ایرانی اسکولوں میں انگریزی پڑھانے پر پابندی ، مغربی میڈیا کا ملا پروپیگنڈہ کا ایشو 

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 8th January 2018, 11:50 PM | عالمی خبریں |

اسلام آباد 8جنوری (ایس او نیوز؍ آئی این ایس انڈیا ) ایران میں حکومت نے نجی اور سرکاری پرائمری اسکولوں میں انگریزی زبان کی تدریس پر پابندی عائد کردی ہے۔ایران کی ہائی ایجوکیشن کونسل کے سربراہ مہدی نوید ادھم نے سرکاری ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے پابندی کی تصدیق کی ہے۔مہدی نوید نے کہا ہے کہ سرکاری اور نجی پرائمری اسکولوں کے نصاب میں انگریزی کا مضمون ایرانی قوانین اور قواعد کی خلاف ورزی ہے۔انہوں نے کہا کہ پرائمری تعلیم کے دوران طلبہ کو ایرانی ثقافت سے روشناس کرایا جاتا ہے اور غیر ملکی زبان کی تدریس اس مقصد کے حصول میں حائل ہوتی ہے۔ایران کے قدامت پسند مذہبی حلقے ماضی میں اسکولوں میں انگریزی کی تعلیم کی مخالفت کرتے رہے ہیں اور ان کا موقف ہے کہ ابتدائی عمر میں انگریزی کی تدریس سے مغرب کی تہذیبی یلغار کے دروازے کھل جاتے ہیں۔ایران کے رہبرِ اعلیٰ آیت آللہ علی خامنہ ای بھی ماضی میں اسکولوں میں انگریزی کی تدریس پر خدشات کا اظہار کرچکے ہیں۔دو سال قبل اساتذہ کی ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے خامنہ ای نے کہا تھا کہ وہ کسی غیر ملکی زبان کی تدریس کے خلاف نہیں لیکن غیر ملکی زبانیں پڑھانے سے ایران میں اور بچوں اور نوجوانوں میں غیر ملکی ثقافت کو ترویج ملتی ہے۔ایران میں انگریزی زبان کی تدریس عموماً مڈل اسکولوں میں ہوتی ہے جہاں پڑھنے والوں بچوں کی عمر 12 سے 14 سال کے درمیان ہوتی ہے۔لیکن بعض پرائمری اسکولوں میں بھی انگریزی بطور مضمون پڑھایا جارہا ہے جب کہ متمول گھرانوں کے بچے کم عمری میں ہی انگریزی سیکھنے کے لیے نجی اداروں کا رخ کرتے ہیں۔ایرانی حکومت نے یہ اعلان ایسے وقت کیا ہے جب گزشتہ ہفتے ہی اس کے خلاف ملک بھر میں شدید مظاہرے ہوئے تھے جو کئی مقامات پر پرتشدد کی صورت اختیار کرگئے تھے۔ایک ہفتے سے زائد جاری رہنے والے ان ملک گیر مظاہروں میں سکیورٹی اہلکاروں کے ساتھ جھڑپوں میں کم از کم 22 افراد ہوئے تھے جب کہ ایک ہزار سے زائد افراد کو گرفتار کیا گیا تھا۔ایران کی فوج ’پاسدارانِ انقلاب‘ نے الزام عائد کیا ہے کہ ان مظاہروں کے پیچھے غیر ملکی طاقتوں اور ایران کے دشمنوں کا ہاتھ تھا۔

ایک نظر اس پر بھی

انیس عامری ایک ’دہشت گرد سیل‘ کا حصہ تھا: جرمن میڈیا

برلن میں دو برس قبل ایک کرسمس مارکیٹ پر ٹرک کے ذریعے حملہ کرنے والا انیس عامری’تنہا بھیڑیا‘ نہیں تھا بلکہ ممکنہ طور پر اس کا تعلق ایک سلفی سیل سے تھا، جس نے اسے اس حملے میں مدد دی تھی۔جرمن میڈیا پر ہفتے کے روز سامنے آنے والی رپورٹوں کے مطابق برلن کرسمس مارکیٹ حملے کے فقط دو ...

فرانسیسی شہروں میں زرد جیکٹوں والے مظاہرین کا احتجاج

فرانس کے مختلف شہروں میں زرد جیکٹوں والے حکومت مخالف مظاہرین مسلسل پانچویں ویک اینڈ پر احتجاج کے لیے جمع ہیں۔ صدر ایمانوئل ماکروں کی حکومت کے خلاف مظاہروں کا یہ سلسلہ ایندھن کی قیمتوں میں اضافے پر شروع ہوا تھا۔ فرانسیسی دارالحکومت پیرس میں مظاہرین کی پرتشدد کارروائیوں کو ...

سری لنکا کے برخاست وزیراعظم پر پارلیمان کا اعتماد

رواں برس اکتوبر میں برخاست کیے جانے والے سری لنکن وزیراعظم رانیل وکرمے سنگھے نے پارلیمنٹ میں اعتماد کا ووٹ حاصل کر لیا ہے۔ آج بدھ کو ہونے والی رائے شماری میں 225 رکنی ایوان میں وکرمے سنگھے کی حمایت میں 117 اراکین نے ووٹ ڈالا

امریکی فوج نے شمالی شام میں مبصر چوکیاں قائم کر دیں

امریکی وزارت دفاع نے اعلان کیا ہے کہ اْس کی افواج نے شمالی شام میں مبصر چوکیاں قائم کر دیں ہیں۔ اس اعلان میں ان چوکیوں کی تعداد اور مقامات کی وضاحت نہیں کی گئی ہے۔ اسی علاقے میں شامی کردوں کی ملیشیا وائی پی جی ایک بڑے علاقے پر قابض ہے

برطانوی وزیر اعظم کو درپیش قیادت کا چیلنج: کیوں اور کیسے؟

برطانوی پارلیمان کے ارکان نے قدامت پسند وزیر اعظم ٹریزا مے کے خلاف عدم اعتماد کی تحریک پیش کر دی ہے، جس پر رائے شماری آج بدھ بارہ دسمبر کو ہو رہی ہے۔ سوال یہ ہے کہ یہ تحریک پیش کیے جانے کے بعد اب ہو گا کیا ۔برطانوی وزیر اعظم ٹریزا مے نے اسی ہفتے پیر کا دن یورپ کے مختلف ممالک کے ...