اُڈپی ضلع کےسیلاب سےمتاثرہ علاقوں اور نقصانات کا جائزہ لیا مرکزی ٹیم : ڈی سی نے دی نقصانات کی تفصیل

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 12th September 2018, 9:18 PM | ساحلی خبریں |

اُڈپی:12/ستمبر(ایس اؤ نیوز) حالیہ دنوں میں موسلا دھار بارش سے نقصان زدہ علاقوں کاجائزہ لے کر رپورٹ سونپنے کے لئے  کرناٹکا پہنچی مرکزی ٹیم اُڈپی ضلع کے کارکلا اور کاپو کے کئی مقامات کا دورہ کرتے ہوئے معائنہ کیا۔

مرکزی فائنانس وزارت کے معاون سکریٹری بھرتیندرو کمار سنگھ کی قیادت والی مرکزی جائزہ ٹیم کا اُڈپی ڈی سی میری فرانسس نے استقبال کیا۔ ضلع میں سیلاب سے نقصان ہوئے برج، سڑکیں ، گھر، فصل کی جگہوں کا دورہ کرکے جانکاری حاصل کی۔ جائزہ ٹیم سب سے پہلے کارکلا تعلقہ کے ککندور ، جینتی اسکول ، کارکلا۔ اُڈپی روڈ پر واقع چند مقامات ، میارو دیہات کے سپاری باغات کا دورہ کرنے کے بعد کاشت کاروں سے بات چیت کی اور ان کی شکایات کو سماعت کیا۔

وہاں سےنکل کر جائزہ ٹیم بارش کی وجہ سے سب سے زیادہ متاثرہ ہوسمارو۔ ایدو برج اور رابطہ سڑک کودیکھا، جہاں محکمہ آب پاشی کے افسران سے جانکاری لی۔ یہاں سے نورالبیٹو دیہات کے کیمپٹو پہنچی ٹیم دیہات کے برج اور بہہ جانے والی سڑک اور وہاں جاری عارضی کام کا جائزہ لیا۔ اس کے علاوہ کئی ایک دیہات کے اندرونی راستوں کا پیدل چل کر انہوں نے نظارہ کیا۔

سہ پہر شیروا کے کلتور گرومے کو پہنچا مرکزی وفد بارش سے ہونے والے برج، مکانات، سڑکوں کے  نقصانات کے متعلق جانکاری لی۔ اس کے بعدوفد کے افسران نے کارکلا کے سرکٹ ہاؤس میں ڈی سی اور ضلع کے اعلیٰ افسران کے ساتھ میٹنگ کی۔ جہاں ڈی سی نے ضلع میں ہونے والے نقصانات کی تفصیل بتائی ۔میٹنگ میں افسران کو ڈی سی نے بتایا کہ  امسال ہوئی بارش کی وجہ سے ہونےو الے نقصانات کا اندازا 150کروڑروپیوں سے زائد لگایاگیا ہے۔ جس میں  1058گھروں کو نقصان پہنچا ہے۔ جس سے قریب 1006لاکھ روپئے کانقصان ہواہے۔ اسی طرح ماہی گیر وں کو پہنچنے والے نقصانات کابھی جائزہ لیاگیا ۔ اس موقع پر مرکزی ٹیم کے ساتھ کنداپور کے اسسٹنٹ کمشنر بھوبالن ، زرعی ڈائرکٹر کیمپے گوڈا، باغبانی محکمہ کی نائب ڈائرکٹر بھونیشوری، کارکلا کے تحصیلدار محمد اسحق سمیت تحصیل محکمہ وغیرہ کے افسران موجود تھے۔

ایک نظر اس پر بھی

موڈبیدری:پرشانت پجاری قتل کیس کے ملزم پرحملہ۔ زخمی خطرے سے باہر

ہندوتووادی کارکن اور پھولوں کے تاجر پرشانت پجاری کے قتل میں ملزم بنائے گئے امتیاز نامی شخص پر گنٹل کٹّے قریب صبح 5.30بجے موٹر بائک سواروں نے حملہ کردیا جس کی وجہ سے امتیاز کو زخمی حالت میں منگلورو کے ایک نجی اسپتال میں منتقل کیا گیا ہے۔ بعض ذرائع کا کہنا ہے کہ امتیاز پر جان لیوا ...

منگلورو کے گمشدہ نوجوان کی لاش تملناڈو میں دستیاب۔ قتل کیے جانے کا شبہ

گنجی مٹھ کے رہنے والے سمیر (35سال) کے والد احمد نے پولیس میں گم شدگی کی شکایت درج کی گئی تھی اور بتایا گیا تھا کہ اپنی بیوی ا وربچی کو ساتھ لے کر ہوائی جہاز کے ذریعے بنگلورو جانے کے بعد وہ لاپتہ ہوگیا ہے اور اس کی بیوی ااپنی بچی کے ساتھ کاپ میں واقع اپنے مائیکے واپس پہنچ گئی تھی۔