ناراض کانگریس اراکین اسمبلی ہمارے رابطہ میں نہیں ہیں: بی ایس یڈی یورپا کا بیان

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 14th January 2019, 11:23 AM | ریاستی خبریں | ملکی خبریں |

نئی دہلی،14؍جنوری (ایس او نیوز؍ نیوز ) کانگریس کے کسی بھی رکن اسمبلی کے ساتھ ہمارا رابطہ نہیں ہے۔ ناراض اراکین دہلی آئے ہوئے ہیں اس سے بھی ہم واقف نہیں ہیں۔ اس بات کی وضاحت ریاستی بی جے پی یونٹ کے صدر وسابق وزیر اعلیٰ بی ایس یڈیورپا نے کی۔

کرناٹک بھون میں آج نامہ نگاروں سے سوال کرتے ہوئےیڈیورپا نے کہا کہ آپ ہی مجھے بتائیں کہ کتنے ناراض اراکین اسمبلی یہاں آئے ہوئے ہیں ، ان کے نام بتائیں؟مخلوط حکومت میں ہورہی اٹھکھیلیوں سے ہمارا کوئی تعلق نہیں ہے ۔ اپنی غلطیوں پر پردہ ڈالنے کیلئے کانگریس اور جے ڈی ایس دونوں مل کرمنصوبہ بند طریقہ سے بی جے پی پر بے بنیاد الزامات لگا رہی ہیں۔ ان میں خود اختلاف ہے ،ہم کچھ بھی نہیں کرسکتے ۔ سنکرانتی تہوار کے بعد کچھ ہونے کی خبر پر یڈیورپا نے کہا کہ کب کیا ہوگا یہ کہنے کے لئے ہم جو تشی نہیں ہیں۔مخلوط حکومت کی موجودہ حالت دیکھ کریہ کہنا آسان ہوجاتا ہے کہ حکومت زیادہ دن چلنے والی نہیں ہے ۔ ہم اپوزیشن کے طور پر عوام کی امیدوں پر پورا اترنے کی کوشش کریں گے۔ سنکرانتی یا اوگادی تہوار کے بعد بی جے پی کیلئے خوشخبری اس قسم کی خبریں افواہ ہیں ۔ ہم کسی بھی صورت میں حکومت کو کمزور نہیں کریں گے ۔ دہلی میں پارٹی ہائی کمان کے ساتھ ریاستی بی جے پی ارکین اسمبلی کے مسلسل اجلاس ہورہے ہیں ۔ لوک سبھا انتخابات کے حوالے سے حکمت عملی طے کی جارہی ہے۔ تمام اراکین اسمبلی دہلی میں ہیں اگر اجلاس آج ختم ہوجائے تو ہم آج ہی بنگلور لوٹ آئیں گے ۔ لوک سبھا انتخابات کی تیاری اور امیدواروں کے انتخاب کے سلسلہ میں تبادلہ خیال کیاجارہا ہے ۔ ہائی کمان سے اسمبلی اراکین جو کہنا ہے وہ کہہ رہے ہیں۔اس پارلیمانی انتخابات میں گزشتہ سے زیادہ سیٹیں حاصل کرنے کی خصوصی حکمت عملی طے کی جارہی ہے ۔ ہائی کمان کی ہدایت و رہنماء اصولوں پرعمل کرتے ہوئے نریندر مودی کو پھر ایک مرتبہ وزیراعظم بنائیں گے ۔ نریندر مودی کے کلر ک تبصرہ پر کانگریس و جے ڈی ایس قائدین کے رد عمل پر ایڈی یورپا نے کہا کہ مودی بے بنیاد باتیں نہیں کہتے ۔ اس طرح کی باتیں کرنے کیلئے وہ راہل گاندھی نہیں ہیں۔ مخلوط حکومت میں جاری سرگرمیوں اور کمارسوامی کی جانب سے دےئے گئے بیان کاخلاصہ پیش کرتے ہوئے نریندر مودی نے کلرک بیان دیا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

سابق ماہی گیر وزیر پرمود مادھوراج نےملپے سے سات ماہی گیروں کے ساتھ بوٹ کی گم شدگی کے لئے نیوی کو قرار دیا ذمہ دار

اڈپی اورچکمگلورو سیٹ سے جنتادل اور کانگریس کے مشترکہ امیدوار اور سابق وزیر ماہی گیری پرمود مادھو راج نےسات ماہی گیروں کے ساتھ سوورنا تریبھوجا نامی کشتی کی گم شدگی کے لئے بحری فوج کو ذمہ دار قرار دیا ہے۔

انتخابات کیلئے سرمایہ اکٹھا کرنے اولاٹیکسی پرپابندی عائد کی گئی تھی۔ گوڑا

مرکزی وزیر ڈی وی سداننداگوڑا نے الزام لگایا ہے کہ انتخابات کے لئے سرمایہ توقع کے مطابق جمع نہ ہونے کی وجہ سے کانگریس ۔ جنتادل (یس) مخلوط حکومت نے اولا ٹیکسی خدمات پر6؍ماہ کے لئے پابندی عائد کی تھی۔

دیوے گوڈا ٹمکورسے نامزدگی داخل کریں گے، کانگریس کے موجودہ ایم پی مدوہنومے گوڈا بھی اس حلقہ سے نامزدگی داخل کرنے پر بضد

اب تک بھی یہ خبریں ہیں کہ جے ڈی ایس کے سربراہ ایچ ڈی دیوے گوڈا ٹمکورپارلیمانی حلقہ سے چناؤ لڑیں گے۔ کانگریس اور جے ڈی ایس کے درمیان سیٹوں کی تقسیم میں ٹمکور حلقہ جے ڈی ایس کے حصے میں گیاہے ،

چوکیدارکا ٹھپہ نہیں چاہتی پرائیویٹ سیکورٹی انڈسٹریز

قریب 80 لاکھ پرائیویٹ سیکورٹی گارڈز والی انڈسٹری وزیر اعظم نریندر مودی کے ’چوکیدار‘ مہم سے بہت حوصلہ افزاء نہیں ہے، البتہ وہ اپنی بہت مشکلات کو لے کر خود مرکزی حکومت سے لڑ رہی ہے۔سیکورٹی سروسز پر 18فیصد جی ایس ٹی کے خلاف برسرپیکار رہی کمپنیاں اب حکومت پر وعدہ خلافی کا الزام لگا ...

بورڈنگ پاس پر مودی کی تصویر پر تنقید کے بعد ایئر انڈیا نے انہیں واپس لیا

ایئر انڈیا نے تنقید کے بعد وزیر اعظم نریندر مودی اور گجرات کے وزیر اعلی وجے روپانی کی تصاویر والے بورڈنگ پاس واپس لینے کا فیصلہ کیا ہے۔ایئر لائنز نے پہلے کہا تھا کہ تصاویر والے بورڈنگ پاس تیسری پارٹی کے اشتہارات کے طور پر جاری کئے گئے اور اگر یہ مثالی ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی ...

دہلی میں خدمات پر کنٹرول کے معاملے پر فیصلے کیلئے وسیع بنچ بنائے عدالت عظمی: آپ حکومت

قومی راجدھانی دہلی میں انتظامی خدمات پر کنٹرول کے معاملے پر جلد فیصلہ لینے کے لیے آپ حکومت نے پیر کو سپریم کورٹ سے ایک وسیع بنچ قائم کرنے کی درخواست کی۔چیف جسٹس رنجن گوگوئی اور جسٹس دیپک گپتا کی بنچ کے سامنے اس معاملے کا ذکر کیا گیا تو بنچ نے آپ حکومت کے وکیل سے کہا کہ اس پر غور ...

عدالت نے منی لانڈرنگ کیس میں گوتم کھیتان اور تین دیگر کو طلب کیا

دہلی کی ایک عدالت نے منی لانڈرنگ کے ایک معاملے میں ای ڈی کی طرف سے چارج شیٹ داخل کئے جانے کے بعد پیر کو وکیل گوتم کھیتان، ان کی بیوی ریتو اور دو کمپنیوں اسمیکس اور ونڈفور کو طلب کیا۔خصوصی جج اروند کمار نے چاروں ملزمان کو چار مئی کو پیش ہونے کے لئے کہا ہے

سبرامنیم سوامی بولے: میں برہمن ہوں، چوکیدار نہیں ہو سکتا

کانگریس کی جانب سے 'چوکیدار چور ہے" کا نعرہ اچھالے جانے کے جواب میں بھارتیہ جنتا پارٹی نے " میں بھی چوکیدار ہوں' کیمپین شروع کیا۔ اس کے بعد وزیر اعظم نریندر مودی سمیت بی جے پی کے تقریبا سبھی لیڈران نے مائیکرو بلاگنگ سائٹ ٹویٹر پر اپنے نام کے آگے 'چوکیدار' لفظ لگایا لیا۔