹرک ٹن لوہے کے پیداوار کی گنجائش ہے۔ جولائی 2015کے دوران یہاں 1.05لاکھ میٹرک ٹن لوہے کی نکاسی کی گئی ، لیکن اس میں سے 52920 ٹن لوٹے کا کوئی حساب کتاب نہیں ملا ۔ ٹنڈر معاہدہ ہونے سے پہلے ہی مچنڈی کمپنی نے کانکنی شروع کردی۔ ایک ماہ قبل سرکاری محکمۂ کانکنی نے اس دھاندلی کو بے نقاب کیا۔ اعلیٰ افسران کی طرف سے اس معاملہ کی جانچ کیلئے اگر کوئی پہل کی جاتی ہے تو ان کا تبادلہ کردیا جاتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ جس وقت یڈیورپا سے تب رشوت کی رقم چیک سے لی جاتی، اب سدرامیا نے اور بھی نئے نئے طریقے ڈھونڈ نکال لئے ہیں۔ یہ دعویٰ کرتے ہوئے کہاکہ انہوں نے کبھی کسی بھی پراجکٹ کی منظوری کیلئے رشوت کا تقاضہ نہیں کیا ہے،کمار سوامی نے کہاکہ ان پر اگر کوئی الزام ہے تو عدالت میں ثابت کرکے دکھایا جائے۔ 
 

ایک نظر اس پر بھی

وقف بورڈ انتخابات: دولت سے نہیں اصول وضوابط کے تحت ہوں گے:ضمیراحمدخان

ریاستی وقف بورڈ کے انتخابات جلد کروانے کا کوئی امکان نظر نہیں آتا ۔ پچھلے ڈھائی سال سے اڈمنسٹریٹر کے ذریعہ بورڈ چلایا جارہا ہے ۔وقف قانون کے تحت اتنی دیر تک بورڈ کیلئے اڈمنسٹریٹر مقرر کرنے کی گنجائش ہی نہیں۔

باگلکوٹ شکر کارخانے میں دھماکہ؛ چھ ہلاک؛ کئی زخمی

  کرناٹک کے باگلكوٹ ضلع کے مدھول میں نراني شوگر لمیٹڈ میں بوائلر میں  دھماکہ   ہونے کے نتیجے  میں 6 افراد کی جان چلی گئی، جبکہ نو سالہ بچہ سمیت  آٹھ  لوگ شدید زخمی ہو گئے۔ شکر کا یہ  کارخانہ  نرانی  یونٹ کا حصہ ہے اوریہ  نراني بھائیوں اورسابق بی جے پی وزیر مرگیش  نراني اور ...

کاروار: کائیگا پلانٹ توسیعی منصوبہ۔ عوامی احتجاج کے درمیان افسران نے منعقد کیا عوامی اجلاس

کائیگا جوہری توانائی اسٹیشن میں مزید دو یونٹس کا اضافہ کرنے کے منصوبے پر عوامی رائے جاننے کے لئے سرکاری افسران نے کائیگا ٹاؤن شپ میں اجلاس منعقد کیا جبکہ ٹاؤن شپ سے باہر موجودہ اور سابق اراکین اسمبلی کی قیادت میں سیکڑوں افراد نے توسیعی منصوبے کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کیا۔

بنگلورومیٹرو برڈج میں خرابی کا نائب وزیراعلیٰ پرمیشور نے معائنہ کیا

شہر کے ایم جی روڈ پر ٹرینٹی سرکل کے قریب ایم جی روڈ بیپنا ہلی میٹرو روٹ کے پلر نمبر 155کے قریب ایک بیم میں دراڑ کا آج نائب وزیراعلیٰ ڈاکٹر جی پرمیشور نے معائنہ کیا اور کہاکہ اس سلسلے میں مرمت کا کام جاری ہے۔

ہندوسماج اتسوا کے بعد کاسرگوڈ میں فرقہ وارانہ تشدد۔ پولیس نے کیا لاٹھی چارج

اتوار کے دن یہاں منعقدہ ہندوسماج اتسوا میں شرکت کے بعدواپس لوٹنے والوں پر سنگ باری کا الزام لگاتے ہوئے شرپسندوں نے مختلف مقامات پرموٹر گاڑیوں پر پتھراؤ شروع کیا جس کے بعد پولیس نے مداخلت کرتے ہوئے لاٹھی چارج کیااور صورتحال پر قابو پالیا۔

احمد پٹیل نے کی اوپیندر کشواہا سے ملاقات، چھ سے سات نشست پر بنی بات، کل اعلان متوقع : ذرائع 

پانچ ریاستوں کے انتخابات کے نتائج میں جیت سے کافی خوش کانگریس نے ملک بھر میں مہا گٹھ بندھن کا عمل تیز کردیا ہے ۔ اسی ترتیب میں آج کانگریس کے قدآور لیڈر احمد پٹیل نے قومی لوک سمتا پارٹی کے سربراہ اوپیندر کشواہا سے دہلی میں واقع رہائش گاہ میں ملاقات کی۔ ذرائع کے مطابق 6 سے 7 سیٹوں ...

باگلکوٹ شکر کارخانے میں دھماکہ؛ چھ ہلاک؛ کئی زخمی

  کرناٹک کے باگلكوٹ ضلع کے مدھول میں نراني شوگر لمیٹڈ میں بوائلر میں  دھماکہ   ہونے کے نتیجے  میں 6 افراد کی جان چلی گئی، جبکہ نو سالہ بچہ سمیت  آٹھ  لوگ شدید زخمی ہو گئے۔ شکر کا یہ  کارخانہ  نرانی  یونٹ کا حصہ ہے اوریہ  نراني بھائیوں اورسابق بی جے پی وزیر مرگیش  نراني اور ...

بھٹکل انجمن کا طالب العلم میسور میں منعقدہ اسٹیٹ لیول پرتیبھا کارنجی مقابلے میں دوم

میسور میں منعقدہ ریاستی سطح کے پرتیبھا کارنجی اُردو تقریری مقابلہ میں بھٹکل انجمن ہائی اسکول کا طالب العلم  خبیب احمد اکرمی ابن مولانا خواجہ معین اکرمی مدنی دوسرا مقام حاصل کرنے میں کامیاب ہوگیا ہے۔