ٹوائلٹ گھوٹالہ کی ابتدائی جانچ کر لیفٹیننٹ گورنر فوری اثر سے ایف آئی آر درج کروائیں: کانگریس

Source: S.O. News Service | Published on 23rd September 2022, 11:43 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،23؍ستمبر(ایس او نیوز؍ایجنسی) دہلی پردیش کانگریس کمیٹی کے سربراہ چودھری انل کمار نے آج ایک بیان میں کہا کہ بدعنوانی سے پاک حکومت کی آواز اٹھانے والے اروند کیجریوال کی دہلی حکومت کے 8 سالوں کی حکومت میں لگاتار ایک کے بعد ایک بدعنوانی معاملوں کو دہلی کانگریس دہلی کے باشندوں کے سامنے ظاہر کر رہی ہے۔ شراب گھوٹالہ، ڈی ٹی سی بس خرید اور رکھ رکھاؤ گھوٹالہ، کلاس روم گھوٹالہ کے بعد منیش سسودیا کے تحفظ میں اب دہلی شہری رہائش ڈیولپمنٹ بورڈ (ڈی یو ایس آئی بی) کا ٹوائلٹ گھوٹالہ دہلی کانگریس نے سامنے لایا ہے جس کی شکایت ہم نے دہلی کے لیفٹیننٹ گورنر سے ملاقات میں کر دی ہے۔ چودھری انل کمار نے کہا کہ دہلی کاگنریس نے مطالبہ کیا ہے کہ لیفٹیننٹ گورنر جلد از جلد ٹوائلٹ گھوٹالے کی ابتدائی جانچ کر ایف آئی آر درج کریں اور وزیر اعلیٰ اروند کیجریوال گھوٹالہ باز وزیر منیش سسودیا کا استعفیٰ لیں۔

ریاستی کانگریس دفتر میں منعقد پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے چودھری انل کمار نے کہا کہ دہلی کے جے جے کلسٹر اور جھگی جھونپڑی والے علاقوں میں ٹوائلٹ کی سہولت دینے کے لیے ڈی یو ایس آئی بی 725 ٹوائلٹ کے 23000 ڈبلیو سی شیٹوں کے رکھ رکھاؤ کا کام کرتا ہے جس پر 42 کروڑ کا سالانہ خرچ آتا ہے۔ انھوں نے کہا کہ اس کے لیے ای پورٹل کی جگہ جی ای ایم پورٹل پر ٹنڈر ڈال کر صرف ایک کمپنی کو فائدہ پہنچانے کے لیے اصولوں کو تاک پر رکھ کر ٹنڈر جاری کرنے میں منیش سسودیا کی دلچسپی بڑے بدعنوانی کو ظاہر کرتی ہے۔ انھوں نے کہا کہ سسودیا نے یہ ٹنڈر اسی کمپنی کو دیا جسے انھوں نے 27 جنوری 2022 کو ممنوع کرنے کا فیصلہ لیا تھا، جس پر 10 مئی 2022 کو پابندی لگا دی گئی۔ ٹنڈر عمل میں یہ ایک الگ سوال اٹھتا ہے کہ کیسے ہائی کورٹ سے خراب کارکردگی پر پابندی میں راحت نہیں ملنے پر محکمہ کیسے سائی ناتھ سیلس اینڈ سروسز پرائیویٹ لمیٹڈ کو ٹنڈر دیا اور جب ڈی یو ایس آئی بی ایک کمپنی کے کام سے مطمئن نہیں ہے تو کمپنی ٹنڈر میں حصہ کیسے لیا؟ یہ جی ای ایم ٹنڈر کی شرطوں کی خلاف ورزی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

گیان واپی مسجد معاملہ پر الہ آباد ہائی کورٹ میں سماعت، وارانسی عدالت کے فیصلہ پر 31 اکتوبر تک روک

  الہ آباد ہائی کورٹ نے وارانسی کی ایک عدالت کے گیانواپی مسجد کا اے ایس آئی سروے کرانے کے حکم پر لگی روک میں 31 اکتوبر تک توسیع کر دی ہے۔ متعلقہ فریقوں کے دلائل سننے کے بعد جسٹس پرکاش پاڈیا نے معاملے کی اگلی سماعت کے لیے 18 اکتوبر کی تاریخ مقرر کی ہے۔

انکیتا بھنڈاری کے ملزمین کی پیروی کرنے سے وکیلوں کا انکار، ضمانت عرضی پر سماعت ملتوی، سی بی آئی جانچ کا مطالبہ تیز

اتراکھنڈ کے رشی کیش کی رہنے والی انکیتا بھنڈاری قتل واقعہ کے ملزمین پلکت آریہ، انکت اور سوربھ بھاسکر کی عدالت میں پیروی کرنے سے کوٹ دوار کے وکلا نے انکار کر دیا ہے۔ ک

نوٹ بندی کی آئینی درستگی کو چیلنج کرنے والی 59 عرضیوں پر سپریم کورٹ میں 12 اکتوبر کو ہوگی سماعت

مودی حکومت کی جانب سے 2016 میں نافذ کی گئی نوٹ بندی کے آئینی جواز کے خلاف دائر کی گئی عرضیوں پر سپریم کورٹ میں پانچ ججوں کی آئینی بنچ میں 12 اکتوبر کو سماعت ہوگی۔ نوٹ بندی کے خلاف عرضیوں پر سپریم کورٹ نے سوال کیا ہے کہ اب اس معاملے میں کیا باقی ہے؟ کیا اس معاملے کی جانچ کرنے کی ضرورت ...

یوپی: لکھیم پور کھیری میں دلخراش سڑک حادثہ، بس اور ٹرک کے تصادم میں 8 افراد ہلاک، 25 سے زائد زخمی

 اتر پردیش کے لکھیم پور کھیری میں آج صبح ایک بڑا حادثہ پیش آیا۔ معلومات کے مطابق بس اور ٹرک کے درمیان تصادم میں 8 افراد جاں بحق، جب کہ 25 زخمی ہوئے ہیں۔ بتایا جا رہا ہے کہ لکھیم پور کھیری ضلع کے عیسی نگر تھانہ علاقے کی کھماریا پولیس چوکی کے نزدیک شاردا ندی کے پل پر درجنوں مسافروں ...

بی جے پی کے رکن پارلیمنٹ روی کشن کو لگا چونا! کاروباری پر عائد کیا 3.25 کروڑ کی ٹھگی کرنے کا الزام، پولیس میں درج کرائی شکایت

 بی جے پی کے رکن پارلیمنٹ اور اداکار روی کشن مبینہ طور پر 3.25 کروڑ روپے کی ٹھگی کا شکار ہو گئے ہیں، اس واقعہ کی اطلاع پولیس نے دی ہے۔ گورکھپور صدر سے رکن پارلیمنٹ روی کشن نے گورکھپور کینٹ تھانہ میں ایک بلڈر کے خلاف 3.25 کروڑ کی ٹھگی کا الزام عائد کرتے ہوئے مقدمہ درج کرایا ہے۔

مرکزی حکومت کے ملازمین کو ملی سوغات، مہنگائی بھتہ میں 4 فیصد کا اضافہ

مرکزی حکومت نے ایک کروڑ سے زیادہ سرکاری ملازمین اور پنشن حاصل کرنے والے افراد کو تہواروں کے موقع پر سوغات پیش کی ہے۔ وزیر اعظم نریندر مودی کی سربراہی میں منعقد ہونے والے کابینہ کے اجلاس میں مہنگائی بھتہ میں اضافہ کا فیصلہ کیا گیا ہے۔